بدھل میں فائرنگ کے 2واقعات رونما ہوئے

راجوری//ضلع راجوری کے کوٹرنکہ سب ڈویژن میں نامعلوم مسلح افراد نے ایک 26سالہ نوجوان کو گھر میں سوئے ہوئے گولی مار کر ہلاک کردیا ہے جبکہ ایک مزید گھر پر بھی فائرنگ کی گئی تاہم اس میں اہل خانہ محفوظ رہے ۔حکام کے مطابق ہفتہ کی صبح تقریباً 4 بجے راجوری ضلع کے کوٹرنکہ بدھل کے تر گائیں گاو¿ں میں نامعلوم شخص نے ایک نوجوان پر گولی چلا دی جو اپنے گھر کے اندر سو رہا تھا۔انہوں نے بتایا کہ ملزم نے گھر کے باہری حصے میں واقع شیشے کی کھڑکی سے فائرنگ کی اور متاثرہ کے سر میں گولی لگنے سے وہ موقع پر ہی دم توڑ گیا۔پولیس نے مقتول کی شناخت کرامت شاہ (26) ولد علی اکبر شاہ سکنہ ترگائیں کے طور پر کی ہے جو شری ماتا ویشنو دیوی کٹرہ میں مزدوری کرتا تھا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ بعدمیں نبی شاہ ولد یاسین شاہ کے گھر پر بھی فائرنگ کی جوکہ چند میٹر کے فاصلے پر واقع ہے۔ان کا کہنا تھا کہ فائرنگ کے اس دوسرے واقعے میں گھر کے مرکزی دروازے کو جزوی نقصان پہنچا اور گولیاں کمرے کی دیواروں پرلگی تاہم خاندان کے چار افراد جن میں تین خواتین اور ایک عمر رسیدہ مرد شامل ہیںبچنے میں کامیاب ہو گئے ۔دریں اثنا، اس واقعے کے فوراً بعد پورے علاقے میں خوف و ہراس پھیل گیا اور لوگوں نے اسے اپنے لئے خوفناک واقعہ قرار دیا۔متاثرہ کی ماں نے بتایا کہ ”فائر کی آوازیں سننے کے فوراً بعد میں اپنے کمرے سے باہر آئی اور اپنے بیٹے کے کمرے میں اس کی دیکھ بھال کرنے گئی لیکن وہ بندوق کی گولی سے زخمی ہونے کی وجہ سے مردہ پڑا تھا“۔اُس نے بتایا کہ ”اس کے بعد اس نے شور مچایا جس کے بعد علاقہ کے لوگ موقعہ پر پہنچے اور پولیس کو اطلاع فراہم کی جس کے بعد پولیس کی ٹیم موقعہ پر پہنچی گئی ۔دوسری جانب اہل علاقہ کا کہنا ہے کہ انہیں پانچ گولیوں کی آوازیں سنائی دیں جس کے بعد وہ گھر سے باہر نکلے تو معلوم ہوا کہ علاقے کے ایک نوجوان کو گولی مار کر ہلاک کیا گیا ہے اور دوسرے گھر پر بھی گولیاں چلائی گئی ہیں۔مکینوں نے مانگ کرتے ہوئے کہا کہ مذکورہ واقعہ کی جلدازجلد تحقیقات کی جائے کیونکہ اس واقعہ سے پورے علاقہ میں میں خود و ہراس پھیل گیا ہے ۔پولیس اور سول انتظامیہ دونوں کے سینئر حکام صبح کے اوقات میں جائے حادثہ پر پہنچ گئے اور طبی اور قانونی کارروائی کے بعد آخری رسومات ادا کی گئیں۔سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس راجوری محمد اسلم نے بتایا کہ قانون کی متعلقہ دفعات کے تحت ایک کیس جس میں قتل اور اسلحہ ایکٹ کی دفعہ شامل ہیں ،بدھل پولیس اسٹیشن میں درج کی گئی ہے اور تحقیقات جاری ہے۔موصوف نے بتایا کہ خصوصی تحقیقاتی ٹیم کام پر ہے اور ملزمان کی جلد از جلد شناخت اور گرفتاری کےلئے تیزی سے تفتیش کی جا رہی ہے۔انہوں نے مزید بتایا کہ علاقے سے دو افراد کو بھی کچھ شک کی بنیاد پر حراست میں لیا گیا ہے اور ان سے پوچھ تاچھ جاری ہے۔