تازہ ترین

سوبھاگیہ سکیم شہر کو بہتر بجلی نظام فراہم نہ کرسکی!

 سرینگر // محکمہ بجلی کی سوبھاگیہ سکیم بھی شہر میں ابتر بجلی صورتحال کو بہتر بنانے میں ناکام ہو گئی ہے اور آج بھی شہر کے متعدد علاقوں میں بجلی کے مضبوط کھمبوں کی جگہ بجلی تاریں عارضی کھمبوں اور درختوں کے ساتھ باندھی گئی ہیں جو کسی بھی وقت بڑے حادثات کاموجب بن سکتی ہیں ۔ہمدانیہ کالونی بمنہ ، کرسو راجباغ ، اولڈ برزلہ سرینگر ، ایچ ایم ٹی کے علاوہ شہر خاص کے متعدد علاقوں میں آج بھی بجلی کی لائنیں عارضی کھمبوں اور درختوں کے ساتھ باندھی گئی ہیں جس سے کس بھی وقت کوئی بڑا حادثہ رونما ہو سکتا ہے ۔مقامی لوگوں نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ معمولی ہوا یا پھر بارش سے اُن علاقوں میں بجلی لائنیں زمین پر گر جاتی ہیں جس سے بڑا حادثہ رونما ہونے کا خطرہ رہتا ہے ۔کرسو راج باغ بنڈ کے لوگوں نے بتایا کہ انہوں نے اس حوالے سے کئی مرتبہ اعلیٰ حکام کو آگاہ کیا لیکن محکمہ کی جانب سے اُس جانب کوئی بھی دھیان ن

بیساکھی کے موقع پر مغل باغات میں سیاحوں کا رش

 سرینگر // اتوار کو شہر کے معروف مغل باغات کو روایتی طور پر سیاحوں کیلئے کھول دیا گیا جس کے دوران ہزاروں میں مقامی وغیر مقامی سیاحوں نے اتوار کی چھٹی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے باغات کی سیر کی ۔علیٰ الصبح سے ہی مختلف علاقوں کے نوجوان ، طلاب چھوٹی بڑی گاڑیوں میں الگ الگ مغل باغات کی طرف جاتے ہوئے نظر آئے۔ ڈل جھیل کے کنارے واقع مشہور و تاریخی مغل باغات میں بھی سینکڑوں لوگ نظر آئے جبکہ اس حوالے سے ان باغات میں غیر معمولی بھیڑ نظر آئی۔سیاحوں کا کہنا ہے کہ اتوار کی چھٹی کو سیاحتی مراکز کی سیر و تفریح کا من بنا کر ان صحت افزا مقامات کی سیر کی۔ مغل باغات جن میں نشاط ، شالیمار ، چشمہ شاہی ، پری محل ، ہارون میں بھی سیاحوں کا ہجوم تھا جبکہ بادم واری کے علاوہ باغ گلہ لالہ اور باٹنیکل گارڈن میں بھی مقامی وغیر مقامی سیاحوں کا بھاری رش دیکھا گیا ۔بلیوارڈ روڑ پر ساحوں کا رش اور ٹریفک کی وجہ سے جام

ریذیڈنسی روڑ پر عمارت کا ایک کونہ ڈھہ گیا

 سرینگر //ریذیڈنسی روڑ رپر ریگل چوک کے قریب اُس وقت افرتفری اور بھاگم بھاگ کا ماحول قائم ہو گیا جب وہاں ایک عمارت کا ایک کونہ ڈھہ گیا جس کے بعد تاجر اور خریدرار دکانوں سے باہر آئے اور محفوظ مقامات کی طرف دوڑ پڑے۔ اتوار کو قریب 4بجے مہراج ملک بلڈنگ ریگل چوک کی عمارت ،جس کے پیچھے ڈرین کی تعمیر کا کام چل رہا ہے، عمارت کا ایک کونہ ڈھ گیا جس سے عمارت میں دراڑیں پڑ گئیں ۔دکانداروں کا کہنا ہے کہ کچھ ماہ سے عمارت کے پیچھے ڈرین کی تعمیر ہو رہی ہے اور اتوار کو بھی کام جاری تھا جس کے دوران قریب چار بجے عمارت کا پچھلا حصہ ڈھہ گیا جس سے پوری عمارت ہل گئی ۔دکانداروں کا کہنا ہے کہ انہیں ایسا لگا جیسے زلزلہ ہو رہا ہواور وہ باہر آئے اور چیخ وپکار کرنے لگے اور لوگوں کو عمارت کے نیچے سے ہٹنے کو کہنے لگے ۔ اس صورتحال کی وجہ سے ریگل چوک میں موجود لوگ ادھر اُدھر بھاگنے لگے جبکہ دکانداروں نے بھی دکانو

لالچوک میں ایس ایم سی ڈپٹی میئر کا علامتی احتجاج

 سرینگر// سرینگر مونسپل کارپوریشن کے ڈپٹی میئر شیخ عمران نے لالچوک میں علامتی احتجاج کرتے ہوئے میڈیا کے ائر کنڈیشن اسٹڈیو میں فتویٰ بازی اور حقائق کی غلط تشریح کرنے کے عمل کو روک دیا جانا چاہئے۔ اتوار کو کے گھنٹہ گھر لالچوک کے نزدیک شیخ عمران نے علامتی دھرنا دیاجس کے دوران نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کشمیری نوجوانوں سے اپیل کی کہ اپنے ناموں سے قبل’’مجاہد‘‘ کا لفاظ استعمال کریں،اور یہ’’نام نہاد چوکیداروں کو بہتر جواب ہوگا۔‘‘ انہوں نے کہا‘‘مجاہد‘‘ کا مطلب یہ ہے کہ جو جہاد میں مشغول ہو،اور محافظ ہیں،جو باطل کے خلاف اور حق گوئی کی وکلات کرتا ہو۔ شیخ عمران نے کہا’’ بدقسمتی سے میڈیا کا ایک حصہ مجاہد اور جہاد کی تشریح اپنے طریقے سے کرتا ہے ۔انہوں نے زور دیا کہ وہ مجاہد اور جہاد کے علاوہ دیگر اسلامی اصطلا

رواں برس کے 2ماہ میں 34سڑک حادثات

  سرینگر //رواں سال کے اوئل میں شہر سرینگر میں 34سڑک حادثات رونما ہوئے ہیں جس کے نتیجہ میں 3افراد لقمہ اجل اور 41زخمی ہوئے  ۔ محکمہ ٹریفک کے حکام کے مطابق شہر میں رواں سال صرف 2ماہ کے دوران 34سڑک حادثات رونما ہوئے ہیں۔محکمہ کے اعداد وشمار کے مطابق جنوری میں گاڑیوں کو20حادثات پیش آئے ہیں جس کے باعث 2افراد ہلاک ہوئے جبکہ 26زخمی ہوئے ۔فروی میں 14سڑک حادثات کے دوران 1شہری کی موت ہوئی جبکہ 15زخمی ہوئے ۔