ایس پی اوز اور ہوم گارڈس اسامیوں کی بھرتیاں | ریزرویشن کیلئے جموں کشمیر پولیس رولزمیں ترمیم

بلال فرقانی

سرینگر//یوٹی انتظامیہ نے جموں کشمیر پولیس ضوابط 1960میں ترمیم کرتے ہوئے سپیشل پولیس افسران(ایس پی اوز) اور رضاکار ہوم گارڈز کے لیے اسامیوں کیلئے ریزرویشن کی نشاندہی کی ہے۔ محکمہ داخلہ نے کہا ہے پولیس ایکٹ، سموت، 1983 کے سیکشن 43 کی ذیلی دفعہ (3) کے ذریعے عطا کردہ اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے جموں و کشمیر پولیس رولز، 1960 میں ترامیم کی گئی ۔ انہوں نے کہا کہ قاعدہ 172-بی کے بعد، قاعدہ 172-سی کو شامل کیا گیا ہے جس کے تحت براہ راست بھرتی میں کانسٹیبل کی سطح پر ایس پی اوزکے لیے دستیاب اسامیوں کے 15فیصد اور رضاکار ہوم گارڈوںکے لیے دستیاب اسامیوں کا 4 فیصد کی حد تک ریزرویشن ان کے حق میں مختص کی جائے گی ۔ کم از کم تین سال کی مصروفیت رکھنے والے زمرے کے اہل امیدوار دستیاب نہ ہونے کی صورت میں اس طرح محفوظ کردہ کوٹہ کو اگلے سال تک نہیں بڑھایا جائے گا۔ پرنسپل سیکریٹری محکمہ داخلہ چندراکر بھارتی کی طرف سے جاری ایس او میں کہا گیا ہے کہ قاعدہ 182 کے ذیلی قاعدہ (1) میں کہا گیا ہے’’بشرطیکہ قاعدہ 176 کے ذیلی قاعدہ (1) کی شق (c) کے مطابق اگر ایس پی اوز اور رضاکار ہوم گارڈز کی کم از کم 3 سال کی مصروفیت ہوگی تو کسی بھی طور پر، کانسٹیبل کے طور پر براہ راست بھرتی کے لیے عمر کی بالائی حد 40 سال ہوگی ۔