بکروال اور چرواہے تراگہ بل میں درماندہ | گریز میںبہکوں کی طرف جانے کی اجازت دینے کی اپیل

بانڈی پورہ //تراگہ بل میں گزشتہ کئی دنوں سے خانہ بدوش بکروال اور بانڈی پورہ کے چرواہے مال مویشی سمیت درماندہ ہیں۔ڈوڈہ و پونچھ کے بکروال اور بانڈی پورہ کے مقامی چرواہے مال مویشیوں کو لیکر گریز بانڈی پورہ کی بہکوں کی طرف جانے کیلئے جب تراگہ بل پہنچنے اور انہیں آگے جانے سے روکا گیا۔ تراگہ بل میں درماندہ نذیر احمد کھٹانہ کاکہنا ہے کہ وہ ہزاروں بھیڑ ، بکریاں اور بڑے مویشی لیکر وہ گریز کی بہکوں کی طرف رخ کرتے ہیں اور اس کیلئے ان کے پاس سفری راہداری کے اجازت نامے بھی ہیں۔ مذکورہ شہری نے کہاکہ تراگہ بل میں وہ گزشتہ10دنوں سے درماندہ ہیں جس کے سبب مال مویشیوں کو نقصان سے دوچار ہونا پڑرہا ہے۔ خانہ بدوش بکروالوں اور مقامی چرواہوںنے لیفٹینٹ گورنر منوج سنہا اور ضلع ترقیاتی کمشنر بانڈی پورہ سے اپیل کی ہے کہ انہیں بہکوں کی طرف جانے کی اجازت دی جائے۔ ڈپٹی کمشنر بانڈی پورہ ڈاکٹر اویس احمد نے کہا کہ چونکہ گریز کے اوپر ی علاقوں میں ابھی برف موجود ہے جس کی وجہ سے ان کو روکا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ فوج کے ساتھ رابطہ کرکے بکروالوں اور چرواہوں کو آگے جانے دیا جائے گا ۔