تازہ ترین

ملک میں کورونا وائرس متاثرین کی تعداد 3577 ،اموات 83

نئی دہلی// (یواین آئی) ملک کی مختلف ریاستوں میں ہفتے کے روز سے اتوار کی دیر شام تک کورونا وائرس کے 675 نئے کیسز سامنے ا?نے کے ساتھ ہی متاثرین کی تعداد بڑھ کر 3577 پہنچ گئی ہے جبکہ مزید 15 اموات کے ساتھ ہلاکتوں کی تعداد 83 ہو چکی ہے۔وزارت صحت کی جانب سے جاری رات کو جاری رپوررٹ کے مطابق کورونا وائرس کا قہر ملک کے 29 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں پھیل چکا ہے اور اب اس کے 3577 کیسز کی تصدیق ہوچکی ہے۔ ان میں 65 غیر ملکی مریض بھی شامل ہیں۔ کورونا وائرس سے پورے ملک میں اب تک 83 افراد کی موت ہوئی ہے جبکہ 275 افراد صحت مند ہوچکے ہیں۔ ملک میں کورونا سے دہلی میں سب سے زیادہ 501 افراد متاثرہیں اور سات افراد کی موت ہوچکی ہے۔ دوسرے مقام پر مہاراشٹر ہے جہاں 490  افراد متاثر ہیں اور 24 افراد کی موت ہوچکی ہے۔ تیسرے مقام پر جنوبی ریاست تمل ناڈو ہے جہاں 485 افراد متاثر ہیں اور تین افراد

پاکستان میں کورونا سے اب تک 42کی موت،2835 متاثر

اسلام آباد//پاکستان میں کورونا وائرس کا خطرہ مسلسل بڑھتا جارہا ہے اور اتوار کو یہاں متاثرین کی تعداد 2835 اور مرنے والوں کی تعداد 42کو پہنچ گئی ہے ۔پاکستان کا پنجاب صوبہ کوویڈ 19 سے سب سے زیادہ متاثر ہے ۔یہاں 1134 متاثرین ہیں اور 11کی موت ہوئی ہے ۔سندھ صوبے میں کورونا وائرس سے سب سے زیادہ 14لوگوں کی موت ہوئی ہے ۔یہاں متاثرین کی تعداد 840 ہے ۔خیبر پختونخوا میں 372 متاثرین ہیں اور 13کی موت ہوئی ہے ۔بلوچستان میں 186 متاثرین ہیں اور ایک کی جان گئی ہے ۔گلگٹ بلتستان میں 206متاثرین ہیں اور تین کی موت ہوئی ہے ۔وہیں دارالحکومت اسلام آباد میں 75متاثرین ہیں اور پاک مقبوضہ کشمیر میں 12ہیں۔یواین آئی۔  

پاکستان میں اپریل کے آخر تک کورونا مریضوں کی تعداد بڑنے کا خدشہ

اسلام آباد//پاکستان میں اپریل کے مہینے میں کورونا وائرس کے متاثرین کی تعداد 50ہزار کو پار کرسکتی ہے ۔یہ خدشہ پاکستان کی قومی صحت خدمات ریگولیشن اور کوآرڈینیشن کی وزارت نے سپریم کورٹ میں سونپی گئی رپورٹ میں اس کا اظہار کیا ہے ۔پاکستان میڈیا کے مطابق رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ اپریل کے آخر تک کورونا انفیکشن کے متاثرین کی تعداد 50ہزار کے پار جار سکتی ہے ۔رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ 2392 مریضوں کے لئے سخت دیکھ بھال کی ضرورت ہوگی جبکہ 7024 شدید طور پر بیمار ہوسکتے ہیں۔اس کے علاوہ 41482 مریض ایسے ہوں گے جو معمولی انفیکشن اور انہیں گھر میں قرنطینہ کی ضرورت ہوگی۔رپورٹ میں کہاگیا ہے کہ یہ جائزہ دیگر ملکوں اور یورپی ممالک کی 35دنوں کی صورت حال کی بنیاد پر کیاگیاہے ۔موجودہ وقت میں پاکستان میں 2835 لوگ کورونا سے متاثر ہیں،جبکہ 42لوگوں کی اس سے موت ہوچکی ہے ۔یواین آئی  

مودی کاسیاسی جماعتوں کی قیادت کے ساتھ تبادلہ خیال

نئی دہلی//کورونا کی وبا سے نمٹنے کے لئے حکومت کی جانب سے جنگی سطح پر کی جانے والی کوششوں کے درمیان آج وزیراعظم نریندرمودی نے سابق صدر پرنب مکھرجی اور پرتیبھا پاٹل کے ساتھ ساتھ سابق وزیراعظم من موہن سنگھ اور ایچ ڈی دیویگوڑا سے بھی بات چیت کی ہے ۔سرکاری ذرائع نے آج یہاں بتایا کہ مسٹر مودی نے ان لیڈروں کے علاوہ مختلف سیاسی پارٹیوں کے اعلی لیڈروں کے ساتھ بھی کورونا وائرس سے پیدا ہوئے حالات پر تفصیل سے غورو خوض کیا۔وزیراعظم نے دونوں سابق صدور اور سابق وزرائے اعظم کے ساتھ ٹیلی فون پر اس غیر معمولی بحران کے بارے میں بات کی اور ملک میں کورونا کے انفیکشن سے متعلق مختلف مسئلوں پر بحث کی۔اس دوران کورونا کے انفیکشن کی حلات اور اس سے نمٹنے کے لئے حکومت کے ذریعہ کی جانے والی کوششوں پر خاص طورپر بات ہوئی۔مسٹر مودی نے مختلف سیاسی پارٹیوں کے لیڈروں کو بھی فون کیا اور ان کے ساتھ بھی کورونا کی وجہ سے پ

کورونا سے مقابلہ کیلئے سماجی دوریاں لازمی

نئی دہلی// سینئرمسلمان نوکر شاہوں اور پولیس حکام جوزمینی سطح پر کروناوائرس کی عالمگیر وباء کے پھیلائوکی روکتھام اور اس مرض میں مبتلاء مریضوں کے علاج کیلئے انتھک کام کررہے ہیں ،نے ملک کے مسلمانوں سے اپیل کی ہے کہ وہ حکا م کے ساتھ تعاون کرکے اس بیماری کو روکنے میں مددکریں۔ملک کی مختلف ریاستوں میں مختلف عہدوں پر فائز 60  نوکرشاہوں نے ایک اپیل جاری کرکے کہا کہ گزشتہ کچھ دنوں سے سماج میں ایک پیغام جا رہا ہے کہ ہندوستان میں مسلمان گروپ سماجی فاصلے اور وبا کے پھیلاؤ کا مقابلہ کرنے کے لئے عمومی اقدامات پرعمل نہیں کر رہے ہیں۔ کچھ بے چین کر دینے والے ویڈیو سامنے آ رہے ہے جس میں مسلم فرقہ کے مرد صحت کے کارکنوں پر پتھراؤ کرتے ہوئے اور قانون نافذ کرنے والے پولیس اہلکاروں کے ساتھ بھی محاذ آرائی کرتے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں. کچھ ویڈیو میں پولیس اہلکار مسجد میں نماز پڑھنے پر بضد لوگوں پر لاٹھی

’ہیمال ناگرائے‘کا مطالعہ | لاک ڈائون کی اکتاہٹ کاعلاج

نئی دہلی//کروناوائرس لاک ڈائون کے دوران اکتاہٹ کودور کرنے کیلئے ایک اشاعتی ادارے نے لوگوں کو 15کتابوں کا مطالعہ کرنے کی  صلاح دی ہے جن میں ایک کشمیری تصنیف بھی شامل ہے۔ایک بیان میں ’اسپیکنگ ٹائیگر‘نامی اشاعتی ادارے نے کہاکہ اُن کی کتابوں کی فہرست الگ تھلگ دن گزارنے کا ایک بہترین طریقہ ہے۔انہوں نے اس پہل کانام ’نئی دنیاکی پہچان‘رکھا ہے اور اس فہرست میں رسکن بانڈ،جیری پنٹو اوراپمنیوچٹرجی کی تصانیف بھی شامل ہیں ۔اس فہرست میں اونیزا درابو کی تصنیف ’ہیمال ناگرائے ،کشمیرکی عظیم لوک کہانیاں‘ بھی شامل ہے جبکہ فہرست میں بچوں کیلئے بھی پانچ کتابیں ہیں۔دیگرتصانیف میں رسکن بانڈ کی کتاب،’’اے بک آف سمپل لیونگ،بریف نوٹس فرام ہلز‘‘ ،جیری پنٹوکی’’مرڈراِن ماہم‘‘،سیدمجتبیٰ علی کی تصنیف ،’’اِن اے لینڈ فار

کورونا کا پھیلائو جاری | ملک بھر میں75 اموات ، 3072 افراد متاثر

نئی دہلی //  ملک میں کورونا وائرس (کووِڈ-19) سے متاثرین کی تعداد تین ہزار سے تجاوز کر گئی ہے جبکہ اس کی زد میں آکراب تک 75 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ہفتے کی رات وزارت صحت کی جانب سے جاری رپورٹ کے مطابق کورونا وائرس کی وبا ملک کی 29 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں پھیل چکی ہے۔ اس سے متاثرہ افراد کی تعداد 3072 تک پہنچ گئی ہے۔ ان میں 57 غیر ملکی شامل ہیں۔ کورونا وائرس کی وبا سے پورے ملک میں اب تک 75 افراد کی موت ہوگئی ہے حالانکہ 213  افراد صحتمند ہوچکے ہیں۔ ملک میں کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر 490 افراد مہاراشٹر میں ہیں، یہاں 24 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ مہاراشٹر کے بعد قومی دار الحکومت نئی دہلی میں ہیں جہاں 445 افراد اب تک اس سے متاثر ہوئے ہیں، یہاں چھ افراد کی موت ہو چکی ہے۔ اس معاملے میں تیسرا مقام تملناڈو کا ہے جہاں اب تک 411 افراد کورونا وائرس سے متاثر ہوئے ہیں اور

مودی کی ٹرمپ کے ساتھ ٹیلی فون پر بات

نئی دلی // وزیر اعظم نریندر مودی نے کل امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے ساتھ ٹیلی فون پر بات چیت کی اور کرونائوائرس کی وجہ سے پیدا شدہ صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔دونوں رہنمائوں نے کورونا وائرس کے پھیلاؤ کی شدت پر تشویش کا اظہار کیا اور قریبی تعاون پر بات چیت کی۔انہوں نے کوویڈ ۔19 عالمی وبائی کے خلاف لڑنے کے لئے تمام ممالک کوآپس میں مل جل کر ایک دوسرے کے باہمی تعاون کے ساتھ ساتھ کام کرنے پر زور دیا ۔مودی نے ٹویٹ کرتے ہوئے کہا’’ہمارے مابین اچھی گفتگو ہوئی اور اس عالمی وباء کے خلاف پورے طاقت کے ساتھ لڑنے پر بھارت اور امریکہ کی شراکت داری پر بات کی ‘‘۔ دونوں رہنمائوں کے مابین اس وقت بات چیت ہوئی جب دنیا میں کرونا کے قہر سے لوگ خوف زدہ ہیں ۔  

آسمان کو روشنی دکھانا علاج نہیں: راہل

نئی دہلی// کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی نے وزیر اعظم نریندر مودی پر حملہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ کورونا کے خلاف جنگ کوتھالی بجا کر یا آسمان کو اجالا دکھا کر نہیں جیتا جا سکتا بلکہ اس کے لئے کافی ٹیسٹنگ سہولت دستیاب کرانازیادہ ضروری ہے۔مسٹر گاندھی نے ہفتہ کو ٹوئیٹ کرکے کہا کہ ہندوستان میں کورونا کی ٹیسٹنگ سہولت پاکستان اور سری لنکا سے بھی کم ہے۔ کورونا ٹیسٹ کی صلاحیت پاکستان میں 10 لاکھ لوگوں پر 67 اور سری لنکا کے پاس 97 جبکہ ہندوستان کے پاس 29 ہے۔ جنوبی کوریا کے پاس یہ صلاحیت 7622، اٹلی کے پاس 7122 ہے اور امریکہ کے پاس 2732 ہے۔انہوں نے کہا،’’ہندوستان کے پاس کووڈ -19 وائرس سے لڑنے کے لئے مناسب ٹیسٹ نظام تک نہیں ہے۔ لوگو ں سے تالی بجواکر یا آسمان کو روشنی دکھانے میں مسئلہ کا حل نہیں ہے۔‘‘یو این آئی  

چین سے آج لازمی طبی سامان آئے گا

نئی دہلی // چین سے لازمی طبی سامان لے کر سرکاری طیارہ خدمات کمپنی ایئر انڈیا کا طیارہ اتوار کو دہلی آئے گا۔شہری ہوا بازی کی وزارت نے ہفتہ کو بتایا کہ چین کے ساتھ ایئر انڈیا کے ذریعے قائم ایروبریج کے تحت شنگھائی سے طبی سامان لے کر پہلی پرواز اتوار کو دہلی آئے گی۔ لاک ڈاؤن کے بعد یہ پہلا موقع ہو گا جب کوئی مسافر یا کارگو طیارہ چین سے ہندوستان آئے گا۔ ہندوستان نے شنگھائی کے علاوہ ہانگ کانگ سے بھی دہلی کے لئے کارگو پرواز کی درخواست کی تھی جس کی اجازت مل گئی ہے۔ ملک کے مختلف حصوں میں طبی اور دیگر ضروری سامان کی فراہمی کے لئے شروع کی گئی ’ لائف لا ئن پرواز‘ کے تحت ایئر انڈیا اور ہندوستانی فضائیہ کے طیاروں نے جمعہ کو 10 پروازیں کیں اور ملک کے مختلف حصوں میں 19 ٹن سے زیادہ ضروری سامان پہنچایا۔ وزارت نے بتایا کہ جمعہ کے روز لازی طبی اور دیگر سامان کے ساتھ ایئر انڈیا نے آٹھ اور

کروناکا بڑھتاپھیلائو :بھارت میں 328 نئے کیس سامنے

 نئی دہلی//ملک کی مختلف ریاستوں میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس (کووڈ 19) کے 328 کیسز کے ساتھ ہی اس سے متاثرین کی تعداد بڑھ کر 1965 ہو گئی ہے اور12 افراد کی موت کے ساتھ ہی مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 50 ہو گئی ہے ۔کورونا وائرس سے اب تک کل 151 افراد شفا یاب ہوئے ہیں جن میں سے ایک شخص بیرون ملک جاچکا ہے ۔وزارت صحت کی بدھ کے روز جاری رپورٹ کے مطابق کورونا وائرس ملک کی 29 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں پھیل چکا ہے اور اب تک اس کے 1965 کیسز کی تصدیق ہو چکی ہے ۔ان میں 49 غیر ملکی مریض بھی شامل ہیں۔ کورونا وائرس کے انفیکشن سے ملک بھر میں اب تک 50 افراد کی موت ہوئی ہے جبکہ 151 لوگ صحت مند ہو چکے ہیں۔مہاراشٹر، کیرالہ، کرناٹک، تلنگانہ، گجرات، راجستھان، اترپردیش اور دہلی میں انفیکشن کے سب سے زیادہ کیسز سامنے آئے ہیں. دہلی میں متاثرین کی تعداد بڑھ کر 152 ہو گئی ہے ۔ کورونا

مودی کا ویڈیوپیغام آج

نئی دہلی //کورونا کی وبا کے خلاف ملک گیر مہم کی قیادت کررہے وزیراعظم نریندرمودی جمعہ کی صبح ملک کے عوام کے نام ایک ویڈیوپیغام دیں گے۔مسٹر مودی نے ٹویٹ کے ذریعہ یہ اطلاع دی۔انھوں نے کہا، ’’ جمعہ صبح نو بجے ملک کے عوام کے نام ایک ویڈیو پیغام دونگا۔‘‘وزیراعظم نے کل ریاستوں اور مرکز کے زیرانتظام علاقوں کے وزرائے اعلی کے ساتھ ویڈیوکانفرنسنگ کے ذریعہ کورونا وائرس سے پیداہوئی صورت حال کا جائزہ لیا۔  

رسوئی سلنڈروں کی ریفلنگ میں اضافہ

متھرا// لاک ڈاؤن کے دوران ایل پی جی کے گھریلو سلنڈروں کی بازار میں بڑھتے مطالبے کو دیکھتے ہوئے انڈین آئل کی متھرا ریفائنری نے گیس ریفلنگ کو بڑھا دیا ہے ۔ریفائنری کے کارگذار ڈائرکٹر اورریفائنری سربراہ اروند کمار نے جمعرات کو بتایا کہ کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر 21دنوں کے ملک گیر لاک ڈاؤن کے بعد لوگ گھروں تک ہی محدود ہیں ۔جس کی وجہ سے پٹرول اوردیزل کی طلب میں کافی کمی آئی ہے ۔ لیکن گھریلو سلنڈروں کی طلب میں اضافہ ہو اہے ۔انہوں نے کہا کہ بڑھتے مطالبے کو دیکھتے ہوئے متھرا ریفائنری نے ایل پی جی ریفلنگ میں اضافہ کردیا ہے ۔موجودہ وقت میں جہاں ایل پی جی کی پیداوار پر دھیان دیا جارہا ہے تووہیں ریفائنری پوری طرح سے بی ایس ۔6پٹرول اور ڈیزل بنا رہی ہے اور ریفائنری کے پاس ان دونوں کا بھی وافر ذخیرہ موجود ہے ۔انہوں نے کہا کہ ریفائنری کے افسران و ملازمین کووڈ۔19 وبا کی وجہ سے پیدا ہوئے اس خطرناک

کرونا وائرس کی دہشت برقرار | ملک میں متاثر ہ لوگوں کی تعداد 1637 ہوئی،38کی موت

نئی دہلی//ملک کی مختلف ریاستوں میں پچھلے 24گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس (کوویڈ19)کے240معاملوں میں انفیکشن کی تصدیق ہونے کے ساتھ ہی اس سے متاثر لوگوں کی تعداد بڑھکر 1637 ہوگئی اور ہلاک شدگان کی تعداد 38ہوگئی ہے۔وزارت صحت کی بدھ کی صبح جاری رپورٹ کے مطابق کورونا وائرس کا خطرہ ملک کی 27ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں پھیل چکا ہے اور اب تک اس کے 1637معاملوں کی تصدیق ہوچکی ہے۔ان میں 49 غیر ملکی مریض شامل ہیں۔کورونا وائرس کاانفیکشن سے ملک بھر میں اب تک 38لوگوں کی موت ہوچکی ہے جبکہ 132افراد ٹھیک ہوچکے ہیں۔عالمی وبا کوویڈ 19ملک کی اقتصادی دارالحکومت ممبئی میں 16نئے مریض میں انفیکشن ہونے کی تصدیق ہونے کے ساتھ ہی مہاراشٹر میں متاثرین کی تعداد 320ہوگئی ہے۔اس سے ریاست میں اب تک 12لوگوں کی موت ہوچکی ہے۔اس دوران پنے میں بھی آج کورونا انفیکشن کے دو نئے معاملے سامنے آئے ہیں۔گجرات کے احمدآ

عالمی چیلنجوں کا ہند چین مل کر مقابلہ کریں:مودی

نئی دہلی//وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ ہندوستان اور چین کو باہمی تعاون کومزید مضبوط بناتے ہوئے متحد ہوکر عالمی چیلنجوں کا سامنا کرنا چاہئے ۔دونوں ممالک کے درمیان سفارتی تعلقات کے قیام کی 70 سال مکمل ہونے کے موقع پر مودی اور چینی وزیر اعظم نے مبارکبادی کے پیغامات کا تبادلہ کیا۔ مودی نے کہا کہ سفارتی تعلقات کے قیام کے بعد سے گزشتہ 70 برسوں میں ہندوستان اور چین کے سیاسی، اقتصادی اور ثقافتی تعلقات کی توسیع ہوئی ہے ۔ دونوں ممالک کو باہمی تعاون کو مضبوط بناتے ہوئے ایک دوسرے کے ساتھ مل کرعالمی چیلنجوں کا مقابلہ کرنا چاہئے ۔  

پاکستان میں ہلاکتوں کی تعداد26

اسلام آباد// پاکستان میں کورونا وائرس (کووڈ 19) کا پھیلاؤبڑھتا جا رہا ہے اور بدھ کے روز وائرس متاثرین کی تعداد 2000 سے تجاوز کر گئی ہے جبکہ اس سے متاثر اب تک 26 افراد کی موت ہو چکی ہے۔پاکستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کوروناوائرس متاثرین کے 192 نئے کیسز سامنے آئے جس کے بعد متاثرین کی تعداد بڑھ کر 2040 ہو گئی ہے۔ اس سے پہلے ملک میں متاثرین کی تعداد 1848 تھی۔پاکستان کا صوبہ پنجاب کورونا وائرس سے سب سے زیادہ متاثر ہے۔  

ایران میں پھنسے 250زائرین کا معاملہ | سپریم کورٹ کا سفارت خانے کو ہدایت دینے کا اشارہ

نئی دہلی// سپریم کورٹ نے ایران میں پھنسے ہندوستانی زائرین کی صحت کی مسلسل نگرانی کے لئے وہاں کے ہندوستانی سفارت خانے کو ہدایت جاری کرنے کا بدھ کے روزاشارہ دیا۔ جسٹس ڈی وائی چندرچوڑ اور جسٹس ایم آر شاہ کی بنچ نے یہ اشارہ اس وقت دیا جب مرکزی حکومت کی جانب سے یہ بتایا کہ ایران کے قیوم میں اب بھی پھنسے ہوئے 250 ہندوستانی زائرین کورونا وائرس سے متاثر ہیں۔ اس کے بعد جسٹس چندرچوڑ نے کہا کہ بینچ اس تعلق سے عرضی گزاروں کے حق میں ہدایت جاری کرے گی اور تہران میں واقع ہندوستانی سفارت خانے کو ان افراد کو طبی سمیت تمام سہولیات فراہم کرنے کی کوشش کرے۔ عدالت نے کہا کہ وہ سفارت خانے کو ان تمام زائرین کی دوبارہ کورونا جانچ کرانے اور ان کو جلد از جلد وطن لانے کے امکانات تلاش کرنے کی ہدایت بھی دے سکتا ہے۔ کورٹ نے ، تاہم کورنا وائرس کے پھیلاؤ پر روک کے تعلق سے حکومت کی طرف سے کی جا رہی کوششوں کی تعریف کی

ملک میں کروناکی وباء میں شدت | 32افراد ہلاک،متاثرین کی تعداد1251ہوگئی

نئی دلی //ملک میں پچھلے 24گھنٹوں میں کورونا وائرس انفیکشن کے 227 نئے معاملے سامنے آنے کے بعد انفیکشن کے کل مریضوں کی تعداد بڑھکر 1251ہوگئی ہے اور تین مریضوں کی موت ہوجانے سے اس وائرس کی زد میں آکر مرنیوالوں کی تعداد 32ہوگئی ہے۔وزارت صحت کے ترجمان لو اگروال نے منگل کو یہاں نامہ نگاروں کو بتایا کہ جن تین مریضوں کی موت ہوئی ہے وہ گجرات،مغربی بنگال اور مدھیہ پردیش کے ہیں۔ان معاملوں میں اضافے کی وجہ سے کچھ مقامات پر لوگوں کی بے احتیاطی اور وقت پر اس کے بارے میں معلومات نہ دیا جانا شامل ہے۔انہوں نے کہا،’’ہم اس لڑائی میں اتنے ہی کامیاب ہوسکیں گے جتنا ہمیں لوگوں کا ساتھ ملے گا۔‘‘لو اگروال نے بتایا کہ اس وقت حکومت کی توجہ کورونا وائرسے زیادہ انفیکشن والے علاقون پر ہے اور سبھی ریاستوں کے ساتھ مل کر کمیونٹی سرویلانس ،زیادہ رابطے کی ٹریسنگ جیسی کوششوں پر ہے اور لاک ڈاؤن

مہاجر مزدوروں کو درپیش مسائل

نئی دہلی// سپریم کورٹ نے ملک میں کورونا وائرس کے مد نظر قومی سطح پر لاک ڈاؤن کے وجہ سے مہاجر مزدوروں کو درپیش مسائل کے حل کے لیے ہدایات جاری کرنے سے متعلق عرضی کے پر شنوائی آئندہ منگل تک ملتوی کر دی اور کچھ ہدایات بھی دی ہیں۔چیف جسٹس شرد اروند بوبڈے اور جسٹس ایل ناگیشور راؤ کی خصوصی بینچ نے ایڈووکیٹ آلوک شریواستو اور رشمی بنسل کی عرضیوں کی کل ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے مشترکہ طور پر شنوائی کے دوران مرکزی حکومت کی جانب سے کیے گئے اقدامات کے بارے میں سنجیدگی سے سنا۔ عدالت نے سوشل میڈیا پر کورونا سے متعلق فرضی خبریں پھیلانے والے کے خلاف کاروائی کرنے اور ڈاکٹروں کا ایک پینل تشکیل دینے سمیت کئی ہدایات دی ہیں۔ بعد ازاں عدالت نے شنوائی سات اپریل تک ملتوی کر دی۔ سالسٹر جنرل تشار مہتا نے کورونا وائرس سے نمٹنے ، مہاجر مزدوروں کے لیے کیے جانے والے انتظامات، عوام کو سوشل ڈسٹینسنگ کی ترغیب اور ان

تلنگانہ حکومت کا اعلان | تمام مزدوروں کا خیال رکھاجائیگا

 حیدرآباد//تلنگانہ کے وزیر فائنانس ہریش راو نے یقین دہانی کروائی ہے کہ دیگر ریاستوں سے تعلق رکھنے والے تقریبا 10,300مزدورجو آبپاشی پروجیکٹس میں ضلع سدی پیٹ میں کام کررہے ہیں کو 12کلو چاول کے ساتھ ساتھ فی کس 500روپئے فراہم کئے جائیں گے ۔وزیرموصوف نے کل سدی پیٹ ضلع میں نقد رقم اور چاول کی تقسیم کا کام کیا۔انہوں نے اس موقع پر کہا کہ حکومت،دیگر ریاستوں کے نقل مکانی کرتے ہوئے تلنگانہ میں آنے والے تمام مزدوروں کو تلنگانہ کے خاندان کی طرح سمجھے گی۔مسٹر راو نے مدن پلی میں 360زرعی مزدوروں میں چاول کی تقسیم کے کام کی نگرانی کی۔ساتھ ہی انہوں نے نرساپور کے مزدوروں میں نقدی کی تقسیم،گجویل کی آر آرکالونی اور دیگر مقامات پر ان مزدوروں میں چاول اور دیگر اشیا کی تقسیم کی۔انہوں نے یقین دہانی کروائی کہ حکومت تمام نقل مکانی کرنے والے مزدوروں کا لاک ڈاون کے موقع پر خیال رکھے گی۔انہوں نے مزید کہا