تازہ ترین

وجے کمار کا دورہ ٔ پونچھ

پونچھ//گورنر کے مشیر کے وجے کمار نے پونچھ کا دورہ کر کے وہاں پولیس ، فوج ، بی ایس ایف اور سی آر پی ایف کے اعلیٰ افسروں کے علاوہ ڈاک بنگلہ میں مختلف محکموں کے افسروں کے ساتھ میٹنگیں منعقد کیں ۔انہوں نے ملٹی گیٹ پونچھ میں مختلف علاقوں سے آئے ہوئے وفود کے ساتھ بھی ملاقات کی ۔ حفاظتی عملے کے افسروں کی میٹنگ کے دوران مشیر موصوف نے ضلع میں سلامتی صورتحال کا جائیزہ لیا ۔ مختلف محکموں کے افسروں کی میٹنگ کے دوران انہوں نے مختلف کاموں کی پیش رفت کا جائیزہ لیا ۔ اس دوران انہیں ضلع ترقیاتی کمشنر کی طرف سے مختلف سکیموں کی حصولیابیوں کے بارے میں جانکاری دی گئی ۔ گورنر کے مشیر نے صحت ، تعلیم ، جنگلات ، پی ڈبلیو ڈی اور کئی دیگر محکموں کی کارکردگی کا جائیزہ لیا ۔ مشیر نے متعلقین کو ہدایت دی کہ وہ التوا میں پڑے پروجیکٹوں کو ترجیح بنیادوں پر مکمل کریں ۔ انہوں نے کہا کہ جنگلاتی اراضی پر سے ناجائیز قبضہ

۔252سرکاری سکول بیگ کھیت سے برآمد

راجوری//محکمہ تعلیم کی طرف سے چلائی جارہی مرکزی معاونت والی سکیم سروشکشا ابھیان کے تحت سرکاری سکول کے بچوں کو فراہم کئے جانے والے کتابوں کے بیگ میں سے 252بیگ کوٹرنکہ میں کھیت سے برآمد ہوئے ہیں جس پر تحقیقات شروع کردی گئی ہے ۔ذرائع نے کشمیرعظمیٰ کو بتایاکہ سنیچر کی صبح کچھ مقامی لوگوں نے کوٹرنکہ قصبہ کے نزدیک کھیت میں کچھ بیگ پڑے ہوئے دیکھے جس کی اطلاع پولیس تک پہنچائی گئی جس نے کنڈی پولیس تھانے سے ایک ٹیم موقعہ پر بھیجی جبکہ تحصیلدار کوٹرنکہ کی قیادت میں سیول انتظامیہ کی ایک ٹیم نے بھی موقعہ کا جائزہ لیا ۔اس دوران 252سکول برآمد ہوئے ۔پولیس ذرائع نے بتایاکہ برآمد ہوئے تمام 252بیگوں پر مرکزی معاونت والی سکیم سرو شکشا ابھیان کا مارک ہے جس سے یہ ظاہر ہوتاہے کہ یہ بیگ طلباء میں تقسیم کرنے کیلئے فراہم کئے گئے ہوں۔ذرائع نے مزید بتایاکہ اعلیٰ حکام کی ہدایت پر تمام بیگوں کو ضبط کرلیاگیا ہے ا

فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور قومی یکجہتی پرریلی نکالی گئی

پونچھ //فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور قومی یکجہتی کے پیغام کے ساتھ حق انصاف کونسل کی طرف سے ابرار چوہدری اور شیخ ضمیر کی قیادت میں راجوری پونچھ میں موٹر ریلی نکالی گئی ۔اس ریلی میں متعددنوجوانوں نے شرکت کی ۔یہ ریلی پونچھ سے براستہ مینڈھر گزشتہ شام کوراجوری پہنچی جو صبح ہونے پر براستہ سرنکوٹ واپس پونچھ روانہ ہوئی اور شام کو پریڈ گرائونڈ پونچھ میں اختتام پذیر ہوئی ۔نوجوانوںکی طرف سے یہ ریلی ہندو ،مسلم ،سکھ اتحاد۔زندہ باد زندہ باد کے نعرے کے ساتھ نکالی گئی ۔حق انصاف کونسل رکن ابرار چوہدری نے کہاکہ تنظیم کے ریاستی صدر ذیشان حیدرکی قیادت میں وہ خطہ پیر پنچال میں امن ، بھائی چارے اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کا پیغام دے رہے ہیں۔شیخ ضمیرنے کہاکہ ان کی تنظیم صدیوں پرانی بھائی چارے کی روایت کو تقویت دینے کی وعدہ بند ہے ۔  

پیر رتن غازی ؒ کی زیارت حکام کی نظروں سے اوجھل

تھنہ منڈی //سرحدی اضلاع راجوری اور پونچھ کے درمیان واقع حضرت پیر رتن شاہ غازی ؒ کی زیارت سرکار کی نظروں سے پوری طرح سے اوجھل بنی ہوئی ہے جہاں آج تک سڑک رابطہ بھی نہیں پہنچایاگیا۔ تھنہ منڈی سے تقریبا ًدس کلو میٹر کی دوری پر پہاڑیوں کے دامن میں واقع یہ معروف زیارت جہاں پر ضلع پونچھ کے بفلیاز ، ماہڑہ م، پونی کھیت اور بہرام گلہ سے جبکہ تھنہ منڈی کے عظمت آباد ، منہال ، پنگائی اور دیرہ گلی کے علاقوں زائرین حاضری دینے آتے ہیں ،کو پیدل سفر طے کر یہاں پہنچناپڑتاہے ۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ رتن پیر غازی ؒ 1062ء میں تھنہ منڈی کے اس پہاڑی اور جنگلاتی علاقے میں ظہور پذیر ہوئے جہاں پر انہوں نے کافی عرصہ تک عبادت گزاری کی ۔ اس عرصہ میں رتن پیر غازی ؒ کی مقبولیت سرحدی اضلاع راجوری اور پونچھ میں کافی بڑھ گئی ۔یہ ایساعلاقہ ہے جہاں ہر طرف جنگلات ہیں اور جنگلی جانور دن رات گھومتے رہتے ہیں ۔ اس زیارت پر پی

راجوری یونیورسٹی کے شعبہ عربی،اردو اور اسلامک اسٹڈیز کے اشتراک سے سمپوزیم

راجوری//بابا غلام شاہ بادشاہ یونیورسٹی راجوری میں ’یوم اساتذہ ‘ کے سلسلے میں ایک سمپوزیم کا انعقاد کیا گیاجس میں شعبہ عربی،اردو اور اسلامک اسٹڈیز کے اساتذہ اور طلبا نے شرکت کی۔اس پروگرام کا آغاز تلاوت سے ہواجوایم اے عربی کے طالب علم مختیار احمدعلیمی نے کی جس کے بعد ڈاکٹر محمد آصف ملک اسسٹنٹ پروفیسر شعبہ اردو نے نعت پڑھی۔ڈاکٹر محمد اعظم اسسٹنٹ پروفیسر شعبہ عربی نے ’’اسلامی نقطہء نظر سے استاد کی ذمہ داریاں ‘‘کے موضوع پہ اپنے خیالات کااظہار کیا۔وہیںڈاکٹر شمس کمال انجم صدر شعبہ عربی،اردو اور اسلامک اسٹڈیز نے ٹیچرس ڈے کے انعقاد کی غرض وغایت کو واضح کرتے ہوئے کہا کہ اس موقعہ کو دوسرے صدر جمہوریہ ہند ڈاکٹر رادھا کرشنن کی یوم ولادت سے خاص کیا گیا ہے۔شمس کمال انجم نے اس بات پہ زور دیا کہ عربی،اردو اور اسلامک اسٹڈیز کے تمام اساتذہ کو چاہیے کہ وہ آج  اپ

کانگریس کی راجوری میں احتجاجی ریلی

راجوری //کانگریس کارکنان نے راجوری میں احتجاجی ریلی نکالتے ہوئے رافیل سکینڈل کی مشترکہ پارلیمانی کمیٹی سے تحقیقات کا مطالبہ کیا ۔کارکنان کاکہناتھاکہ یہ ملک کا سب سے بڑاسکینڈل ہے جس پر خاموشی اختیار نہیں کی جاسکتی ۔کارکنان نے سابق وزیر و ضلع صدر شبیر احمد خان کی قیادت میں ڈاک بنگلہ سے ایک احتجاجی ریلی نکالی جو گوجر منڈی سے ہوتے ہوئے ڈپٹی کمشنر دفتر تک پہنچی ۔اس دوران مظاہرین نے وزیر اعظم نریندر مودی اور مرکزی حکومت کے خلاف نعرے بازی کرتے ہوئے کہاکہ بھاجپا حکومت ہر ایک محاذ پر ناکام ہوچکی ہے ۔بعد ازآں کارکنان نے ایک میمورنڈم ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر راجوری شیر سنگھ کو پیش کیا ۔ریلی سے خطاب کرتے ہوئے شبیر خان نے کہاکہ بھاجپا نے ملکی عوام کے ساتھ بڑے بڑے وعدے کئے تاہم ان میں سے ایک بھی پورا نہیں ہوسکا۔ انہوں نے کہاکہ پیٹرول اورڈیزل کی قیمتوں میں اضافہ مرکزی حکومت کی ناکامی کی نمایاں مثال ہے ۔ان

مرحوم شیخ عبداللہ کی برسی پر راجوری پونچھ میں این سی کی دعائیہ تقاریب

پونچھ +راجوری//نیشنل کانفرنس کے بانی و سابق وزیر اعلیٰ مرحوم شیخ محمد عبداللہ کی 36ویں برسی پر پونچھ اور راجوری میں پارٹی کارکنان کی طرف سے دعائیہ تقاریب کا اہتمام کیاگیا ۔پونچھ میں اس سلسلے میں ایک تقریب این سی یوتھ کے صوبائی صدر اعجاز جان کی قیادت میں ہوئی ۔اس موقعہ پر مقررین نے شیخ عبداللہ کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہاکہ انہوں نے ریاستی عوام کیلئے نمایاں خدمات انجام دیں جن کی وجہ سے انہیں ہمیشہ یاد رکھاجائے گا۔اعجاز جان نے کہاکہ ریاست کے خصوصی تشخص کو کسی بھی صورت نقصان نہیں پہنچنے دیاجائے گا۔انہوں نے کہاکہ دفعہ 35اے کے معاملے پر سبھی کو متحد ہوکر کوششیں کرنی چاہئیں ۔انہوں نے کہاکہ مرحوم شیخ عبداللہ نے ریاست میں ایسی اصلاحات لائیں جن کا صلہ آج بھی لوگوں کو مل رہاہے ۔جان نے پارٹی کے آئندہ پنچایتی و بلدیاتی چنائو سے بائیکاٹ کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہاکہ حکومت ہند ایسے وقت م

مزید خبرں

سوچھ بھارت مشن کے موضوع پر مضمون نویسی کامقابلہ  پونچھ //فوج کی طرف سے یوتھ سنٹر جڑانوالی گلی میں سوچھ بھارت مشن کے موضوع پر مضمون نویسی کا مقابلہ کروایاگیا جس کا مقصد مقامی طلباء کی صلاحیتوںکو اجاگرکرنے کا موقعہ فراہم کرنا اور صفائی ستھرائی کے نام پر چلائی جارہی اس مہم کے بارے میں انہیں بیدار کرناتھا۔اس مقابلے میں بڑی تعداد میں طلاب نے حصہ لیا اور انہوں نے مضمون نویسی کے ذریعہ اپنے خیالات کا اظہار کیا ۔پروگرام کے دوران صحت صفائی اور تندرستی کے بارے میں تبادلہ خیال کیاگیا۔اس دوران بہترین کارکردگی کامظاہرہ کرنے والے طلباء کو انعام سے بھی نوازاگیا۔پروگرام میں سکولوں کے اساتذہ ، طلباء کے والدین اور مقامی معززین نے بھی شرکت کی ۔مقامی لوگوں نے فوج کے اس اقدام کی سراہنا کی ہے ۔   منجاکوٹ میں خاتون کی پراسرار موت راجوری //منجاکوٹ کے دیری ریلیوٹ میں ایک خاتون کو پراسر