باہو پلازہ میں میگا نمائش گتیشیل جموں و کشمیر کا افتتاح حکومتی اسکیموں اور خدمات کیلئے لوگوں کو بیدار کرنا انتہائی اہم :جگل کشور

عظمیٰ نیوز سروس

جموں//گتیشیل جموں و کشمیر ایک 3 روزہ نمائش کا افتتاح ممبر پارلیمنٹ جگل کشور شرما نے کنٹری ان باہو پلازہ میں کیا۔اس نمائش میں مختلف سرکاری محکموں جیسے ڈیفنس ریسرچ ڈیولپمنٹ آرگنائزیشن (ڈی آر ڈی او)، نیو اسپیس انڈیا لمیٹڈ (این ایس آئی ایل)، انڈین کونسل آف ایگریکلچرل ریسرچ (آئی سی اے آر)، انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ (آئی سی ایم آر)،ریزرو بینک آف انڈیا (RBI)، ارتھ سائنسز کی وزارت (MOES)، AMUL، بھارت پیٹرولیم کارپوریشن لمیٹڈ (BPCL)، زرعی تحقیق اور تعلیم کا محکمہ (DARE)، مٹی اور زمین کے استعمال کا سروے آف انڈیا (SLUSI)، پودوں کی اقسام اور کسانوں کے حقوق کا تحفظ (PPVFRA)، کھادی اور گاؤں کی صنعت کمیشن (KVIC)، ایگریکلچر انفراسٹرکچر فنڈ (AIF)، بیورو آف انڈین اسٹینڈرڈز (BIS)، انڈیا ٹورازم، جواہر لعل نہرو پورٹ اتھارٹی (JNPA) ان لینڈ واٹر ویز اتھارٹی ہندوستان کا، کوچین شپ یارڈ کارپوریشن لمیٹڈ، وزارت جل شکتی پردھان منتری کرشی سینچائی یوجنا (PMKSY)، وزارت جل شکتی، مرکزی زمینی پانی بورڈ (CGWB)،انڈین ریلوے کنسٹرکشن انٹرنیشنل لمیٹڈ IRCON)، میرین پراڈکٹس ایکسپورٹ ڈیولپمنٹ اتھارٹی (MAPEDA)، محکمہ زراعت ریسرچ اینڈ ایجوکیشن (DARE)، آکاش انسٹی ٹیوٹ اور ڈیولپمنٹ کمشنر برائے دستکاری اور جیولوجیکل سروے آف انڈیا کے کاموں کی نمائش کی جائے گی۔ اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے ممبر پارلیمنٹ نے تقریب کی انفرادیت پر روشنی ڈالی، اور اس کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے حکومتی اسکیموں اور خدمات سے عوام کو فائدہ پہنچانے کے بارے میں بیداری پھیلانے پر زور دیا۔ انہوں نے حاضرین پر زور دیا کہ وہ اس بات کو پھیلائیں اور حوصلہ افزائی کریں۔یہ نمائش ایک انٹرایکٹو پلیٹ فارم بنانے کی کوشش کرتی ہے جہاں جموں کے لوگ سرکاری محکموں اور اداروں کی ایک وسیع صف سے جڑ سکتے ہیں۔ اس کا مقصد فلاحی اسکیموں اور پالیسیوں کے بارے میں قابل قدر بصیرت پیش کرنا ہے، جس سے طلباء بشمول حاضرین کو فائدہ پہنچے۔