باغبانی شعبہ کو درپیش نقصانات

جموں//گورنر کے مشیر خورشید احمد گنائی نے ایک ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے صوبہ کشمیر کے ڈپٹی کمشنروں اور کرگل، ڈوڈہ، رام بن اور پونچھ اضلاع کے ڈپٹی کمشنروں کے ساتھ ایک میٹنگ منعقد کی جس میں حالیہ برف باری سے باغبانی شعبۂ کو ہوئے نقصانات کا جائزہ لیا گیا۔فائنانشل کمشنر ریونیو ڈاکٹر پون کوتوال، کمشنر سیکرٹری ریونیو شاہد عنائت اللہ اور محکمہ زراعت و باغبانی کے اعلیٰ افسران نے بھی میٹنگ میں شرکت کی۔میٹنگ کے دوران ڈپٹی کمشنروں نے اپنے اضلاع میں میوہ درختوں بالخصوص سب کے درختوں کو پہنچے نقصان کی تفصیلات پیش کیں۔جن اضلاع میں سب سے زیادہ نقصان درج کیا گیا ہے اُن میں کولگام، شوپیاں، بڈگام، پلوامہ اور اننت ناگ شامل ہیں۔مشیر موصوف نے ڈپٹی کمشنروں کو ہدایت دی کہ وہ درختوںاور فصلوں کو پہنچے نقصان کا تخمینہ لگاکر متعلقہ صوبائی کمشنروں کے ذریعے ریونیو محکمہ کو رپورٹ پیش کریں۔ ڈپٹی کمشنروں کو مزید ہدایت دی گئی کہ وہ متعلقہ علاقوں میں محکمہ باغبانی کے تکنیکی عملے کو روانہ کر کے وہاں ہوئے نقصانات کا تخمینہ لگائیں اور ان علاقوں میں میوہ صنعت سے وابستہ باغ مالکان کو تکنیکی صلاح اور رہبری فراہم کریں۔پلوامہ ضلع میں زعفران کی فصل کو بھی نقصان پہنچا ہے۔بارہ مولہ، کپواڑہ، بانڈی پورہ اور گاندر بل کے ڈپٹی کمشنروں نے بھی مشیر موصوف اور اعلیٰ حکام کو اپنے اپنے اضلاع میں فصلوں کو ہوئے نقصان کے بارے میں جانکاری دی۔