تازہ ترین

غلام محمد بابا المعروف خرقہ صاحب مرحوم

تاریخ انسانی کے ہر دور میں ایسے نفوس کا جنم ہوا ہے جنہوں نے اپنے وقت کے مشکلات حالات کا مقابلہ کر کے ایسے کارہائے نمایاں انجام دئے جو رہتی دنیا تک یاد رکھنے کے لائق ہیں۔ چنانچہ اس سلسلے میں ہر صدی کے اوائل اور اواخر میں ایسے لوگوں نے اس دنیائے فانی میں ایسے ایسے کام کئے کہ آج بھی ان کا نام بڑے ہی آن بان اوراحترام سے لیا جارہا ہے۔ علم کے سمندر میں علماء کی ایک بڑی کھیپ جو ہر صدی میں جنم لیتی ہے لیکن ان علماء وفضلاء کے درمیان میں چند ایسے نمونے اللہ تبارک وتعالیٰ کی طرف سے بھیجے جاتے ہیں جن کے ہاتھوں سے اس قدر ذہنی ،فکری اور اصلاحی کام ہوتے ہیں کہ دوست تو دوست دشمن بھی نہ چاہتے ہوئے ان کے مدح خواں بن جاتے ہیں۔ یہ ایک ایسی چلتی راہ ہے جس پر ہر آئے روز نئے نئے مسافر اپنا رخت سفر باندھ لیتے ہیں لیکن اس سفرِ خاردار میں ثابت قدمی سے سرشار چند ہی لوگ دکھائی دیتے ہیں۔ علم وفہم کے بڑے بڑے شہس

کتاب و سنت کے حوالے سے مسائل کا حل

حج کی بنیادی شرائط س:- حاجیوں کی سفرِمحمودکے روانگی کی تیاریاں جاری  ہے ۔ ان حالات میں ذہن میں آتاہے کہ کہیںہم پر بھی حج فرض تو نہیں ہے ۔  برائے مہربانی ہم کو بتایا جائے کہ کن کن شرائط کے پائے جانے پر حج فرض ہو جاتاہے اور اگر حج فرض ہوگیا ہو لیکن کوئی شخص نہ کرسکا تو اس کے لئے کیا حکم ہے ؟ محمد شعبان بٹ  ج:- جس مسلمان کے پاس اتنی مالی وسعت ہوکہ وہ حج کے ایام میں مکہ مکرمہ حاضر ہو سکے۔ اور واپسی کے مصارف بھی ہوں اور ان ایام میں وہ اپنے گھر والوںکے ضروری خرچوںکا انتظام بھی کرسکے تو ایسے مسلمان پر حج فرض ہو جاتاہے ۔ اور جب یہ فرض ہوجاتاہے تو اس کی ادائیگی میںتاخیر کرنا بھی جرم ہے اور فرض ہو جانے کے بعد اگر کوئی شخص ادا نہ کرے تو ایسا شخص فاسق ہوگیا ۔ لیکن اس پر لازم ہے کہ وہ اس فریضہ کے ادا کرنے کی وصیت کرے ۔ اور اگر اس نے وصیت کردی تو وارثوں پر لازم ہے کہ