بارہمولہ کے مشنری اسکول پر20ہزار روپیہ کا جرمانہ عائد

بارہمولہ // سینٹ جوزف اسکول بارہمولہ کی جانب سے والدین کوبچوں کیلئے ایک مخصوص دکان سے کتابیںخریدنے پر مجبور کئے جانے پرمحکمہ لیگل میٹرو لو جی نے سوموار کو اسکول انتظامیہ پر 20 ہزار روپے کا جرمانہ عائد کیا ۔معلوم ہو اہے کہ محکمہ کوکئی والدین نے شکایت کی تھی کہ بارہمولہ میں قائم سینٹ جوزف اسکول طلباء کو’ ویلی بک شاپ‘ نامی ایک کتب فروش سے کتابیں خریدنے پر مجبور کررہا ہے ،جس کی بنا پر لیگل میٹرو لو جیکل ڈیپارٹمنٹ نے اسکول انتظامیہ کے خلاف  کارروائی کرتے ہوئے اسکول پربیس ہزار روپے جرمانہ عائد کیا اور یہ پایا کہ اسکول انتظامیہ نے – 2011 a Rule Packaged Commodities  کی خلاف ورزی کی ہے ۔انہوں نے یہ بھی پایا کہ ایک ہی کتاب فروش کے پاس کتابیں موجود ہیں ۔اس دوران اس بات کا بھی انکشاف ہوا ہے کہ اسکول انتظامیہ نے ان تمام والدین جن کے اس اسکول میں بچے زیر تعلیم ہیں ،کو موبائیل پر ایک ایس ایم ایس بھیجی تھی کہ وہ ویلی بک شاپ نامی کتاب فروش کے پاس ہی بچوں کی کتابیں اور اسٹیشنری خریدیں۔ محکمہ لیگل میٹرو لو جیکل کے افسر شاہ غازی  نے اسکول انتظامیہ کے خلاف ایک کیس بھی درج کیا اور بک شاپ کے خلاف بھی سخت کارروائی کی ۔ادھر والدین نے الزام لگایا ہے کہ ضلع کے بیشتر پرائیویٹ اسکول اب تجارتی مراکز میں تبدیل ہو چکے ہیں ۔ انہوں نے گورنر انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ ان اسکولوں کے خلاف جلد از جلد کاروائی عمل میں لانی چاہئے جو والدین کو دو دو ہاتھوں لوٹ رہے ہیں ۔ اس دوران چیف ایجوکیشن آ فیسر عبدلاحد گنائی نے بتایا کہ ایسی شکایات موصول ہونے کے بعد ضلع کے تمام پرا ئیویٹ اسکولوں کو ایک سرکیولر جاری کیا گیا ہے جس میں ان کوایسی حرکت سے باز آنے کی ہدایت دی گئی ہے۔