بونجواہ یوتھ ایسو سی ایشن کا احتجاج

ڈوڈہ// بونجواہ یوتھ ایسوسیشن نے سرکار کی علاقہ کے تئےں بے رخی کو لے کر احتجاجی مظاہرہ کرتے ہوئے کہا کہ بنیادی سہولیات کے فقدان سے مقامی آبادی کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔مظاہرین نے اپنے مطالبات کو لے کر نعرہ بازی کرتے ہوئے کہا کہ تحصیل بونجواہ میں گذشتہ حکومتوں کے دور میں شروع کئے گئے تعمیری پروجیکٹ ادھورے پڑے ہیں ۔مظاہرین میں شامل عاشق حسین ومحمد اشرف وانی نے کہا کہ تحصیل بونجواہ میں سڑک کی خستہ حالی، ناقص طبی نظام ،فلاحی اسکیموں سے غریب عوام کو محروم رکھنے، بی ڈی او دفتر تالا بند رہنے،بجلی وپانی کے ناقص نظام جیسی مشکلات سے عوام کو سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ انہوں نے دوندوی بونجواہ سڑک کی خستہ حالی کو دور کرنے، کیو پل تا کیتھر وٹپری پتنازی سڑک پر کام میں سرعت لانے وتار کول بچھانے ،پرائمری ہیلتھ سینٹر نالی میں بنیادی ڈھانچہ وعملہ کی فراہمی، رسوینگ اسٹیشن پر کام شروع کرنے، ناکارہ پائپوں کو ہٹا کر پانی کی اسکیموں کی از سر نو مرمت کرنے ،بی ڈی او دفتر کو فعال بنانے،کمنیوٹی کلاسز کا اہتمام کرنے وموبائل نیٹ ورک بہتر بنانے کے سلسلہ میں ٹھوس اقدامات کرنے کا حکام سے مطالبہ کیا۔اس دوران انہوں نے اپنی مانگوں کو لے کر ایک یاداشت تحصیلدار کو پیش کی اور انتباہ کیا کہ اگر ان مسائل کا مناسب وقت میں ازالہ نہ کیا گیا تو وہ کشتواڑ بٹوت شاہراہ پر احتجاج کریں گے۔اس موقع پر رام سنگھ،اطہر بٹ روہت کمار،اشونی کمار ،ذولفقار علی بھی موجود تھے۔