ایس آر او 520میں لازمی ترامیم کی جائیں:قیوم وانی

 سرینگر //ایجیک صدر عبدالقیو وانی نے وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کی جانب سے عارضی ملازمین کو مستقل کرنے کے قدم کا خیر مقدم کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریاستی وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی، وزیر خزانہ حسیب درابو ، چیف سیکریٹری اور پرنسپل سیکریٹری فائنانس نے عارضی ملازمین کو مستقل کرنے کا بہترین عمل شروع کیا ہے تاہم حکومت کی جانب سے جاری کئے گئے آیس آر او 520میں کافی خامیاں موجود ہے۔ وانی نے کہا کہ کیجول لیبروں ، لوکل باڈی ملازمین ، مونسپل کارپوریشن ، فئیر پرائز ڈیلرز اور دیگر عارضی ملازمین کے ساتھ ناانصافی کی گئی ہے جو پچھلے کئی سال سے مستقل ہونے کا انتظار کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ ان ملازمین نے کم تنخواہوں پر کام کرتے ہوئے خون پسینہ ایک کیا ہے مگر حکومت کی جانب سے جاری کئے گئے ایس آر او کے مطابق 10سال سے زیادہ نوکری کرنے والے ملازمین کو ہی مستقل کیا جارہا ہے جبکہ ایس آر او میں تنخواہیں مقرر کی گئی ہے جو کم سے کم تنخواہ کے قانون کے برابر بھی نہیں ہے۔ انہوں نیکہا کہ وہ ایس آر او 520میں ترمیم کرکے پچھلے کئی سال سے مستقلی کا انتظار کرنے والے ملازمین کو راحت نصیب پہنچائی جائے۔ عبدالقیوم وانی نے کہا کہ ایجیک قیادت غریب ملازموں کے حقوق کو اجاگر کرتا رہے گا اور ملازمین کے حقوق کیلئے کسی بھی حد تک جاسکتے ہیں۔ عبدالقیوم وانی نے کہا کہ ایجیک ایس آر او میں ترمیم کیلئے  وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی، وزیر خزانہ اور چیف سیکریٹری سے ملاقات کے دوران ایس آر او میں ترمیم پر زور دے گا۔  انہوں نے ملازمین کو یقین دلایا کہ وہ ملازمین کے حقوق کیلئے آخری دم تک لڑتے رہے گیں۔