بڑھتی ہوئی گرمی کیساتھ ہی قصبہ کشتواڑ میں پانی کی ہاہا کار محکمہ کی خاموشی پریشان کن ،انتظامیہ سے پانی فراہم کرنے کا مطالبہ

عاصف بٹ

کشتواڑ // گرمی بڑھتے ہی قصبہ کشتواڑ و اُسکے ملحقہ علاقہ جات میں پانی کی ہاہاکار ہے جسکے سبب عوام کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہاہے اور لوگوں کئی دنوں بعد محض چند منٹ کیلئے پانی فراہم کیا جارہاہے۔گزشتہ کئی ماہ سے ضلع بھر میں شدت کی گرمی سے عوام کی مشکلات دوگنی ہوئی ہیں جسکے سبب عوام کو سخت مسائل درپیش ہورہے ہیں ۔قصبہ و گردنواح کے علاقہ جات میں پانی کی عدم دستیابی کے سبب ہاہاکار مچی ہوئی ہے۔ وارڈنمبر دو تین سات و دیگر مقامات پر عوام کو پانی سپلائی محض چند منٹ کیلئے ملتی ہے جسے پانی نہ تو پینے کیلئے اور نہ ہی استعمال کرنے کیلئے دستیاب ہورہا ہے ۔سلیمہ بیگم جو وارڈ تین کی رہایشی ہیں ،نے بتایا کہ اگرچہ پہلے تیس سے پنتالیس منٹ تک اچھی مقدار میں پانی ملتاتھا لیکن گزشہ کی ہفتوںسے تیسرے روز پانی محض دس منٹ کیلئے سپلائی دی جارہی ہے جسے گزارا کرنا ناممکن ہوگیا ہے۔انہوں نے بتایا کہ’ اگرچہ ہم نے کئی مرتبہ محکمہ کے ملازمین کو بھی آگاہ کیا لیکن باجود اسکے کوئی حل نہیں نکلا گیااور محکمہ کے ملازمین صرف بہانے بازی کرتے ہیں اور جلد ٹھیک کرنے کا وعدہ کرتے ہیں لیکن آج تک زمینی سطح پر کوئی وعدہ پورہ نہ ہوسکا ۔محمد عاقب احمد نے کشمیر عظمی کو بتایاکہ شہر میں پانی کی ہاہاکار مچی ہوئی ہے جہاں ہرروز قصبہ کے مختلف مقامات پر محکمہ کی جانب سے لگائی گئی زنگ آلودہ پائپوںسے ہزاروں گیلن پانی ضائع ہورہا ہے لیکن عوام کو پینے کیلئے پانی تک مہیانہیں کیا جارہا ہے ۔بیشتر واڑڈوں کا حال بھی ایسا ہی جہاں تین روز کے بعد پندرہ منٹ کیلئے پانی دیاجاتاہے جسے گزارا کرنا ناممکن بن گیا ہے۔مقامی لوگوں نے اپنی شکایت درج کرواتے ہوئے کہاکہ انہوں نے متعلقہ ملازمین اور آفیسران سے کئی مرتبہ رجوع بھی کیالیکن ابھی تک کوئی عملی قدم نہیں اٹھایاگیا ہے ۔مکینوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ قصبہ میں پانی کی خراب ہوئی صورتحال کو قابو کرنے کیلئے متعلقہ حکام کو ہدایت جاری کی جائیں تاکہ عام لوگوں کی دقتیں کم ہو سکیں ۔