آئی جی پی کشمیر نے سوپور میں سیکورٹی صورتحال کا جائزہ لیا

سری نگر// انسپکٹر جنرل آف پولیس کشمیر رینج وجے کمار نے سوپور میں سیکورٹی صورتحال کا ایک اعلیٰ سطحی میٹنگ کے دوران جائزہ لیا ۔
 
انہوں نے میٹنگ کے دوران آفیسران پر زورد یا کہ سرگرم ملی ٹینٹوں کے خلاف آپریشنز میں تیزی لائی جائے۔
 
پولیس کے ایک ترجمان نے بتایا کہ آئی جی کشمیر وجے کمار نے پیر کے روز سوپور میں سیکورٹی صورتحال کا جائزہ لیا۔
 
انہوں نے بتایا کہ میٹنگ کے دوران آئی جی کشمیر کو شمالی کشمیر کی سیکورٹی صورتحال کے بارے میں آفیسران نے جانکاری فراہم کرتے ہوئے بتایا کہ پولیس کسی بھی چیلنج کا مقابلہ کرنے کے لئے تیار ہیں۔
 
انہوں نے بتایا کہ آئی جی کشمیر نے میٹنگ کے دوران پولیس آفیسران پر زور دیا کہ سرگرم ملی ٹینٹوں کے خلاف آپریشنز میں تیزی لائی جائے۔
 
اُن کے مطابق آئی جی وجے کمار نے بتایا کہ پولیس اور لوگوں کے درمیان تال میل کو مزید مضبوط کرنے کی ضرورت ہے۔
 
انہوں نے بتایا کہ آئی جی کشمیر نے آفیسران پر زور دیا کہ سماج دشمن عناصر کے خلاف بھی سخت کارروائی عمل میں لائی جائے۔
 
پولیس ذرائع کے مطابق میٹنگ کے دوران آئی جی کشمیر وجے کمار نے منشیات اور نشیلی ادویات کا کاروبار کرنے والوں کے خلاف بھی سخت کارروائی عمل میں لانے کے احکامات صادر کئے۔
 
ذرائع کا کہنا ہے کہ آئی جی نے پولیس اور فوج کے سینئر آفیسران کی مشترکہ میٹنگ کی صدارت کی جس دوران اُنہیں شمالی کشمیر کی سیکورٹی صورتحال کے بارے میں مفصل جانکاری فراہم کی گ۔ئی
 
دریں اثنا آئی جی کشمیر نے پیر کے روز ہی جنوبی کشمیر کے حسن پورہ بجبہاڑہ جا کر وہاں پر مہلوک پولیس کانسٹیبل کے گھر والوں سے تعزیت کا اظہار کیا۔
 
اس موقع پر آئی جی نے اہل خانہ کویقین دلایا کہ اُن کی ہر سطح پر مدد فراہم کی جائے گی۔
 
بتادیں کہ گزشتہ روز حسن پورہ بجبہاڑہ میں مشتبہ جنگجووں نے پولیس ہیڈ کانسٹیبل علی محمد گنائی پر فائرنگ کی تھی جس کے نتیجے میں اُس کی موقع پر ہی موت واقع ہوئی۔