الطاف بخاری نے شہر میں متعددعوامی پارکوں کا افتتاح کیا

 سرینگر//وزیر تعلیم سید محمد الطاف بخاری نے حلقہ انتخاب امیرا کدل میں نئے سرے سے مرمت شدہ کئی پبلک پارکوں کا افتتاح کیا جنہیں ستمبر2014 کے سیلاب سے نقصان پہنچا تھا۔ وزیر نے جنرل پوسٹ آفس کے پاس شیر کشمیر پارک کا افتتاح کیا جس کی مرمت پر94.4 لاکھ روپے خرچ کئے گئے۔ پھولبانی محکمہ کے سربراہ محمد حُسین میر نے وزیر کو بتایا کہ نزدیکی ہیری ٹیج عمارت سیلاب سے اب تک بند پڑی ہے، جس کے لئے وزیر نے ہدایات دیں کہ اس عمارت کو بھی نئے سرے سے مرمت کر کے دیدہ ذیب بنایا جائے۔پولو گراؤنڈ پارک کے دورے کے دوران وزیر نے ایک فوارے کا افتتاح کیا جس کی تعمیر پر18.73 لاکھ روپے خرچ کئے گئے ہیں۔ انہوں نے Dhalia باغ کا بھی افتتاح کیا جس کی دیوار بندی پر14.5 لاکھ روپے خرچ کئے گئے ہیں۔Dhalia باغ20 کنال اراضی پر پھیلا ہوا ہے اور اس میں مختلف قسم کے 15 ہزار شگوفے  لگائے گئے ہیں۔پولو گراؤنڈ پارک میں وزیر موصوف نے فلوری کلچر افسر کے دفتر، مغل باغ، ایگزیکٹو انجنیئر کے دفتر، محکمہ پھولبانی کے دفتر، لائبریری اورڈسٹرکٹ فلوری کلچر آفس سرینگر کا افتتاح کیا۔اس موقعہ پر وزیر کو بتایا گیا کہ باسکٹ بال کورٹ کی تعمیر مکمل کی گئی ہے اور بیڈ منٹن کورٹ، کیفیٹریا ، تالاب، بچوں کے کھیلنے کی جگہ اور دیگر سہولیات کو پارک میں تعمیر کیا جائے گا۔جواہر نگر کے دورے کے دوران الطاف بخاری نے8 پبلک پارکوں کا بھی افتتاح کیا۔ اس موقعہ پر بخاری نے کہا کہ2014 کے سیلاب سے جواہر نگر علاقہ بُری طرح متاثر ہوا تھا۔ انہوں نے کہا کہ ریاستی حکومت وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کی قیادت میں اس علاقے کو پھر سے بہتر بنانے کی وعدہ بند ہے۔دورے کے دوران عوامی وفود وزیر سے ملاقی ہوئے اور انہیں اپنے درپیش مسائل سے آگاہی دلائی۔ انہوں نے وزیر کو پینے کے پانی کے مسئلہ کو حل کرانے کے لئے شکریہ ادا کیا۔راجباغ کے دورے کے دوران بخاری نے مالی ٹریننگ سکول کا افتتاح کیا اور اس کے  فرنیچر کے لئے 2 لاکھ روپے کی رقم کو منظوری دی۔ انہوں نے ڈائریکٹوریٹ آف ہارٹی کلچر میں فلاور منڈی کمپلیکس کا افتتاح کیا۔