تازہ ترین

فرانس صدارتی انتخابات:ووٹنگ کا آغاز، 11 امیدواروں کے درمیان مقابلہ

فرانس //فرانس میں صدارتی انتخابات میں ووٹنگ کا آغاز ہو گیا ہے جبکہ تین روز قبل پیرس پولیس پر ہونے والے قاتلانہ حملے کے بعد سکیورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے ہیں۔اتوار کو ہونے والے انتخابات کے لیے ملک بھر میں تقریباً 50 ہزار پولیس اہلکار اور سات ہزار فوجی تعینات کیے گئے ہیں۔خیال رہے کہ فرانس میں ہونے والے ان صدارتی انتخابات میں کل 11 امیدواروں کے درمیان مقابلہ ہے جن کا تعلق مختلف نظریات کی حامل جماعتوں سے ہے۔اگر کوئی بھی امیدوار 50 فیصد سے زیادہ ووٹ نہ لے سکا تو یہ انتخاب دوسرے مرحلے میں چلا جائے گا جس کے دوران پہلے اور دوسرے نمبر پر آنے والے دو امیدواروں کے درمیان مقابلہ ہو گا۔فرانس میں مقامی وقت کے مطابق صبح آٹھ بجے پولنگ کا آغاز ہوا۔ ووٹنگ فرانس کے وقت کے مطابق شام آٹھ بجے تک جاری رہے گی۔اِن انتخابات کو یورپ کے مستقبل کے لیے بہت اہم قرار دیا جا رہا ہے جس میں اس وقت چار امیدواروں ص

سائنس مخالف سوچ کے خلاف سائنس دانوں کے مظاہرے

لندن//دنیا کے چھ سو سے زیادہ شہروں میں سائنس دانوں نے ایک ایسے مظاہرے میں حصہ لیا جس کی اس سے پہلے کوئی نظیر موجود نہیں ہے۔سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ انہیں ٹھوس حقائق پر مبنی علم کے خلاف سیاست دانوں کے بڑھتے ہوئے حملوں پر تشویش ہے۔ہزاروں سائنس دانوں اور ان کے حامیوں نے ہفتے کے روز دنیا بھر کے اہم شہروں میں اس مظاہرے میں حصہ لیا جن میں آسٹریلیا، برازیل، کینیڈا، کیپ ٹاؤن ، لندن، میڈرڈ، نائیجیریا اور سیول شامل ہیں۔برلن میں مظاہرے کا بندوبست کرنے والوں کا کہنا ہے کہ ان کے احتجاجی مارچ میں 10 ہزار سے زیادہ افراد شریک ہوئے۔انہوں نے پلے کارڈ اور بینر اٹھا رکھے تھے جن پر لکھا تھا کہ ہمیں ٹھوس شواہد پیش کرنے والے ماہرین پسند ہیں اور قیاس آرائیاں نہیں بلکہ حقائق اہمیت رکھتے ہیں، وغیرہ۔جنیوا میں مظاہرین نے جو پلے کارڈ اٹھا رکھے تھے ان پر درج تھا کہ سائنس تاریکی میں شمع کی مانند ہے اور سائنس جوا

امریکہ اور یورپی یونین کے درمیان آزاد تجارت کا معاہدہ متوقع

واشنگٹن//یورپی یونین سے برطانیہ کی علیحدگی کا فیصلہ اس معاہدے کی راہ ہموار کرنے میں ایک محرک ثابت ہوا ہے۔ اخبار نے لکھا ہے کہ جرمنی کی چانسلر آنگلہ مرخیل نے مسٹرٹرمپ کو اس معاہدے کے لیے آمادہ کیا۔امریکہ یورپی یونین کے ساتھ آزاد تجارت کا معاہدہ کر سکتا ہے۔ روزنامہ ٹائمز نے اپنی ہفتے کی اشاعت میں لکھا ہے کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے یورپی بلاک کے ساتھ تجارتی معاہدے پر اپنی رضامندی ظاہر کر دی ہے۔اخبار نیذرائع کے حوالے سے کہا ہے کہ دونوں فریق معاہدہ کرنے پر تیار ہیں۔یورپی یونین سے برطانیہ کی علیحدگی کا فیصلہ اس معاہدے کی راہ ہموار کرنے میں ایک محرک ثابت ہوا ہے۔ اخبار نے لکھا ہے کہ جرمنی کی چانسلر آنگلہ مرخیل نے مسٹرٹرمپ کو اس معاہدے کے لیے آمادہ کیا۔برطانیہ 2019 میں یورپی یونین سے الگ ہونے تک یورپی بلاک سے ایسا کوئی معاہدہ نہیں کرسکتا۔ٹائمز نے وہائٹ ہاؤس کے قریبی ذرائع کے حوالے سے کہا ہے کہ

افغانستان میں سے فوجیوں کی موت پر ایک دن کا قومی سوگ

مزارِشریف//افغانستان کے شمالی شہر مزارِشریف کے پاس فوجی ٹھکانے پر طالبانی حملے میں مارے گئے فوجیوں کی موت پر ایک دن کے قومی غم کا اعلان کیا گیا ہے ۔افغانستان وزارت دفاع نے ایک بیان میں بتایا کہ فوج کے ٹھکانے پر ہوئے طالبانی حملے میں 100 سے زائد فوجیوں کی موت ہو گئی ہے ۔ تاہم وزارت نے مارے گئے فوجی کی حقیقی تعدادکے بارے میں کچھ نہیں بتایا لیکن دیگر ذرائع کے مطابق حملے میں قریب 140 فوجی مارے گئے ہیں۔افغانستان کے صدر اشرف غنی نے طالبان کے اس حملے کی سخت لہجے میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ یہ ایک بزدلانہ فعل ہے ۔ مسٹر غنی نے فوجیوں کی موت پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے کل ایک دن کے قومی سوگ اعلان کیا۔ انہوں نے اتوار کو تمام سرکاری دفاتر اور اداروں میں قومی پرچم کو آدھا جھکانے کے احکام دیئے ہیں۔مسٹر غنی نے سینئر سیکورٹی حکام کے ساتھ ایک ہنگامی میٹنگ بھی کی جس میں حملے کی تحقیقات سنجیدگی سے کرنے پر تب

ہند وستان اور پاکستان کی شدید مذمت

 نئی دہلی// بھارت کے وزیر اعظم نریندر نودی نے افغانستان کے مزار شریف میں فوجی ٹھکانے پر طالبانی حملے کی آج سخت مذمت کرتے ہوئے ہلاک جوانوں کے اہل خانہ کے تئیں تعزیت کا اظہار کیا۔  مسٹر مودی نے اپنے غم پیغام میں کہا ''مزار شریف پر فوجی ٹھکانے پر کل کئے گئے طالبانی حملے کی سخت مذمت کرتا ہوں اور اس حملے میں شہید جوانوں کے اہل خانہ کے تئیں تعزیت کا اظہار کرتا ہوں۔ادھر پاکستان نے افغانستان کے شمالی صوبے بلخ میں ایک فوجی اڈے پر ہونے والے دہشت گرد حملے کی شدید مذمت کی ہے۔افغانستان کے شمالی شہر مزار شریف کے ایک فوجی اڈے پر جمعہ کو عسکریت پسندوں کے حملے میں کم از کم 140 افراد ہلاک ہوگئے تھے جن میں اکثریت افغان فوجیوں کی ہے۔دفتر خارجہ سے ہفتہ کو جاری ہونے والے بیان میں پاکستان نے ان حملوں کی شدید مذمت کرتے ہوئے اپنے اسی موقف کو دہرایا کہ پاکستان ہر طرح کی دہشت گردی کے خلاف ہے۔

چھ مسلم ممالک کے خلاف سفر ی پابندی

سان فرانسسکو//چھ مسلم اکثریتی ممالک کے شہریوں پر سفر پابندی سے متعلق امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے حکمنامہ کو اگلے ماہ امریکہ کی ایک اپیل کورٹ میں چیلنج کیا جائے گا۔ اس بار امریکہ کی زیادہ تر ریپبلکن ریاستیں اس پابندی کی حمایت کرنے کے لئے متحد ہو گئی ہیں۔ ایک ڈیموکریٹک ریاست کے اٹارني جنرل نے بھی اس ہفتے ان سفر ی پابندیوں پر جاری قانونی جنگ میں حصہ لینے سے انکار کر دیا ہے ۔قانون کے کچھ ماہرین کے مطابق زیادہ تر ریپبلکن ریاستوں کے اس پابندی کی حمایت میں آنے سے اس بات کا امکان ہے کہ مسٹر ڈونالڈ ٹرمپ کے اصل ایگزیکٹو آرڈر میں گزشتہ ماہ کی گئي ترمیم کے بعد عدالت میں امریکی حکومت کا موقف مضبوط رہے گا۔ اس سے پہلے جمعرات کو 16 ڈیموکریٹک ریاستوں کے اٹارني جنرل اور کولمبیا نے عدالت میں ایک ' فرینڈ آف دی کورٹ' نامی عرضی دائر کی جس میں انہوں نے عدالت کو بتایا کہ ہوائی ریاست بھی سفر سے متعلق پاب

پناہ گزینوں کا بحران

واشنگٹن//امریکہ نے تصدیق کی ہے کہ وہ آسٹریلیا کے ساتھ کیے جانے والا پناہ گزینوں کی آبادکاری کے معاہدے کی پاسداری کرے گا۔آسٹریلیا کا دورہ کرنے والے امریکہ کے نائب صدر مائیک پینس نے آسٹریلوی وزیر اعظم میلکم ٹرن بل کے ساتھ ملاقات کے بعد پریس کانفرنس میں کہا کے امریکہ اس معاہدے کی پاسداری ضرور کرے گا لیکن اس کی حمایت یا تعریف نہیں کرے گا۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کچھ عرصے قبل اس معاہدے کو 'احمقانہ' قرار دیا تھا۔یہ معاہدہ سابق امریکی صدر باراک اوباما کی حکومت میں طے پایا تھا جس کے تحت آسٹریلیا میں پناہ کی درخواست دینے والے 1250 پناہ گزینوں کو امریکہ میں پناہ دی جانی تھی۔آسٹریلوی حکومت نے ایک متنازع فیصلے کے بعد پناہ گزینوں کو قبول کرنے سے انکار کر دیا ہے۔ ان پناہ گزینوں میں سے اکثریت ایران، افغانستان اور عراق کے مردوں کی ہوتی ہے جن کو آسٹریلیا بحرالکاہل میں ناؤرو اور پاپوا نی

شمالی کوریا بظاہر جوہری تجربہ کرنے کیلئے تیار : رپورٹ

کوریا//شمالی کوریا کی جوہری تجربے کرنے کی تنصیب کی سیٹیلائیٹ سے حاصل کردہ تصاویر سے ماہرین کا خیال ہے کہ یہاں ہونے والی سرگرمی ظاہر کرتی ہیں کہ پیانگ یانگ جوہری ہتھیاروں کا تجربہ کر سکتا ہے۔یہ بات واشنگٹن میں جان ہاپکنز یونیورسٹی کے یو ایس-کوریا انسٹیٹیوٹ نے جمعہ کو بتائی۔شمالی کوریا کی ہتھیاروں سے متعلق پیش رفت کا جائزہ لینے کے لیے انسٹیٹیوٹ کی مختص کردہ ویب سائٹ "38 نارتھ" کی رپورٹ میں کہا گیا کہ بظاہر ایسا لگتا ہے کہ پیانگ یانگ کی طرف سے حکم ملتے ہی کسی بھی وقت یہ تنصیب جوہری تجربہ کرنے کے قابل ہے۔سائٹ کے مطابق سیٹیلائیٹ سے لی گئی تصاویر میں تنصیب کے خاص طور پر شمالی حصے میں نئی سرگرمیاں دیکھی گئی ہیں۔ان تصاویر میں سرنگوں میں استعمال ہونے والی چار گاڑیاں، آلات سے لدا ایک چھوٹا ٹرک اور خیمہ دکھائی دیتا ہے جس میں نیچے دیگر آلات رکھے ہو سکتے ہیں۔مزید برآں انتظامیہ کے مرکزی

نیوکلیائی معاہدہ

بیروت / واشنگٹن//ایران اور امریکہ نے 2015 میں طے پانے والے تاریخی جوہری معاہدے کے نفاذ کے سلسلے میں ایک دوسرے پر الزام لگایا ہے ۔ امریکہ نے ایران پر جوہری معاہدے کے قوانین پر عمل نہ کرنے کا الزام لگایا ہے جبکہ ایران کے سینئر سفارتکار نے امریکہ کو معاہدے کے تحت کئے گئے وعدوں کو پورا کرنے میں کوتاہی کا الزام عائد کیا ہے ۔دونوں ممالک کے درمیان تاریخی نیوکلیائی معاہدے پر یہ الزام تراشیوں کا دور امریکی وزیر خارجہ ریکس ٹلرسن کی جانب سے ایران کے خلاف بین الاقوامی اقتصادی پابندیوں کی منسوخی کے اقدامات کا جائزہ لینے کے بارے میں امریکی کانگریس کو ایک خط کے ذریعے مطلع کئے جانے کے بعد شروع ہواہے ۔مسٹر ٹلرسن نے اپنے خط میں کہا ہے کہ ایران معاہدے کے دائرے میں جوہری پروگراموں پر تو عمل کر رہا ہے لیکن بہت سے دیگر ذرائع سے خطے میں'اسپانسر دہشت گردی' میں ان کا کردار اہم ہے جس پر بحث کی ضرورت ہے

ایرانی مداخلت تنازعہ اسرائیل۔ فلسطین سے زیادہ خطرناک: نکی ہیلی

اقوام متحدہ//امریکا نے سلامتی کونسل پر زور دیا ہے کہ وہ فلسطین۔ اسرائیل تنازع پر زیادہ توجہ مرکوز کرنے کے بجائے مشرق وسطیٰ میں ایران کی تباہ کن سرگرمیوں پر نظر رکھے، کیونکہ عرب خطے میں ایرانی مداخلت زیادہ خطرناک اور تباہ کن ثابت ہو رہی ہے۔ اطلاعات کے مطابق سلامتی کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے امریکی سفیر نکی ہیلی نے کہا کہ مشرق وسطیٰ میں جاری تنازعات کا بنیادی سبب ایران ہے۔ انہوں نے دھمکی آمیز لہجے میں کہا کہ امریکا اپنے اتحادیوں کیساتھ مل کر ایران کو اقوام متحدہ کی قراردادوں پر عمل درآمد پر مجبور کرے گا۔ ایران کی طرف سے یہ امداد عرب خطے کو عدم استحکام سے دوچار کرنے کی سازش ہے۔امریکی سفیر کا کہنا تھا کہ فلسطین۔ اسرائیل تنازع بھی اہم ہے اور اسے حل کرنے کے لیے اقدامات کی ضرورت ہے، مگر خطے میں ایران کی بڑھتی مداخلت زیادہ خطرناک ہے۔ سلامتی کونسل ایران کی مشرق وسطیٰ میں سرگرمیوں کی روک تھام

’دہشت گردی کو جڑ سے ختم کئے بغیرامریکہ چین سے نہیں بیٹھے گا‘

جکارتہ//امریکہ نے کہا ہے کہ دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑے بغیر وہ چین سے نہیں بیٹھے گا اور پیرس میں جمعرات کو ہونے والے دہشت گردانہ واقعہ اس بات کی تازہ مثال ہے کہ جنگجوکہیں بھی کسی وقت حملہ کر سکتے ہیں۔ جنوب مشرقی ایشیا کی سب سے بڑی معیشت والے ملک انڈونیشیا کے دو روزہ دورے کے آخری دن امریکی نائب صدرت مائیک پنس آج یہاں صنعت کاروں کے ایک گول میز کانفرنس سے خطاب کررہے تھے ۔ مسٹر پنس نے کہا، ''دہشت گردی کا تازہ واقعہ سے متعلق ہمارے بیان سے انڈونیشیا بھی واسطہ رکھتا ہے ۔ دہشت گردی سے انڈونیشیا اور امریکہ دونوں کو خطرہ ہے ۔ ہم لوگ دہشت گردی کو ختم کرے بغیر چین سے نہیں بیٹھیں گے ''۔مسٹر پنس نے کہا کہ دہشت گردی کے خلاف جنگ میں واشنگٹن انڈونیشیا کے ساتھ کھڑا ہے اور دونوں مل کر اس کے خلاف آخر تک جنگ جاری رکھیں گے ۔ انھوں نے کل یہاں کی بڑی مسجد میں سجدہ کرنے کے بعد کہا تھا کہ انڈونیش

ایران صدارتی انتخابات

بیروت//ایران کے صدر حسن روحا نی اور بنیاد پرست حریف ابراہیم رئیسی کو مئی میں ہونے والے صدارتی انتخابات میں حصہ لینے کے لئے منظوری مل گئی جبکہ سابق صدر محمود احمدی نژادصدارتی الیکشن کے لیے نااہل قرار دے دیئے گئے ۔مقامی میڈیا نے کہا کہ جمعرات کو یہ فیصلہ گارجین کونسل نے کیا ہے ۔ 19 مئی کو صدارتی انتخابات ہونے والے ہیں۔ ایران کے رہبر اعلیٰ آیت اللہ علی خامنہ ای نے انہیں حالیہ انتخابات میں حصہ لینے سے منع کیا تھا۔ملک کا اعلی قانون ساز ادارہ گارجین کونسل آف دی کانسٹی ٹیوشن نے کہا کہ اس نے جمعرات کو امیدواروں کی حتمی فہرست تیار کی تھی اور وزارت داخلہ اتوار کو ان کے ناموں کا اعلان کرے گی۔ اس سے قبل مسٹر احمدی نژاد نے اگلے ماہ ہونے والے صدارتی الیکشن کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرائے تھے ۔حسن روحانی کے صدرکے عہدے پر فائز ہونے سے پہلے سخت گیر مؤقف رکھنے والے محمود احمدی نژاد 2005 اور 2013 کے درمی

پیرس میں فائرنگ ،پولس اہلکار اور حملہ آور ہلاک، ملک میں سکیورٹی سخت

پیرس//فرانس کے دارالحکومت پیرس میں صدارتی انتخابات سے عین قبل ہونے والی فائرنگ میں ایک پولس اہلکار کی موت جبکہ دو دیگر زخمی ہو گئے ۔ اس حملے کی ذمہ داری فوری طورپر داعش نے لی ہے ۔صدرفرانسوا اولندے نے کہا کہ انہیں یقین ہے چیمس ایلیسیس بلیوارڈ میں ہونے والی فائرنگ ایک دہشت گردانہ حملہ ہے جس میں حملہ آور نے پولس کو گولی مار کر قتل کیا ہے ۔پولس نے بتایا کہ اس واقعہ میں دو حملہ آور بھی شامل تھے جن میں سے ایک کو ہلاک کردیاگیا ہے ۔ پیرس کے وسطی علاقے میں حملے کے وقت مقامی باشندوں اور سیاحوں کی کا فی بھیڑ تھی، جس کے پیش نظر پولس نے فوری کارروائی کرتے ہوئے علاقے کو صاف کردیا، جہاں فائرنگ کے بعد سکیورٹی فورس اور پولس کی گاڑیاں پہنچی ہوئی تھیں۔ پیرس کے پبلک پراسکیوٹر فرنسوا مولینس نے بتایا کہ حملہ آور کی شناخت کرلی گئي ہے اور تحقیقات کار اس سلسلے میں مزید تفتیش کررہے ہیں کہ حملہ آور کے کچھ ساتھی

روس نے سکیورٹی کونسل میں شام کے خلاف قرارداد ویٹو کر دی

اقوام متحدہ//روس نے اقوام متحدہ کی سکیورٹی کونسل میں پیش کی جانے والی اس قرارداد کے مسودے کو ویٹو کر دیا ہے جس میں گذشتہ ہفتے کے مبینہ کیمیائی حملے کی مذمت کی گئی تھی اور شامی حکومت سے مطالبہ کیا گیا تھا کہ وہ تفتیش کاروں کے ساتھ تعاون کرے۔یہ قرارداد امریکہ، برطانیہ اور فرانس کی جانب سے پیش کی گئی تھی جنھوں نے روس کے ویٹو پر برہمی کا اظہار کیا۔یہ آٹھواں موقع ہے کہ سکیورٹی کونسل میں روس نے اپنے اتحادی شام کو بچایا ہے۔واضح رہے کہ چار اپریل کو شام میں باغیوں کے قبضے میں علاقے شیخون میں مبینہ کیمیائی ہتھیاروں کے حملے میں 80 سے زائد افراد ہلاک ہوئے تھے۔مغربی اتحاد نے اس مبینہ حملے کی ذمہ داری شامی حکومت پر ڈالی اور امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اس فضائی اڈے پر میزائلوں سے حملے کی منظوری دی تھی جہاں سے کیمیائی ہتھیاروں کا حملہ کیا گیا۔سکیورٹی کونسل میں پیش کیے گئے قرارداد کے مسودے میں انسداد کیم

روس سے تعلقات پر ایف بی آیی نے ٹرمپ کے مشیر کی جاسوسی کی تھی

واشنگٹن/امریکہ میں ایک رپورٹ کے مطابق وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف بی آئی کو گذتشہ برس صدر ٹرمپ کے ایک مشیر کی جاسوس کرنے کی اجازت دی گئی تھی۔رپورٹ کے مطابق اس شخص پر روس کے لیے کام کرنے کے شبہ پر جاسوسی کی اجازت دی گئی تھی۔امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ کی رپورٹ کے مطابق سرکاری اہلکاروں نے نام ظاہر کیے بغیر تصدیق کی کہ ایف بی آئی نے کارٹر پیج کی نگرانی کے لیے عدالت سے وارنٹ حاصل کیے تھے۔بعد میں کارٹر پیج کو ڈونلڈ ٹرمپ کی ٹیم سے الگ کر دیا گیا تھا کیونکہ ان کے ماسکو کے دوروں کے بارے میں میڈیا میں بہت کچھ کہا جا رہا تھا تاہم کارٹر پیج نے کسی بھی غیر قانونی کام میں ملوث ہونے کی تردید کی تھی۔خیال رہے کہ صدر ٹرمپ نے اوباما انتظامیہ پر الزام عائد کیا تھا کہ وہ ان کی انتخابی ٹیم کی نگرانی کر رہی ہے تاہم انھوں نے اس بارے میں کبھی شواہد پیش نہیں کیے ہیں۔خیال رہے کہ گذشتہ ماہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی ٹیم کے

نائجیریا: خواتین پولیس اہلکاروں کے بال

نائجیریا/افریقی ملک نائجیریا میں سڑکوں پر حادثات سے بچاؤ کے ادارے نے بطور سزا خواتین اہلکاروں کے بال کاٹنے پر اپنے ایک سینیئر کمانڈر کے خلاف کارروائی کی ہے۔یہ کارروائی ایک ویڈیو سامنے کے بعد کی گئی جس میں مذکورہ کمانڈر نے دو قینچیاں ہاتھوں میں تھام رکھی تھیں اور خواتین اہلکاروں کے لمبے بال کاٹتے دکھائی دے رہے تھے۔اس ویڈیو کے سامنے آنے کے بعد سوشل میڈیا پر شدید ردعمل سامنے آیا ہے۔سڑکوں پر حادثات سے تحفظ دینے والے ادارے 'ایف آر ایس سی' میں خواتین اہلکاروں کے بالوں سے متعلق قواعد و ضوابط موجود ہیں تاہم ادارے کے ایک ترجمان کے مطابق کمانڈر نے اختیارات سے تجاوز کیا۔نائجیریا کے صدر محمدو بوہاری کی ایک قریبی ساتھی لوریتا اونوچی نے ٹوئٹر پر ایک پوسٹ پر خواتین اہلکاروں کے بال کاٹنے کے اقدام کو'خواتین کی تضحیک' قرار دیا۔اطلاعات کے مطابق 'ایف آر ایس سی' کے علاقائی کمان

دریاؤں کوکچرے سے پاک کرنے والا سولر پہیہ

بالٹی مور/ امریکی کمپنی نے شمسی توانائی سے چلنے والا پہیہ نما جہاز بنایا ہے جو بندرگاہوں، جھیلوں اور دریاؤں پر تیرتے ہوئے کچرے کو نگل جاتا ہے۔اسے ’’مسٹر ٹریش وھیل‘‘ یا کچرا پہیہ کا نام دیا گیا ہے۔ ٹریش وھیل کے اندر جب کچرا بھر جاتا ہے تو یہ اسے جلاکر اس سے بجلی تیار کرتا ہے اور اسے ہر لحاظ سے ایک ماحول دوست منصوبہ قرار دیا جاسکتا ہے۔ ٹریش وھیل آگے بڑھنے کے لیے سورج کی روشنی استعمال کرتا ہے اور دھوپ سے بھرپور ایک دن میں اس کے سولر سیل 2500 واٹ تک بجلی بناتے ہیں۔ اگر مطلع ابر آلود ہو تو یہ پہیہ سمندری لہروں کی مدد سے گھومتا ہے اور کچرا اپنے اندر داخل کرتا رہتا ہے۔اب تک اس نے پانی پر تیرتے ہوئے سگریٹ کے اتنے ٹکڑے جمع کیے ہیں جنہیں اگر ملایا جائے تو ان کی مجموعی لمبائی 70 میل تک جاپہنچے گی۔ اب تک ایک دن میں اس سے بندرگاہ پر 38 ہزار پونڈ کچرا پکڑا گیا ہے جو ایک ری

شام کی 20% فضائی صلاحیت تباہ کرنے کا امریکی دعویٰ

واشنگٹن //امریکی وزیردفاع جیمز میٹس نے دعویٰ کیا ہے کہ شام میں کیمیائی ہتھیاروں کے حملوں کے جواب میں کیے گئے امریکی فضائی حملوں میں شام کے قابلِ استعمال طیاروں میں سے 20 فیصد تباہ کر دیے گئے ہیں۔ان کا کہنا ہے کہ شام کو کیمیائی ہتھیاروں کے دوبارہ استعمال کا مشورہ مہنگا پڑے گا۔جیمز میٹس نے کہا کہ امریکی حملے کے بعد الشعیرات کا شامی فوجی ایئربیس مکمل طورپرناکارہ ہوچکا ہے۔ اس فوجی ہوائی اڈے سے جنگی جہازوں میں اسلحہ لادنے سمیت کسی بھی قسم کی جنگی کاررائی کی صلاحیت ختم کردی گئی ہے۔امریکی وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ کیمیائی ہتھیاروں کے ذریعے حملے کے بعد امریکا کا خاموش رہنے کا کوئی جواز نہیں تھا۔ صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے خود شام میں فوجی کارروائی کا حکم دیا۔خیال رہے کہ امریکا نیادلب شہرمیں خان الشیخون کے مقام پر مشتبہ کیمیائی حملوں کے بعد شام کے الشعیرات فوجی ہوائی اڈے پر 59 ‘ٹاما ہاک‘ کروز

دنیا بھر میں سزائے موت میں37فیصد کمی

لندن //حقوقِ انسانی کے عالمی گروپ ایمنسٹی انٹرنیشنل کے مطابق سال 2015 کے مقابلے میں سال 2016 میں دنیا بھر میں سزائے موت کی تعداد میں 37 فیصد کمی دیکھنے میں آئی ہے۔سال 2016 میں 23 ممالک نے سزائے موت دیں جبکہ سال 2015 میں یہ تعداد 25 تھی۔ تاہم سال 2015 میں 1634 افراد کو سزائے موت دی گئی تھی جبکہ سال 2016 میں یہ تعداد کم ہو کر 1032 ہو گئی۔اس کمی کا بڑا سبب پاکستان اور ایران میں سزائے موت میں کمی بنی ہے۔ایمنسٹی کے اندازے کے مطابق چین میں دی جانے والی سزائے موت دنیا کے تمام ممالک میں دی جانے والی سزائے موت کی مجموعی تعداد سے بھی زیادہ ہے لیکن غیر معتبر اعداد و شمار کی بنا پر اس فہرست میں صرف ان واقعات کو شامل کیا گیا ہے جن کی دیگر ذرائع سے تصدیق ہو سکی ہے۔سزائے موت دینے والے ممالک کی درجہ بندی میں 11 سالوں بعد امریکہ پہلی دفعہ پہلے پانچ ممالک میںش شامل نہیں ہے۔ گذشتہ سال کے مقابلے میں کم س

بشار الاسد کے برسرِ اقتدار رہنے کی کوئی گنجائش نہیں، امریکہ

واشنگٹن //امریکہ نے واضح کیا ہے کہ شام کے صدر بشار الاسد کے طویل عرصے تک اقتدار میں رہنے کی کوئی گنجائش نہیں اور انہیں اپنا عہدہ چھوڑنا ہوگا۔پیر کو صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے وہائٹ ہائو س کے ترجمان شان اسپائسر نے کہا کہ بشار الاسد کی موجودگی میں ایک مستحکم اور پرامن شام کا تصور بھی نہیں کیا جاسکتا اور شام کے محفوظ مستقبل کی جانب ایسی کوئی راہ نہیں جاتی جس میں بشارالاسد کی گنجائش نکلتی ہو۔شان اسپائسر کا کہنا تھا کہ امریکہ کی پہلی ترجیح شام میں داعش کے جنگجووں کو شکست دینا اور پھر وہاں قیادت کی تبدیلی کے لیے سازگار ماحول بنانا ہے۔انہوں نے کہا کہ امریکہ اس لیے بھی شام کے بحران کا فوری حل چاہتا ہے تاکہ جنگ سے پریشان شام کے شہریوں کو محفوظ مقامات کی تلاش میں اپنے دربدر نہ بھٹکنا پڑے اور وہ اپنے ہی ملک میں سکون سے رہ سکیں۔امریکہ نے گزشتہ ہفتے شامی فوج کے زیرِاستعمال اس ہوائی اڈے پر میزائل حم