بلاور میں عوامی شکایات کے ازالے کے کیمپ کا انعقاد

 کٹھوعہ/ / ریاست کے لوگوں کو اشیائے ضروریہ ان کی دہلیز تک پہنچانے اور عام لوگوں کی شکایات کا ازالہ کرنے کے سلسلے میں قانون ساز اسمبلی کے سپیکر ڈاکٹر نرمل سنگھ نے بلاور لہری پنچایت کے دالیاں گائوں میں ایک عوامی شکایات کے ازالے کا کیمپ منعقد کیا۔ملحقہ دیہات سے لوگوں کی بڑی تعداد نے کیمپ میں شرکت کی اور سپیکر موصوف کو اپنے مسائل سے آگاہ کیا ۔اس موقعہ پر کئی عوامی وفود نے اپنے مسائل جن میں بجلی ، پینے کے پانی، سڑکیں ، زراعت ، طبی سہولیات اور تعلیمی سیکٹر سے متعلق معاملات شامل ہیں کو سپیکر کے گوش گزار کیا۔سپیکر نے لوگوں کو یقین دلایا کہ ان کے شکایات کا فوری ازالہ کیا جائے گا۔انہوں نے متعلقہ افسران کو ہدایت دی کہ فوری نوعیت کے مسائل کا موقعہ پر ہی ازالہ کریں۔نرمل سنگھ نے کہا کہ ایسے کیمپو ں کے انعقاد کا مقصد لوگوں کے مسائل کی جانکاری حاصل کر کے انہیں فوری طور حل کرنا ہے ۔انہوں نے کہا کہ حکومت نے لوگوں کو بنیادی سہولیات فراہم کرنے کے لئے کئی اہم اقدامات کئے ہیں۔جن میں سڑکیں، پل ، سکول اور پینے کے پانی کی سکیمیں ترتیب دینا شامل ہے۔بلاور میں پچھلے ساڑھے تین سال کے دوران کئی ترقیاتی کاموں کو مکمل کر نے کا ذکرکرتے ہوئے ڈاکٹر سنگھ نے کہاکہ علاقے میں تعلیمی سیکٹر پر 20کروڑ روپے خرچ کئے گئے ۔انہوں نے بلاور کے 321 کلومیٹر سڑکوں میں سے نصف سڑکوں کو بلیک ٹاپنگ کی گئی۔ لوگوں کو بلا خلل بجلی فراہم کرنے کے لئے نئے ٹرانسفارمر نصب کئے گئے۔صحت عامہ کے بنیادی ڈھانچے کو استحکام بخشنے کے لئے خاصی رقم خرچ کی گئی ۔اے ڈی سی بلاور کے دفتر سے پانچ ہزار پی آر سیز جاری کی گئیں۔پچھلے ساڑھے تین سال کے دوران 600کروڑ روپے کی رقم ترقیاتی کاموں پر خرچ کئے گئے ۔ اس کے علاوہ ڈی ڈی یو جی وی وائی کے تحت 15کرو ڑروپے خرچ کئے گئے تاکہ بلاور کی آبادی کو بہتر بجلی کی سہولیات فراہم کی جاسکے۔بعد میں سپیکر نے کڑے تار میں ریسونگ سٹیشن پرجاری تعمیراتی کام کا جائزہ لیا۔ڈاکٹر سنگھ کے ہمراہ اے ڈی سی بلاور ، ایس ڈی پی او ، ڈی ڈی او ، تحصیلدار، انجینئر اور معزز شہری بھی تھے۔