تازہ ترین

اے پی جے عبدالکلام کی تالیف کے

 جموں//گورنر این این ووہر انے پرویز مانوس کی تالیف کردہ ڈاکٹر اے پی جے عبد الکلام کی سوانح حیات ’’ وِنگس آف فائر ‘‘ کا پہاڑی زبان میں ترجمہ ’’ آگ نی پَر‘‘ کی رسم اجرائی راج بھون میں انجام دی۔رُکن قانون ساز کونسل ظفر اقبال منہاس نے مصنف اور کتاب کا ایک مختصر تعارف پیش کیا۔گورنر نے مانوس کو کتاب کا پہاڑی زبان میںترجمہ کر کے ایک عظیم شخصیت کی سوانح حیات پہاڑی زبان بولنے والوں کیلئے دستیاب رکھنے کیلئے کافی سراہا۔اُنہوںنے سیکرٹری جموںوکشمیر اکادمی فن، ثقافت و لسانیات کو اس نوعیت کی ترغیبی کتب کی وسیع اشاعت یقینی بنا کر انہیں تمام سکولوں ، کالجوں اور پبلک لائبریریوںمیں دستیاب رکھنے اور شری مانوس کی پہاڑی زبان میںتصنیف کی گئی کارٹون کتاب کی بھی تشہیر کرنے کے لئے کہا۔وزیر برائے قانون وانصاف اور دیہی ترقی عبدالحق کے علاوہ رُکن قانون ساز اسم

حکومت راجوری پونچھ کوترقی یا فتہ بنانے کیلئے کوشاں: عبدالحق

 پونچھ //دیہی ترقی اور پنچائتی راج کے وزیر عبدالحق خان نے کہا ہے کہ راجوری اور پونچھ اضلاع کو جدید طریقے پر ترقی یافتہ بنانے کے لئے حکومت کوشاں ہے تا کہ ترقیاتی عمل کے فوائد ہر ایک مستحق شخص تک پہنچ پائیں۔ان دونوں اضلاع کے تفصیلی دورے کے دوران لوگوں کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے وزیر موصوف نے کہا کہ مرحوم مفتی محمد سعید نے دونوں اضلاع کی ترقی کے لئے قلیل مدت کے دوران کئی تواریخی اقدامات کئے جن میں پونچھ۔ چکاں دا باغ کو کراس بارڈر تجارت کے لئے کھولنا، راجوری میں یونیورسٹی کا قیام اور دونوں اضلاع کو مغل روڈ کے ذریعے وادی کے ساتھ جوڑنا بھی شامل ہے۔حق خان نے کہا کہ مغل روڈ پر ٹنل کی تعمیر مکمل ہونے سے ان اضلاع میں سیاحتی سرگرمیوں کو فروغ حاصل ہونے کے ساتھ ساتھ لوگوں کے معیار حیات میں بہتری آئے گی۔ انہوں نے افسروں کو ہدایت دی کہ وہ ایم جی نریگا کے تحت گلی کوچوں اور نالیوں کی تعمیر کے بجائ

مدرسہ جامعۃ القادریہ میں یکروزہ رحمت عالم ؐکانفرنس

کوٹرنکہ //دارالعلوم جامعۃ القادریہ میں یک روزہ رحمت عالم کانفرنس کا اہتمام کیا گیا جس میں وادی کے معروف دینی اسکالر مولانا عبدالرشید داؤوی نے شرکت کرکے وہاں موجود سینکڑوں کی تعداد میںلوگوں سے خطاب کیا۔انہوںنے کہا کہ اسلام آپسی رواداری اور بھائی چارے کا درس دیتا ہے ،شعائر اسلام کو مضبوطی سے پکڑے رکھنے سے کامیابی قدم چومے گی ۔ انہوں نے کہا کہ اس نازک دور میں جہاں ہر سو برائیاں ہی برائیاں جنم لے رہی ہیں، ایک سنت کو زندہ کرنا سو شہیدوں کے برابر ثواب حاصل کرنا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ قومی سطح پر اگر کہیں بھی مسلمان پریشان ہیں تو اس کی ایک ہی وجہ ہے وہ اسلام سے دوری ہے ، اللہ نے اپنی مدد کا ہاتھ ان لوگوں سے اٹھالیا ہے جو اللہ کے قرب سے دور بھاگ رہے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ نبی ؐ ایک ایسے وقت میں ظہور پائے جب چاروں طرف تاریکی ،ظلم وجبر قتل وغارت کا سما ں تھا لیکن کس طرح قلیل عرصے میں پوری دنیا کو

بجلی کی 24گھنٹے سپلائی کا مطالبہ

  راجوری //راجوری کے انڈسٹری علاقے میں کام کرنے والے مالکان نے سرکار سے مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ علاقے کو 24گھنٹے بجلی فراہم کرے تاکہ تمام کارخانے اپنے ملازمین کی تنخواہیں وقت پر نکال پائیں ۔ انڈسٹری یونین صدر حاجی محمد شفیع نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ وزیر برائے انڈسٹری نے اعلان کیا تھا کہ وہ انڈسٹری مالکان کو 24گھنٹے بجلی فراہم کریں گے تاکہ کارخانے معمول کے مطابق چلائے جاسکیں اور اس دوران کام کاج بھی بہتر اور احسن طریقے سے مکمل کیا جاسکے لیکن اعلان صرف اخبارات اور ٹی وی چینلوں تک ہی محدود رہا اور زمینی سطح پر انڈسٹری مالکان کو اس کا کوئی فائدہ نہیں پہنچا ۔ انہوں نے کہا کہ سرکار کو چاہئے کہ وہ انڈسٹری علاقے میں بجلی کی مکمل فراہمی کو یقینی بنائے تاکہ مالکان کی مشکلات کا ازالہ ہوسکے ۔حاجی محمد شفیع نے مزید کہا کہ اگر سرکار نے اس جانب کوئی توجہ نہیں دی تو وہ احتج

نیشنل کانفرنس کا گورنر راج نافذ کرنے کا مطالبہ

راجوری//نیشنل کانفرنس ورکران نے ریاست میں گورنر راج نافذ کرنے کا مطالبہ کیاہے ۔ راجوری کے ڈاک بنگلہ میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے این سی کارکنان نے کہاکہ ریاست میں مخلوط سرکار مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے جس کی وجہ سے تشدد کے واقعات میں روز بروز اضافہ ہوتا جارہا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ عام لوگوں کو تشدد کا نشانہ بنایا جارہا ہے، اس کے بعد فورسز اپنی پہلوانی دکھانے کے لئے ویڈیوز کو سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کررہے ہیں تاکہ عوام کی آواز کو طاقت کے ذریعہ دبایا جاسکے ۔ضلع صدر شفاعت خان اور ضلع سیکریٹری شفقت میر نے کہا کہ نیشنل کانفرنس صدر وسابق وزیر اعلیٰ فاروق عبداللہ کی جیت کے بعداگر چہ اس بات کا واضح ثبوت ملا ہے کہ باطل پر حق کی جیت ہوئی ہے تاہم فورسزکی یلغار ابھی بھی جاری ہے اوراسکولوں ،کالجوں میں آرمی اور دیگر نیم فوجی دستے داخل ہوکر طلباء وطالبات کو نہ صرف زدوکوب کررہے ہیں بلکہ ہمیشہ ک

محکمہ صحت کا مینڈھر کیساتھ دھوکہ

مینڈھر//حکومت کی دور دراز اور پہاڑی علاقوںمیں طبی سہولیات کی فراہمی کے تمام تر دعوئوں کی پول اس وقت کھل گئی جب مینڈھر ہسپتال کوتین سال پرانی ایمبولینس گاڑی فراہم کی گئی ۔سب ضلع ہسپتال مینڈھر کیلئے ایک این جی او نے 2013 میں کریٹیکل کیئر ایمبولینس دینے کا اعلان کیا تھا اور این جی او کے مالکان نے 2013 میں ایمبولینس کو ڈائریکٹر ہیلتھ کے حوالے بھی کردیا لیکن یہ ایمبولینس ڈائریکٹر ہیلتھ نے سب ضلع ہسپتال مینڈھر کے حوالے نہیں کی اورتین سال تک گاڑی جموں میں ہی کہیں چلتی رہی جسے اب مینڈھر بھیجاگیاہے ۔مقامی لوگوں نے محکمہ صحت کے اعلی ٰآفیسران کو آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ جب کوئی گاڑی پرانی ہو جاتی ہے تواس وقت اس کو مینڈھر بھیجاجاتاہے جبکہ مینڈھر کی سڑکیں اور یہاں کے حالات ایسے ہیں کہ یہاں نئی سے نئی گاڑیاں چاہئیں۔ انہوں نے ایم ایل اے مینڈھر جاوید احمد رانا کی سراہنا کرتے ہوئے کہا کہ وہ ان کے