تازہ ترین

عدالت نے راہل کے خلاف دوبارہ سمن جاری کیا

احمدآباد//گجرات کے احمدآباد شہر کی ایک عدالت نے کانگریس لیڈر راہل گاندھی کی جانب سے مدھیہ پردیش کے جبل پور میں ایک انتخابی ریلی میں بی جے پی صدر امت شاہ کو ‘قتل کا ملزم بتاتے ’ ہوئے دی گئی تقریر کے سلسلے میں دائر معاملے میں آج دوبارہ سمن جاری کیا اور سماعت کی اگلی تاریخ نو اگست کو انہیں پیش ہونے کا حکم دیا۔اس سے پہلے گزشتہ یکم مئی کو عدالت نے اسی معاملے میں مسٹر گاندھی کے خلاف سمن جاری کرتے ہوئے انہیں نو جولائی یعنی آج پیش ہونے کو کہا تھا لیکن اس وقت کی لوک سبھا کے پتے پر بھیجے گئے اس سمن کو یہ کہتے ہوئے لوک سبھا اسپیکر کے دفتر نے لوٹا دیا ہے کہ اسے مسٹر گاندھی کے ذاتی پتے پر بھیجا جائے ،اس لئے آج عدالت نے اسے دوبارہ جاری کیاہے ۔مسٹر گاندھی کے وکیل پرکاش پٹیل نے یواین آئی سے اس کی تصدیق کی۔ میٹروپولیٹن مجسٹریٹ آر بی اٹالیا کی عدالت نے سماعت کی اگلی تاریخ نو اگست طے ک

کانگریس کا باغی ممبران اسمبلی کو نااہل قرار دینے کا مطالبہ

بنگلورو// کرناٹک میں کانگریس نے اپنے 10 باغی ممبران اسمبلی کے خلاف سخت رخ اختیار کرتے ہوئے اسمبلی کے اسپیکر رمیش کمار کے سامنے عرضی دائر کرکے انہیں انسداد دل بدل قانون کے تحت کارروائی کرنے کا مطالبہ کیا ہے ۔کانگریس قانون سازوں کی منگل کو اسمبلی میں ہوئی میٹنگ یہ فیصلہ کیا گیا۔ کانگریس نے اسمبلی کی رکنیت سے استعفی دینے والے 10 ممبران اسمبلی کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا ہے ۔کانگریس قانون ساز پارٹی کے لیڈر سدارمیا نے میٹنگ کے بعد نامہ نگاروں سے کہا کہ میٹنگ میں یہ فیصلہ کیاگیا کہ اسمبلی اسپیکر کے سامنے ایک عرضی دائر کی جائے گی جس میں ان سے آئین کی 10ویں شیڈولڈ کے تحت پارٹی کے 10 ممبران اسمبلی کو نااہل قرار دینے کا مطالبہ کیا جائے گا۔ کانگریس کی جانب سے وہپ جاری کرنے کے باوجود پارٹی کے دس باغی ممبران اسمبلی نے قانون سازوں کی میٹنگ میں حصہ نہیں لیا۔ یہ سبھی ممبران اسمبلی اس وقت ممبئی میں

بنگال کانگریس کے صدر سومن مترا مستعفی

کلکتہ//کانگریس میں استعفیٰ کا دور جاری ہونے کے درمیان بنگال کانگریس کے صدر سومن مترا نے ریاستی کانگریس کے صدارت کے عہدہ سے استعفیٰ دیدیا ہے ۔سومن مترا نے منگل کو پارٹی اعلیٰ قیادت کو استعفیٰ سونپتے ہوئے انہوں نے بنگال میں کانگریس کی خراب کارکردگی کی ذمہ داری قبول کی ہے ۔انہوں نے کہا کہ جب راہل گاندھی نے خود ہی پارٹی صدارت کے عہدہ سے استعفیٰ دیدیا ہے توپھر وہ اس عہدہ پر کیسے رہ سکتے ہیں۔انہوں نے پارٹی سے جلد سے ریاستی صدر کے عہدہ کیلئے کسی قابل لیڈر کا انتخاب کرنے کو کہا ہے ۔سومن مترا نے کہا اپنے استعفیٰ میں کہا ہے کہ نتائج آنے کے بعد ہی میں نے اگلے دن ہی ریاست میں کانگریس کی کراری شکست کیلئے اپنی ذمہ داری قبول کرتے ہوئے کہا تھا کہ ریاستی صدر ہونے کی حیثیت سے اس شکست کیلئے میں ذمہ دارہوں۔دودن قبل سومن مترا نے دہلی میں بنگال کانگریس کے انچارج گورو گگوئی سے ملاقات کی تھی۔آل انڈیا کانگریس

پاکستان کی مشہور اداکارہ ذہین طاہرہ کا انتقال

اسلام آباد//پاکستانی تھیئٹر اور ٹیلی ویژن دنیا کی مشہور اداکارہ ذہین طاہرہ کا دل کا دورہ پڑنے سے 79سال کی عمر میں انتقال ہوگیا۔ پاکستان سے ملنے والی رپورٹوں کے مطابق ذہین طاہرہ کو گزشتہ شب دل کا دورہ پڑا، جس کے بعد فوری طور پر انہیں کراچی کے ایک پرائیویٹ اسپتال میں منتقل کیا گیاتھا۔جہاں انہیں وینٹی لیٹر پر رکھا گیا تھا۔ مشہور پاکستانی اداکار عمران عباس نے بھی سوشل میڈیا پر اداکارہ کے مداحوں کے ساتھ یہ خبر شیئر کی۔ ان کے پوتے ڈینئل شہزاد نے فیس بک پر اداکارہ کے انتقال کی اطلاع دیتے ہوئے لکھا‘‘میری دادی ذہین طاہرہ نہیں رہیں’’۔ انہوں نے آج صبح آغا خان اسپتال میں آخری سانس لی۔ساٹھ کے عشرہ میں تھیئٹر میں مصروف رہنے والی ذہین نے 700سے زائد ڈراموں میں اپنی اداکاری سے لوگوں کے دلوں میں جگہ بنائی۔وہ کئی ٹیلی ویژن سیریلز کی پروڈیوسر اور ڈائرکٹر بھی تھیں۔ ان کے مقبول ڈرامو

اردومیں سائنسی موضوعات پر اہم کتابیں شائع کی جائیں گی: ڈاکٹر شیخ عقیل احمد

نئی دہلی// سائنس نے زندگی کے ہر شعبے میں ترقی کی رفتارکو تیزکیاہے۔آج اگر زندگی کو بہتر طورپر گزارنے کے لیے ڈھیر ساری مصنوعات وایجادات کا انبار لگا ہوا ہے تو اس میں بنیادی کردار سائنس کاہے، اس لیے ضروری ہے کہ سائنسی مواد ہر ہندوستانی زبان میں دستیاب ہو،تاکہ ہر شخص سائنس سے فائدہ حاصل کرسکے، لیکن المیہ یہ ہے کہ اردومیں سائنسی موضوعات پر تشفی بخش مواد کی کمی نظرآتی ہے۔ان خیالات کا اظہار قومی کونسل برائے فروغ اردو زبان کے ڈائریکٹر ڈاکٹر شیخ عقیل احمد نے کونسل کے صدر دفترمیں منعقدہ ’نیچرل سائنس پینل میٹنگ‘ میں کیا۔انھوںنے کہا کہ اردومیں زیادہ سے زیادہ سائنسی مواد جمع کرنے کے لیے قومی کونسل کا ’ نیچرل سائنس پینل‘ گزشتہ کئی برسوں سے کام کررہاہے جس کے تحت حال ہی میںدرجنوں اہم سائنسی کتابیں شائع کی گئی ہیں۔ علاوہ ازیں آب وہوا، پیڑپودے، جسم وصحت، موسم وغیرہ پر بھی کونس