اسرائیلی وزیر اعظم کا تبصرہ تشدد بھڑکانے والا:فلسطین

رملہ،/فلسطین کے وزیر اعظم محمد اشتیہ نے کہا ہے کہ اسرائیل کے وزیر اعظم نفتالی بینٹ کا فلسطینی ملک کے قیام کو خارج کرنے سے متعلق بیان ’تشدد بھڑکانے والا اور اسرائیلی حکومت کے امن مخالف رخ کا واضح ثبوت ‘ہے۔مسٹر اشتیہ نے پیر کو فلسطینی اتھارٹی کابینہ کی ہفتہ وار میٹنگ کے بعد دیے گئے سرکاری بیان میں یہ بات کہی۔اسرائیلی میڈیا کے مطابق مسٹر بینٹ نے جمعہ کو کہا تھا کہ جب تک وہ وزیر اعظم ہیں تب تک کوئی اوسلو نہیں ہوگا۔ اوسلو 193 میں اسرائیل اور فلسطین کے درمیان امن معاہدے کا نام ہے۔ انہوں نے یہ بھی کہاکہ وہ فلسطینی ملک کے قیام کی مخالفت کرتے ہیں اور وہ اس کے قیام کا راستہ ہموار کرنے والی کسی بھی بات چیت کی اجازت نہیں دیں گے۔اس کے جواب میں مسٹر اشتیہ نے کہاکہ بات چیت سیواضح انکار ہمارے اور پوری دنیا کے سامنے بینٹ حکومت کے انتہاپسندانہ اور امن مخالف رویے کا مظہر اور ثبوت ہے۔انہوں نے امریکہ اور یوروپی یونین پر زور دیا کہ وہ مشرقی یروشلم میں اسرائیلی بستیاں قائم کرنے پر روک لگانے کے لیے مداخلت کریں۔ اسرائیل اور فلسطین کے درمیان امن مذاکرات 2014 میں اسرائیلی بستیوں پر ہوئے تنازع کے بعد بند ہو گئے ہیں۔(یو این آئی)