برسبین میں ٹیسٹ سیریزجیتنے کے ساتھ نمبر ون رینکنگ رہے گی داؤ پر

 برسبین، 14 جنوری //ہندوستان اور آسٹریلیا کے درمیان چار ٹسٹ میچوں کی بارڈر۔گواسکر ٹرافی کے لئے فیصلہ کن مقابلہ جمعہ سے برسبین کے میدان پر شروع ہونے جارہا ہے جس میں سیریز پر قبضہ کرنے کے ساتھ ساتھ آئی سی سی کی نمبر ون ٹسٹ رینکنگ بھی داؤ پر رہے گی۔ہندوستان اور آسٹریلیا 1-1 کی برابری کے ساتھ چوتھے ٹسٹ میں داخل ہونے جارہی ہیں۔ آسٹریلیا نے ایڈیلیڈ میں پہلا ٹسٹ آٹھ وکٹ سے جیتا تھا جبکہ ہندوستان نے میلبورن میں دوسرا ٹسٹ آٹھ وکٹ سے جیت کر سیریز میں برابری حاصل کی۔ سڈنی میں تیسرا ٹسٹ ڈرا پر ختم ہوا اور اب سیریز کا فیصلہ برسبین میں چوتھے اور فیصلہ کن ٹسٹ سے ہوگا۔ اگر ہندوستان برسبین ٹسٹ میں جیت جاتا ہے یا ڈرا کھیلتا ہے تو وہ بارڈر۔گواسکر ٹرافی اپنے پاس برقرار رکھے گا کیونکہ ہندوستان نے 19-2018 میں آسٹریلیا سے گزشتہ سیریز دو۔ایک سے جیتی تھی۔ اگر آسٹریلیا سیریز جیتنے میں کامیاب رہا تو وہ آئی سی سی ٹسٹ رینکنگ میں پھر سے نمبر ایک کی پوزیشن پر پہنچ جائے گا۔ اگر ہندوستان نے چوتھا ٹسٹ جیتا یا سیریز ایک۔ایک سے برابر رہی تو نیوزی لینڈ نمبر ایک پر برقرار رہے گا۔ موجودہ رینکنگ میں نیوزی لینڈ 118 پوائنٹ کے ساتھ پہلے، آسٹریلیا 116 پوائنٹ کے ساتھ دوسرے اور ہندوستان 114 پوائنٹ کے ساتھ تیسری پوزیشن پر ہے۔ہندوستان اس ٹسٹ سے پہلے اپنے زخمی کھلاڑیوں کی چوٹ سے پریشان ہے اور اس نے برسبین ٹسٹ کے لئے اپنی آخری الیون کا اعلان نہیں کیا ہے جبکہ آسٹریلیا نے اپنی آخری الیون کا اعلان کردیا ہے اور ٹیم میں ایک تبدیلی کی ہے۔  مارکس ہیرس کو زخمی ول پکووسکی کی جگہ ٹیم میں شامل کیا گیا ہے۔ پکووسکی کندھے کی چوٹ کی وجہ سے اس ٹسٹ سے باہر ہوگئے ہیں۔ سال 1999 نارائن کے لئے خوش آئند رہا۔ اس برس انہوں نے پانچ بار چیمپئن شپ جیتی ، دو بار برانڈز ہیچ ریس میں کامیابی حاصل کی۔ وہ دو پول پوزیشنیں ، تین تیز ترین لیپ، دو لیپس ریکارڈ کرنے میں کامیاب رہے۔ اسی سال وہ 30 ڈرائیوروں میں چیمپیئن شپ میں چھٹے نمبر پر رہے۔ وہ مکاؤ گرانڈ پرکس  میں چھٹے نمبر پر رہے۔ سال 2000 میں نارائن نے برٹش ایف 3 چیمپیئن شپ مقابلے میں حصہ لیا اور چوتھے مقام پر رہے۔ وہ اسپا فرینکر چیمپس بیلجیئم اور کورین سپر پری انٹرنیشنل ریس میں پوڈیم تک پہنچنے میں بھی کامیاب رہے۔ 2001 میں ، نارائن نے فارمولا نیپون ون 3000 چیمپیئن شپ میں حصہ لیا تھا اور پہلے دس ڈرائیورں میں شامل ہوئے۔ 2001 میں ، انہوں نے 14 جون کو سلورٹن کی فارمولا ون کار کی جاگوار ریسنگ میں حصہ لیا تھا اور وہ اس میں ٹیسٹ ڈرا کرنے والے پہلے ہندوستانی بن گئے تھے۔ ان کی کارکردگی سے متاثر ہوکر  انہیں سلورٹن کے بینسن اینڈ ہیجز جارڈن ہونڈئی  جے 11 میں شرکت کی دعوت دی گئی۔ سال 2002 میں ، نارائن نے ٹیم ٹاٹا آر سی موٹر اسپورٹ کے ساتھ پول پوزیشن حاصل کرتے ہوئے ٹیلیفونیکا ورلڈ سیریز میں حصہ لیا۔ برازیل میں انٹرلاگوس سرکٹ میں سب سے تیز نان ایف ون لیپ ٹائم کا ریکارڈ ان کے پاس ہے۔ 2003 میں نیسان کی ورلڈ سیریز میں حصہ لیتے ہوئے ، کارتکیئن نے مینارڈی ٹیک سے دو ریس مقالبے اپنے نام کئے اور چیمپئن شپ میں مجموعی طور پر چوتھے نمبر پر رہے۔یو این آئی