بشار الاسد چوتھی مرتبہ شام کے صدر منتخب

دمشق// بشارالاسد مسلسل چوتھی بار شام کے صدر منتخب ہوگئے ہیں۔شام کے صدارتی انتخاب کے نتائج کا اعلان کردیا گیا ہے- جس میں بشارالاسد 95 فیصد ووٹوں کی بھاری اکثریت سے صدر منتخب ہوگئے ہیں- ان کے مد مقابل امیدوار اور حکومت کے باغی اتحاد نیشنل فرنٹ کے سابق سیکرٹری جنرل محمود احمد ماری صرف3.1 فیصد ووٹ حاصل کر سکے جبکہ سوشلسٹ نینسٹ پارٹی کے عبداللہ سلم عبداللہ 1.5 فیصد ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔شام میں ووٹنگ کی شرح 78 فیصد رہی، امریکی حمایت یافتہ کردوں کے علاقے ادلب میں الیکشن کا بائیکاٹ کیا گیا جبکہ بشارالاسد کے مخالفین اور مغربی ممالک نے انتخابات میں دھوکہ دہی کاالزام عائد کیا ہے،کیونکہ یہ انتخابات سرکاری کنٹرول والے علاقوں اور کچھ ملکوں میں شام کے سفارتخانوں میں کرائے گئے تھے۔