آسیہ اندرابی 10اگست تک جوڈیشل ریمانڈ پر جیل منتقل

 بلال فرقانی
 
سرینگر// قومی تفتیشی ایجنسی نے دختران ملت سربراہ آسیہ اندرابی کو 2 ساتھیوںناہیدہ نسرین اور فہمیدہ صوفی سمیت خصوصی عدالت میں پیشکیا جس کے بعد انہیں10اگست تک جوڈیشل ریمانڈ پر بھیج دیا گیا۔ آسیہ اندرابی اور انکی ساتھیوں کے خلاف26 اپریل کو کیس درج کیا گیاتھا،جس میں یہ بتایاگیاکہ آسیہ اندرابی نے جموں وکشمیرکوبھارت سے الگ کرنے کاپرچارکرنے کیساتھ ساتھ کشمیری نوجوانوں کوملک مخالف تشدداورجہادکیلئے اُکسانے کاارتکاب کیاہے۔ پیر کو آسیہ سمیت تینوں خواتین کی10 روزہ ریمانڈ ختم ہوئی جس کے بعد انہیں پیر کوپونم بامبا کی عدالت میں پیش کیا گیا۔این آئی اے نے عدالت سے استدعاکی کہ تینوں خواتین کومزیدپوچھ تاچھ کیلئے ان کے سپردکیاجائے ۔ تاہم خصوصی عدالت کی خاتون جج نے این آئی اے کے وکیل سے مزید ریمانڈ پر جرح کی لیکن وہ کوئی معقول وجہ نہیں بتا سکے۔اس کے بعدآسیہ اندرابی ،فہمیدہ صوفی اورناہدہ نسرین کو24روز تک کیلئے جوڈیشل ریمانڈمیںدیکر جیل منتقل کرنے کے احکامات صادر کئے۔تینوں کشمیری خواتین کوتہاڑجیل منتقل کردیا گیا ہے۔دختران ملت نے آسیہ اندرابی کو 24 دن کی عدالتی تحویل میں دئے جانے کی مذمت کی ہے۔