این آئی اے کی تازہ کارروائی

 سرینگر //مرکزی تحقیقاتی ایجنسی (این آئی اے ) نے تازہ کارروائی کے دوران ڈپٹی جیل سپر انٹنڈنٹ سمیت 2افراد کو نو جوانوں کو عسکریت کی طرف مائل کر نے اور سرحد پاربھیجنے کی پاداش میں گر فتارکیا ہے۔ دونوں کی جسمانی ریمانڈر حاصل کر لی گئی ہے۔این آئی اے کی جانب سے اس حوالے سے بتایا گیا ہے کہ اشفاق احمد پال ساکن شو پیاں سنٹرل جیل سرینگر میں مقید تھا جس دوران انہوں نے ڈپٹی جیل سپر انٹنڈنٹ کی معانت سے دو نو جوانوں کو سر حد پار اسلحہ کی تر بیت حا صل کر نے کے لئے مائل کیا ۔انہوں نے بتایا کہ جیل میںیہ سازش رچنے کے دوران انہیں ڈپٹی جیل سپر انٹنڈنٹ کی معاو نت حاصل تھی ۔این آئی اے کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ سہیل احمد اور دانش غلام لون، جن کے خلاف این آئی اے میں اسلحہ کی تر بیت سر حد پار حا صل کر نے سے متعلق کیس درج ہے، کو اشفاق احمد پالا سر حد پار اسلحہ کی تربیت حا صل کر نے کے لئے اکسا رہا تھا ۔انہوں نے بتایا ان ملزمان کے در میان بلیک بیری کے کے ذریعے مسلسل رابطے ہو تے رہے ۔انہوں نے بتایا کہ سہیل احمد اور دانش کو 30اکتوبر 2017کو ثبوت و شواہد کی بنیاد پر گر فتار کر لیا گیا تھا ۔اس دوران انہوں نے بتایا کہ این آئی اے کی خصوصی عدالت نے اشفاق احمد پالا کو 10 روزہ ریمانڈ پر اور ڈپٹی جیل سپر انٹنڈنٹ فیروز احمد کو 6روزہ ریمانڈ پر این آئی اے کی تحویل میں دے دیا گیا ۔