بسوہلی کے شیتل نگر میں پانی کابحران

 بسوہلی // بسوہلی کے شیتل نگر میں پانی کی پائپ لائن خراب ہونے کے سبب پانی بحران پیدا ہوگیا ہے ۔ شیتل نگر کے لوگوں نے بنی بسوہلی سڑک کو بند کرکے محکمہ آب کے خلاف احتجاج کیا ۔مظاہرین کا کہنا تھا کہ علاقے میں میں پانی کی پائپ لائن خراب ہونے کے سبب علاقہ کے لوگ پانی کی بوند بوند کو ترس رہے ہیں اوروہ برسات کا گندا پانی پینے پر مجبور ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ ایک ہفتے پہلے علاقے کی پائپ لائن حالیہ بارشوں کی وجہ سے ٹوٹ گئی جسے محکمہ کی طرف سے بحال نہیں کیاگیااور نتیجہ کے طور پرمقامی آبادی بوند بوند کیلئے ترس رہی ہے جبکہ محکمہ خاموش تماشائی ہے۔ شیتل نگر کے غریب لوگ پانی خریدنے کی استطاعت نہیں رکھتے اور دور افتادہ علاقوں سے پانی لانے پر مجبور ہیں ۔ان کاکہناہے کہ بارہا متعلقہ حکام کی توجہ اس جانب مبذول کروائی لیکن کوئی شنوائی نہیں ہوئی جس سے یہ ظاہر ہوتاہے کہ حکام عوام کو سہولیات کی فراہمی کیلئے سنجیدہ نہیں اور انہیں احتجاج کاراستہ اختیار کرنے پر مجبور کیاگیاہے ۔اس دوران مظاہرین نے بنی بسوہلی روڈکو مسلسل دو گھنٹوں تک بند رکھا ۔بعد میں نائب تحصیلدار شیتل نگر الطاف حسین ملک نے مظاہرین کو یقین دلایا کہ وہ علاقہ کی پانی سپلائی کی بحالی کیلئے اقدامات اٹھائیں گے اور جلد ہی علاقے میں پانی کی سپلائی کو بحال گیا جائے گا۔تحصیلدار کی یقین دہانی کے بعد مظاہرین نے اپنا احتجاج ختم کیا۔