GK Communications Pvt. Ltd
Edition :
  کشمر
فوجی سربراہ کے بیان کشمیریوں کے خلاف اعلان جنگ
مزاحمتی و مذہبی جماعتیں سیخ پا،عالمی اداروں سے نوٹس لینے کی اپیل

سرینگر//نیشنل فرنٹ،جماعت اسلامی ، دختران ملت ،مسلم کانفرنس ، محاذ آزادی ، ینگ مینز لیگ ، تحریک استقامت، پیروان ولایت اورپیپلز فریڈم لیگ نے بھارتی فوج کے سربراہ جنرل راوت کے بیان کو کشمیری عوام کے خلاف براہ راست اعلان جنگ قرار دیتے ہوئے اقوام عالم سے سنجیدہ نوٹس لینے کی اپیل کی ہے ۔نیشنل فرنٹ چیئر مین نعیم احمد خان نے کہا کہ تنازعہ کشمیر کو دھمکی آمیز بیانات جاری کرنے یا عوام کو خوف میں مبتلا کرنے سے حل نہیں کیا جاسکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ کشمیری عوام کے نام بھارتی فوج کے سربراہ کی دھمکی ایک سنجیدہ نوعیت کا معاملہ ہے جو جمہوری اصولوں کے سراسر خلاف ہے۔انہوں نے مزیدکہا کہ کسی بھی سیاسی عقیدے کے حق میںیا مخالفت میں مظاہرے کرنا ایک بین الاقوامی سطح کا تسلیم شدہ حق ہے لیکن کشمیری عوام کو اس جمہوری حق سے ادارہ جاتی سطح پر محروم رکھا جارہا ہے جس کی تازہ مثال بھارتی فوج کے سربراہ کا غیر ذمہ دارانہ بیان ہے جس میں انہوں نے مظاہرین کو ــ’’قوم دشمن‘‘ قرار دینے کی دھمکی دے دی۔ نعیم خان نے کہا کہ کشمیر جیسے دیرینہ تنازعہ کو حل کرنے سے ہی پائیدار امن و استحکام قائم کیا جاسکتا ہے اور دھمکی آمیز بیانات جاری کرنے سے صورتحال مزید بگڑ نے کا خدشہ ہے۔انہوں نے کہا کہ بھارتی فوج کے سربراہ کو زمینی سطح پر موجود اس حقیقت کا برملا اعتراف کرنا چاہئے کہ آزادی پسندوں کو عوامی سطح پر زبردست حمایت حاصل ہے اور یہی وجہ ہے کہ مخصوص صورتحال میں لوگ نتائج کی پرواہ کئے بغیر سڑکوں پر نکل کر اپنے جذبات کا اظہار کرتے ہیں۔ جماعت اسلامی نے گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے جنرل راوت کو یہاں کے عوام کا حقیقی دکھ دردسمجھنے کا مشورہ دیا ہے۔جماعت ترجمان ایڈوکیٹ زاہد علی کی طرف سے موصولہ بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ حقیقت اظہر من الشمس ہے کہ جموںوکشمیر دنیا کے اُن خطوں میں شامل ہے جن کے سیاسی مستقبل کا حتمی فیصلہ ہونا ابھی باقی ہے اور ان خطوں پر فوجی تسلط رکھنے والی طاقتیں ان خطوں کے عوام کے ساتھ بے انصافی اور بے رحمی سے کام لے رہی ہیں جب حق خودارادیت کا مطالبہ کرنے والوں کو ملک دشمن، علیحدگی پسند اور قوم دشمن جیسے القابات سے نوازا جاتا ہے حالانکہ ایسا کہنا حقیقت میں دن کو رات کہنے کے مترادف ہے۔بیان کے مطابق طاقت کے ذریعے عوامی آواز کو دبانا ایک ایسے ملک کو زیب نہیں دیتا ہے جو جمہوریت کا سب سے بڑا علمبردار ہونے کا دعویٰ رکھتا ہو۔ برصغیر کے اس عظیم خطے میں امن و امان کے قیام اور لوگوں کی خوشحالی کے خوابوں کو پورا کرنے کے لیے ناگزیر ہے کہ مسئلہ کشمیر کو پُرامن طریقے سے یہاں کے عوام کی خواہشات اور اُمنگوں کے عین مطابق حتمی طور پر حل کیا جائے۔دختران ملت کی جنرل سیکریٹری ناہیدہ نسرین نے فوج سربراہ کے بیان پرشدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ فوج نے پہلے ہی عوام کے خلاف محاذ کھولا ہے ۔انہوں نے کہا کہ یہاں کا بچہ بچہ تحریک آزادی کے ساتھ ہے اور ان دھمکیوں سے ہمارے حوصلے ٹوٹنے والے نہیںہیں۔درایں اثنا دختران ملت کی سربراہ آسیہ اندرابی کو ان کی نجی سیکریٹری صوفی فہمیدہ کے ہمراہ رام باغ پولیس سٹیشن سے رہا کر دیا گیا۔ نسرین نے انکی رہائی پر اطمینان کا اظہار کیا۔مسلم کانفرنس کے ایک دھڑے کے چیئرمین شبیر احمد ڈار، محاز آزادی کے ایک دھڑے کے صدر محمد اقبال میر، ینگ مینز لیگ کے چیئرمین امتیاز احمد ریشی، تحریک استقامت کے چیئرمین غلام نبی وار ،پیروان ولایت کے سربراہ سبط محمد شبیر قمی اورپیپلز فریڈم لیگ کے جنرل سیکریٹری محمد رمضان خان نے اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کی پاسدار ی کرنے والے اداروں کو اس بیان کاسنجیدہ نوٹس لینا چاہئے ۔

 

یہ صفحہ ای میل کیجئے پرنٹ کریں












سابقہ شمارے
  DD     MM     YY    


 


© 2003-2017 KashmirUzma.net
طابع وناشر:رشید مخدومی  |  برائے جی کے کمیونی کیشنزپرائیوٹ لمیٹڈ  |  ایڈیٹر :فیاض احمد کلو
ایگزیکٹو ایڈیٹر:جاوید آذر  | مقام اشاعت : 6 پرتاپ پارک ریذیڈنسی روڑسرینگرکشمیر
RSS Feed

GK Communications Pvt. Ltd
Designed Developed and Maintaned By