برفباری کے بعد سرد ی میں اضافہ ،معمولات زندگی متاثر

راجوری /راجوری وپونچھ کے مختلف علاقوں میں موسم نے پھرسے کروٹ بدلی ہے اورسنیچراوراتوارکی درمیانی شب ہوئی برفباری سے سردی کی لہرمیں اضافہ ہواہے اوربعض مقامات پرشدیدبرفباری ہونے سے متعددسڑکیں آمدورفت کیلئے مسدود ہوکررہ گئی ہیںاورمعمولات زندگی متاثر رہے۔تھنہ منڈی سے موصولہ اطلاعات کے مطابق  تھنہ منڈی میں سنیچر اور اتوار کی درمیانی رات کوموسم سرماکی دوسری برفباری ہوئی جس کی وجہ سے معمولات زندگی متاثر ہو کر رہ گئے ہیں ۔ ذرائع نے بتایاکہ بھاری برفباری کی وجہ سے تھنہ منڈی دیرہ کی گلی سرنکوٹ روڈ، بدھل مہورروڈ ،گول روڈ، پونچھ منڈی تاساوجیاں روڈ، پونچھ منڈی تالورن روڈآمدورفت کیلئے بندہوگئے ہیں اوران تمام سڑکوں سے برف ہٹانے کیلئے گریف حکام نے مشینری اورعملہ کام پرلگادیاہے ۔بتایاجاتاہے کہ راجوری پونچھ اضلاع میں پڑنے والابیشترعلاقوں میں گریف نے برفباری ہٹانے کے عمل کوسرعت کے ساتھ شروع کردیاہے ۔گریف ذرائع نے بتایاکہ برفباری سے آمدورفت مسدودہونے والی سڑکوں سے برف ہٹانے کے آپریشن شروع کردیئے ہیں اورہرممکن کوششیں کی جارہی ہیں جلدازجلد تھنہ منڈی بفلیازسڑک، راجوری کنڈی بی روڈ، بدھل مہورگل روڈاوردیگرسڑکوں پراتوارصبح سے ہی جے سی بی مشینیں اورعملہ کام پرمامورکیاگیاہے ۔گریف ذرائع  نے کہاکہ ہماری کوشش ہے کہ آئندہ بارہ گھنٹوں میں سڑکوں سے برف ہٹاکرانہیں ٹریفک کے قابل بنایاجاسکے۔قابل توجہ امرہے کہ نہایت کم درجہ حرارت میں گریف عملہ تندہی سے سڑکوں سے برف ہٹانے کے کام کیلئے ہمیشہ کی طرح اپنی خدمات انجام دینے میں مصروف ہے۔تازہ جانکاری کے مطابق سرنکوٹ تاتھنہ منڈی بذریعہ ڈی کے جی اورپونچھ منڈی تا ساوجیاں روڈبھی برفباری کی وجہ سے آمدورفت کیلئے بندہیں۔ تفصیلات کے مطابق ایتوار کی صبح تھنہ منڈی کے بالائی علاقوں میں برف بھاری سے بجلی کے متعدد کھمبے ٹوٹنے سے بجلی متاثر ہوئی ہے جبکہ کئی مقامات پر پانی کی سپلائی بھی متاثر ہوئی ۔ ذرائع کے مطابق تھنہ منڈی کے معروف سیاحتی مقام ڈیرہ گلی میںاڑھائی فٹ برف گری ہے جسکی وجہ سے تھنہ منڈی بفلیاز سڑک گاڑیوں کی آمدورفت کے قابل نہ رہی ۔گریف حکام نے اس سڑک سے برف ہٹانے کا کام جاری رکھاہواہے، گریف حکام کے مطابق برف کو ہٹانے کے لئے جے سی بی مشین اور برف کاٹنے والی مشین بھی کام پر لگائی گئی ہے۔ موسم خوشگوار رہنے پر پیر کے روز ٹین کلو میٹر سڑک پر برف ہٹانے کا کام جاری رہے گا۔ بعد دوپہر سڑک کو گاڑیوں کی آمدورفت کے قابل بنایا جاسکتا ہے۔ یہ بات قابل ذکر ہے کہ جموں کو سرحدی علاقہ پونچھ کے ساتھ ملانے والی متبادل سڑک ہے جو آسان اور سیاحوں کے لئے دلفریب منظر پیش کرتی ہے اوریہ سڑک تھنہ منڈی سے تقریبا 21 کلو میٹر پر  بفلیاز  کے مقام پر تاریخی شاہراہ مغل روڈ سے جوڑتی ہے۔