انتظامیہ تشہیربازی میں مصروف: سکینہ ایتو

 حکام کو عوامی مشکلات دور کرنے میں کوئی دلچسپی نہیں  
سرینگر// نیشنل کانفرنس کی سٹیٹ سکریٹری اور سابق وزیر سکینہ ایتو نے کہا ہے کہ موجودہ صورتحال سے صاف ظاہر ہورہا ہے کہ انتظامیہ کو عوام کو راحت پہنچانے میں کوئی بھی دلچسپی نہیں اور انتظامیہ صرف اور صرف تشہیر بازی میں مصروف ہے۔جموں و کشمیر کے کونے کونے میں راشن، پانی اور بجلی کی قلت اور سڑکوں کی خستہ حالی نے انتظامیہ کی نااہلی اور عوام کش پالیسیاں عیاں کرکے رکھ دی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ راشن، کھانڈ،بجلی، پانی اور دیگر ضروریاتِ زندگی کی عدم فراہمی سے لوگ پریشانِ حال ہیں جبکہ ان مشکلات کا سدباب کرانے کیلئے سرکاری مشینری سے کوئی بھی کام نہیں ہوپارہا ہے۔ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ لوگوں کو راحت پہنچانا اور عوامی مشکلات کو جنگی بنیادوں پر حل کرنا انتظامیہ کی اولین ترجیح ہونی چاہئے لیکن انتظامیہ صرف تشہیر بازی میں مصروف ہے اور عوامی مشکلات کے تئیں عدم دلچسپی کا مظاہرہ کیا جارہا ہے۔انہوں نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ رمضان المبارک میں بھی لوگوں کو ضروریاتِ زندگی میسر نہیں۔ بدقسمتی سے ماہِ رمضان میں بھی بہت سارے علاقے پانی اور بجلی کی شدید قلت سے دوچار ہیں۔ انہوں نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ رمضان المبارک میں بھی حکومت کی طرف سے پانی ، بجلی اور راشن کی سپلائی میں کسی قسم کی معقولیت نہیں لائی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ موسم گرما میں بھی چلۂ کلان کا بجلی شیڈول جاری ہے، راشن گھاٹ خالی پڑے ہیں۔ انہوں نے انتظامیہ پر زور دیا کہ ماہ رمضان کے دوران ضروریاتِ زندگی خصوص بجلی اور پانی کی سپلائی یقینی بنائے ۔ اس کے ساتھ ساتھ لوگوں کو راشن بھی میسر رکھا جائے۔