بارہمولہ میں اپنی نویت کا پہلا اور منفرد ڈرائیونگ ٹیسٹ

سوپور// شمالی کشمیر کے بارہمولہ ضلع میں ٹرانسپورٹ ڈیپارٹمنٹ نے ڈرائیونگ لائسنس حاصل کرنے کے لئے روایتی ڈرائیونگ ٹیسٹ کے بجائے منفرد انداز میں آن روڑ ڈرائیونگ ٹیسٹ لیا گیا۔اسسٹنٹ ریجنل ٹرانسپورٹ آفیسر بارہمولہ انجینئرمبشرجان نے بتایا کہ انہوں نے حال ہی میں پانچ روزہ ڈرائیونگ ٹیسٹ ضلع کے سات مقامات پرلئے اور اس کا انعقاد سیکھنے والوں کے ساتھ ساتھ ڈرائیونگ لائسنس کے خواہشمند افراد کے لئے بھی کیا گیا تھا۔ ڈرائیونگ لائسنس ٹیسٹ کے علاوہ اس پروگرام کا مقصد عوام کو ڈرائیونگ کرتے وقت بہت سارے معاملات کے بارے میں آگاہ کرنا تھا۔ اس ڈرائیونگ ٹیسٹ مہم نے مقامی لوگوں میں زبردست جوش و خروش پیدا کیا ۔ اے آر ٹی او نے کہا کہ انہوں نے ڈرائیونگ ٹیسٹوں کے لئے مختلف سڑکوں کا انتخاب کیا۔ انہوں نے کہا کہ یہ مہم سینٹرل موٹر وہیکل رول 1989کے تحت ٹرانسپورٹ سکریٹری ہردیش کمار ٹرانسپورٹ کمشنر اور ڈی سی بارہمولہ کی ہدایت پر شروع کی گئی تھی۔ انہوں نے کہا کہ پہلے لائسنس کے خواہشمندافراد کی جانچ پڑتال ہوتی ہے ۔ روڈ ٹیسٹ ڈرائیو کا بنیادی مقصد ڈرائیور کی چوکسی کا جائزہ لینا ہے جس کا مقصد یہ یقینی بنانا ہے کہ ڈرائیور ڈرائیونگ کے دوران ہمیشہ چوکس رہتا ہے اور گاڑی کی کچھ بنیادی باتوں کے بارے میں جانتا ہے ۔اس کے علاوہ یہ ڈرائیوروں کی صلاحیت کا تعین کرتا ہے کہ وہ گاڑی کو پہاڑی کے اوپر اور نیچے کی طرف چلاتے ہوئے گاڑی کو کنٹرول کر سکے۔اس بارے میں سوپور کے ایک خواہشمند غلام نبی تیلی نے ڈرائیونگ لائسنس حاصل کرنے کیلئے ڈرائیونگ ٹیسٹ میں حصہ لیا تھا ،نے کہا کہ اس نے زندگی میں پہلی بار دیکھا کہ صحیح اور صاف وشفاف جانچ پڑتال کے ساتھ ساتھ ڈرائیونگ کے قوانین سکھانے کے بعد ہی ڈرائیونگ لائسنس اجرا کی جاتی ہے۔ انہوںنے اے آر ٹی او کی سراہنا کرتے ہوئے کہا کہ اگر آئندہ ٹیسٹ ڈرائیونگ کی مہم ایسی ہی رہی تو سڑک حادثات میں نمایاں کمی دیکھنے کو ملے گی۔ اسی طرع سے ایک اور خواہشمند امیدوارڈاکٹر کونثر نے بتایا کہ اس نے پہلی بار اس طرز کی ڈرائیونگ ٹیسٹ دیکھا ہے جو کہ ایک بہت ہی اچھا تجربہ ہے۔