انگرالہ مہورمیں تیندوے کے حملوں کاسلسلہ جاری

مہور//مہورکے انگرالہ گائوں میں جنگلی جانوروں کے حملے کی وجہ سے مقامی لوگوں میں خوف وہراس پایاجارہاہے۔ذرائع کے مطابق گزشتہ دوماہ کے دوران انگرالہ میں جنگلی تیندوے نے حملہ کرکے 15سے زائد بھیڑبکریوں کوہلاک کردیاہے ۔جنگلی تیندوے نے گزشتہ روز پھرسے انگرالہ گاؤں کارخ کرکے گزشتہ رات علی الصبح لگ بھگ4 بجے ایک تیندوے نے محمد ایوب ولد غلام رسول کے گھر میں حملہ کر کے اس کی ایک بکری کو ہلاک کر دیا۔ذرائع کے مطابق انگرالہ میں رات کو 4 بجے کے قریب جب مکان مالک سحری کھانے میں مصروف تھے ،اتنے میں تیندوے نے ان کے گھر کے باہر ان کی ایک بکری کو ہلاک کر دیا ۔ بعدازاں مقامی لوگوں نے وائلڈ لائف بلاک آفیسر مہور محمد مبارک کو اطلاع دی جو موقعہ پر پہنچے اور نقصان کا جائزہ لیا۔مقامی سرپنچ محمد مشتاق نے کشمیر عظمیٰ کو بتایاکہ انگرالہ میں گزشتہ دو ماہ کے دوران 15 سے زائد بھیڑ بکریاں تیندوے کا نوالہ بن چکی ہیں لیکن حد تو یہ ہے ابھی تک ہزاروں کی تعداد میں بھیڑ بکریاں تیندوے کا نوالہ بن گئی ہیں لیکن کسی بھی شخص کو معاوضہ نہیں دیا گیا۔لوگوں کا کہنا ہے کہ محکمہ وائلڈ لائف کی جانب سے بھیڑ بکریوں کے نقصان کا کوئی معاوضہ نہیں ملتا۔لوگوں نے حکومت سے مانگ کی ہے کہ متاثرہ لوگوں کے حق میں معاوضہ منظور کیا جائے۔