انٹر نیٹ اور ریل سروس معطل ،امتحانات ملتوی

 سرینگر// سوشل میڈیا پر متحرک رہ کر پورہی وادی میں مقبولیت حاصل کرنے والے برہان وانی کی پہلی برسی کے پیش نظر وادی بھر میں انٹرنیٹ خدمات کو معطل کردیا گیا ہے ۔انٹر نیٹ کے ساتھ ساتھ ریل سروس بھی معطل رہی جبکہ کشمیر یونیورسٹی نے 8جولائی کو منعقد ہونے والے تمام امتحانات کو ملتوی کرنے کا فیصلہ لیا ہے ۔وادی میں انٹر نیٹ کی پاپندی سے جہاں عام لوگ پریشان ہیں وہیں سرکاری ذرائع نے بتایا کہ آیسا قدم موجودہ حالات کودیکھتے ہوئے لیا گیا ہے کیونکہ کچھ عناصر کی جانب سے انٹر نیٹ کا غلط استعمال کیا جاتا ہے ۔ وادی میں انٹر نیٹ کی معطلی کے ساتھ ہی نہ صرف طلاب بلکہ الیکٹرانک بزنس اور بینکنگ نظام پوری طرح سے ٹھپ ہو کر رہ گیا ہے جبکہ مقامی اور قومی میڈیا اداروں سے وابستہ میڈیا اہلکار بھی جمعہ کو اپنی رپورٹیں متعلقہ اداروں تک نہیں پہنچاسکے اور نتیجے میں اِن کی معمول کی سرگرمیاں بری طرح سے متاثر ہوکر رہ گئی ہیں۔ وادی میں انٹرنیٹ خدمات کی معطلی کی وجہ سے مقامی باشندوں کے ساتھ ساتھ امرناتھ گپھا کے درشن کے لئے آنے والے یاتریوں کو بھی شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ معلوم رہے کہ حزب کمانڈر برہان والی کو گذشتہ برس 7جولائی کو جنوبی کشمیر کے بمڈورہ ککرناگ میں ایک مختصر جھڑپ کے دوران اس کے دو ساتھیوں کے ساتھ ہلاک کیا گیا تھا۔برہان وانی وادی میں اس لئے زیادہ مقبول تھا کیونکہ وہ انٹر نیٹ اور سوشل میڈیا کا استعمال کر کے نئے ویڈیو اور اپنے فوٹو اپ لوڈ کرتا تھا۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ انٹرنیٹ خدمات کی معطلی کے حوالے سے انسپکٹر جنرل آف پولیس منیر احمد خان کی جانب سے جمعرات کو انٹرنیٹ خدمات فراہم کرنے والی کمپنیوں کے نام دو الگ الگ حکم نامے جاری کئے گئے۔ جہاں ایک حکم نامے میں مواصلاتی کمپنیوں کو انٹرنیٹ خدمات کلی طور پر منقطع کرنے کے لئے کہا گیا وہیں دوسرے حکم نامے میں تمام لیز لائن انٹرنیٹ سروس پرووائڈرس کو تمام سوشل میڈیا ویب سائٹس بلاک کرنے کے لئے کہا گیا۔تاہم ظاہری طور پر سوشل میڈیا کو بلاک کرنے میں ناکام ہونے کے بعد بی ایس این ایل نے براڈبینڈ انٹرنیٹ خدمات کو کلی طور پر معطل کردیا۔ ادھر وادی کشمیر میں ریل خدمات جمعہ کو ایک بار پھر معطل کردی گئیں۔ یہ خدمات علیحدگی پسند قیادت کی طرف سے جاری کردہ احتجاجی پروگرام کے پیش نظر معطل کردی گئی ہیں۔ ریلوے کے ایک عہدیدار نے بتایا کہ ہم نے سیکورٹی وجوہات کی بناء پر جمعہ کو تمام ٹرینوں کی آمدورفت معطل کردی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ وسطی کشمیر کے بڈگام اور شمالی کشمیر کے بارہمولہ کے درمیان چلنے والی تمام ٹرینوں کو معطل کیا گیا ہے۔کشمیر یونیورسٹی نے اس دوران 8جولائی کو ہونے والے تمام امتحانات کو ملتوی کرتے ہوئے علان کرتے ہوئے کہا کہ امتحانات کیلئے اگلی تاریخوں کا اعلان بعد میں کیا جائے گا ۔