الیکشن کمیشن نے انتخاب والی ریاستوں میں کورونا صورت حال کا جائزہ لیا

نئی دہلی// مرکزی وزارت صحت و خاندانی بہبود کے سکریٹری راجیش بھوشن نے الیکشن کمیشن کو اتر پردیش اور پنجاب سمیت انتخاب والی پانچ ریاستوں میں کووڈٹیکہ کاری اور کورونا وبا کے پھیلنے کی تازہ ترین صورتحال سے آگاہ کیا۔ وزارت صحت کے افسران نے جمعرات کو یہاں الیکشن کمیشن کو پنجاب، اتر پردیش، اتراکھنڈ، گوا اور منی پور میں کووڈ ٹیکہ کاری اور انفیکشن کی صورتحال سے آگاہ کیا۔ ڈاکٹر رندیپ گلیریا، ڈائرکٹر آل انڈیا انسٹی ٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز، نئی دہلی اور ڈاکٹر بلرام بھارگو، ڈائرکٹر جنرل، انڈین کونسل آف میڈیکل ریسرچ بھی اس موقع پر موجود تھے ۔اس دوران مرکزی وزارت صحت اور خاندانی بہبود کے سکریٹری راجیش بھوشن نے جمعرات کو پرنسپل سکریٹریوں اور صحت کے سکریٹریوں کو بھیجے گئے ایک خط میں کہا ہے کہ 10 جنوری سے صحت کے کارکنوں، کورونا واریرس اور بزرگ شہریوں کوکووڈ کا اضافی ٹیکہ دیناشروع کردیاجائے گا۔ تمام ریاستوں کو تمام صحت کارکنوں، کورونا واریرس اور بزرگ شہریوں کو تیزی سے اضافی کووڈ ویکسین فراہم کرنی چاہیے ۔ مرکزی وزارت داخلہ اور کابینہ سکریٹریٹ کے تحت آنے والے مسلح افواج اور خصوصی دستوں کے تمام اہل اہلکاروں کو اضافی ویکسین تیزی سے دی جانی چاہئے ۔ الیکشن ڈیوٹی کرنے والے ملازمین کو بھی اضافی ویکسین دی جائے ۔غور طلب ہے کہ 10 جنوری سے ہیلتھ ورکرز، کورونا واریرس اور بزرگ شہریوں کو کووڈ کی اضافی ویکسین دینا شروع کی جائے گی۔ اضافی ویکسین کے طور پر، تمام افراد کو وہی ویکسین دی جائے گی جو وہ پہلے لے چکے ہیں۔ یہ ویکسین سب کے لیے مفت ہوں گی۔الیکشن کمیشن نے پولنگ والی ریاستوں میں کووڈ کی صورتحال جاننے کے لیے وزارت صحت کے افسران اور ماہرین صحت کو بلایا تھا۔