اس سرما قومی شاہراہ ابھی تک صرف 8گھنٹوں کیلئے ہی بند رہی جیسوال پل 15 فروری تک اور T5 ٹنل 15 مارچ تک عوام کیلئے وقف ہونگے:چیف سیکریٹری

نیوز ڈیسک
جموں//چیف سکریٹری ڈاکٹر ارون کمار مہتا نے ایک میٹنگ کی صدارت کی جس میں یوٹی کے مختلف حصوں کو جوڑنے والی مختلف سڑکوں اور ہائی ویز کی ترقی کی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔ڈاکٹر مہتا نے افسران پر زور دیا کہ وہ اس بات کو یقینی بنائیں کہ سردیوں کے دوران قومی شاہراہ پر ٹریفک کی ہموار نقل و حرکت ہو۔ انہوں نے ان سے کہا کہ وہ موسم کی خرابیوں سے نمٹنے کے لیے مطلوبہ افراد اور مشینری کے ساتھ ہمہ وقت تیار رہیں۔ انہوں نے رکاوٹوں کو کم کرنے اور اس بات کو یقینی بنانے پر زور دیا کہ ٹریفک کی نقل و حرکت سال بھر بلاتعطل رہے۔ انہوں نے اس بات کا اعادہ کیا کہ اس قومی شاہراہ پر ٹریفک 15 مارچ کے بعد دونوں راستوں سے چلنا چاہئے کیونکہ اس وقت تک زیادہ سے زیادہ پل اور سرنگیں مکمل ہو جائیں گی۔انہوں نے افسران کو بانہال اور رام بن کے درمیان مشکل راستوں پر توجہ دینے کی ہدایت کی۔ انہوں نے ان پر زور دیا کہ وہ خراب موسم کی صورت میں فوری اقدامات کریں۔ انہوں نے میترا، رام بن اور ایک جیسوال میں زیر تعمیر پلوں کا نوٹس لیا۔انہوں نے متعلقہ افراد کو کام کی رفتار کو تیز کرنے کی ہدایات جاری کیں تاکہ ان اہم رابطوں کو جلد مکمل کیا جائے۔چیف سکریٹری نے منتلائی اور سناسر کے سیاحتی مقامات کی طرف جانے والی سڑکوں کو تیار کرنے پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ ان مقامات سے سڑکوں کے بہتر رابطے وہاں کی سیاحت کو فروغ دیں گے کیونکہ یہ مقامات سیاحتی مقامات کے طور پر بہت زیادہ پوٹینشل رکھتے ہیں۔انہوں نے بھارت مالا پروگرام کے تحت تیار کی گئی سڑکوں کی حالت اور اس سے منسلک بنیادی ڈھانچے کا بھی جائزہ لیا۔ انہوں نے یوٹی میں تعمیر کے لئے محکمہ تعمیرات عامہ کی طرف سے اٹھائے گئے مختلف سڑکوں اور پلوں کے بارے میں دریافت کیا۔چیف سیکرٹری نے دونوں شہروں میں داخلی سڑکوں کو تیار کرنے پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ کسی بھی خطے کا چہرہ اس کی سڑکیں ہوتی ہیں۔ انہوں نے متعلقہ محکموں پر زور دیا کہ وہ نہ صرف شہر کی سڑکوں کی دیکھ بھال کریں بلکہ انہیں جدید خطوط پر استوار بھی کریں۔انہوں نے ضلع کٹھوعہ کے لکھن پور میں یوٹی کے داخلی مقام کو فیس لفٹ کرنے کی ہدایت کی۔ ڈاکٹر مہتا نے ٹریفک پولیس کو سڑک پر لین ڈسپلن کو سختی سے برقرار رکھنے اور ای چالاننگ سمیت خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف تمام اقدامات کرنے کی ہدایت دی۔ انہوں نے ان سے کہا کہ وہ سڑک کے کنارے پارکنگ کرنے والوں کے خلاف سخت کارروائی کریں ۔میٹنگ کو بتایا گیا کہ اس موسم سرما میںجموں سرینگرمی شاہراہ مجموعی طور پر صرف 8 گھنٹے کے لیے بند رہی جو کہ گزشتہ موسم سرما میں 220 گھنٹے تھی۔ قومی شاہراہ کی بندش کی وجہ سے پچھلے دو برسوں میں کوئی پورا دن ضائع نہیں ہوا۔ مزید بتایا گیا کہ ہائی وے کے دونوں اطراف ٹریفک کی نقل و حرکت کو یقینی بنانے کے لیے T5 ٹنل کو 15 مارچ کو اور جیسوال پل کو اس سال 15 فروری کو عوام کے لیے وقف کیا جائے گا۔مزید یہ کہا گیا کہ سڑک کے دیگر منصوبوں کی رفتار ہموار ہے اور انہیں مقررہ مدت میں مکمل کیا جائے گا۔