بالاکوٹ کے سرحدی علاقہ میں بنکروں کا حال بے حال

مینڈھر //مینڈھر سب ڈویژن کی بالاکوٹ تحصیل میں تعمیر ہوئے کمیونٹی بنکروںکی حالت انتہائی خستہ ہو ئی ہے تاہم ابھی تک بنکروں کو قابل استعمال نہیں بنا یا جاسکا ہے ۔بالا کوٹ کے سرحدی علاقوں کے لوگوں نے تعمیراتی ایجنسیوں کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ متعلقہ ملازمین و آفیسران اعلیٰ حکام کو بنکروں کی تعمیر کے سلسلہ میں غلط جانکاری فراہم کررہے ہیں جس کی وجہ سے بنکروں کی تعمیر کے سلسلہ میں کوئی بھی معائینہ ٹیم علاقہ کار خ نہیں کررہی ہے ۔عام لوگوں نے بتایا کہ تعمیر اتی ایجنسیوں نے ٹھیکیداروں سے کمیونٹی بنکروں کی تعمیر کروائی تھی تاہم بنکروں کے لینٹر ڈالنے کے بعد اس طرف کوئی دھیان ہی نہیں دیا گیا جس کی وجہ سے اس وقت بھی کمیونٹی بنکروں میں بارشوں کا پانی بڑے پیمانے پر جمع رہتا ہے جبکہ بجلی و دیگر سہولیات بھی فراہم نہیں کی گئی ہیں ۔انہوں نے کہاکہ حالیہ کئی ماہ سے بنکروں کی تعمیر کا معائینہ کرنے کے سلسلہ میں ضلع سطح کے آفیسران سے رابطہ کیا جارہا ہے تاہم آپسی ملی بھگت کی وجہ سے ابھی تک تعمیر ات کو نہ تو معیاری بنایا گیا ہے اور نہ ہی اس کا معائینہ کرنے کیلئے کوئی ٹیم بالاکوٹ کے سرحدی علاقوں میں آئی ہے ۔انہوں نے کہاکہ کروڑوں روپے خرچ کرنے کے بعد بھی لوگوںکو سہولیات میسر نہیں ہو ئی ہے ۔مقامی لوگوں نے لیفٹیننٹ گورنر سے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ صوبائی سطح پر بنکروں کی تعمیر کی جانچ کروانے کیلئے ٹیمیں تشکیل دی جائے جبکہ ان ٹیموں میں متعلقہ اضلاع میں سے کوئی بھی آفیسر یا ملازم شامل نہ کیا جائے تاکہ مکمل تحقیقات کے بعد غیر قانونی عمل میں ملوث آفیسران و ملازمین کیخلاف کارروائی عمل میں لائی جاسکے ۔