این آئی اے کی ٹیم سرینگر میں

 سرینگر // قومی تحقیقاتی ایجنسی ’ این آئی اے‘ نے بدھ کو حزب المجاہدین سربراہ سید صلاح الدین کے 4بیٹوں سمیت خاندان کے 7افراد سے پوچھ تاچھ کی۔دن بھر پوچھ تاچھ کرنے کے بعد سبھی کو شام کے وقت چھوڑ دیا گیا۔این آئی اے نے بدھ کی صبح صلاح الدین کے بیٹوں شکیل احمد، جاوید احمد،معید احمد اور واحد احمد کے علاوہ انکے داماد محمد عمر اور انکے والد کے علاوہ ایک بھانجے کو ہمہامہ کیمپ پر بلایا۔دن بھر ان سبھی سے کئی کئی گھنٹوں تک پوچھ تاچھ کی گئی۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ صلاح الدین کے اک بیٹے شاہد یوسف کو پہلے ہی گرفتار کر کے تہاڑ جیل میں بند کردیا گیا ہے۔ذرائع نے بتایا کہ پوچھ تاچھ کے دوران صلاح الدین کے اہل خانہ سے کسی قسم کی رقومات حاصل کرنے کے بارے میں پوچھ تاچھ کی گئی۔ اسکے علاوہ بیٹوں کی جائیداد کے بارے میں بھی آگاہی حاصل کی گئی۔ان ملکیتی اراضی کے بارے میں پوچھا گیا ۔معلوم ہوا ہے کہ ابتدائی پوچھ کے دوران کچھ بھی این آئی اے کو غیر قانونی نہیں لگا جس کے بعد انہیں قریب سات بجے جانے دیا گیا۔