امسال بھی ماہ صیام میں عمرہ نہیں ہوگا | 17مئی تک سعودی ایئر پورٹ بند | حج کا فیصلہ آئندہ 15روز میں

 سرینگر // عالمی وباء کی وجہ سے اس سال بھی ماہ صیام کے دوران عمرہ نہیں ہوگا کیونکہ سعودی عرب حکومت نے تمام ائیرپورٹ 17مئی تک بند کردئے ہیں۔جموں و کشمیر ایسوسی ایشن آف حج و عمرہ کمپنیز کے صدر فیروز احمد نے بتایا’’ سعودی  حکومت نے 17مئی تک تمام ائیر پورٹ بند کردئے ہیں اور اس کا مطلب ہے کہ اس سال بھی ماہ صیام کے دوران عمرہ نہیں ہوگا‘‘۔ انہوں نے کہا ’’ ہر سال ماہ صیام کے دوران 4000افرادعمرہ کیلئے جاتے ہیں اور اس سال بھی عمرہ نہ ہونے کی وجہ سے جموں و کشمیر میں حج و عمرہ کمپنیز کو 400کروڑ روپے کا نقصان اٹھانا ہوگا‘‘۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال بھی حج و عمرہ کمپنیز نے ماہ صیام کے دوران 3ہزار لوگوں کو عمرہ پر بھیجنے کیلئے دستیاویزات جمع کئے تھے لیکن عالمی وباء کی وجہ سے پھر وہ منسوخ ہوگیا ۔ انہوں نے کہا کہ بھارت کی مختلف ریاستوں میں 60ہزار لوگوں سے حج کیلئے دستاویزات اور رقومات حاصل کی گئی ہیں لیکن جموں و کشمیر میں ابھی ایسا نہیں کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حج کے حوالے سے بھی سعودی عرب حکومت  آئندہ 10سے 15دنوں کے اندر فیصلہ کرے گی۔ فیروز نے کہا کہ جموں و کشمیر میں پچھلے 2سال کے دوران حج و عمرہ کمپنیوں میں کام کرنے والے 10ہزار افراد بے روز گار ہوگئے ہیں اور اس سال بھی اگر حج و عمرہ نہیں ہوا تو کمپنیاں مزید نقصان سے دو چار ہونگی۔