سرنکوٹ میں موسلا دھار بارش

سرنکوٹ//گزشتہ روز سرنکوٹ میں ہوئی موسلادھار بارش کی وجہ سے گور نمنٹ گرل ہائر سکینڈری سکول میں پانی داخل ہو نے کی وجہ سے ساز وسامان کا بھاری نقصان ہوا ۔پورے علا قہ میں ہوئی تیز بارش کی وجہ سے سرنکوٹ قصبہ میں کئی نالیوں کے بند ہونے کی وجہ سے کئی ایک گھروں اور دکانوں میں پانی داخل ہو نے کی وجہ سے نقصان بھی ہوا تھا لیکن اسی دوران گور نمنٹ ہائر سکینڈی کی عمارت میں پانی داخل ہو نے کی وجہ سے سکولی ریکارڈ ،فرنیچر ودیگر ساز وسامان کو بُری طرح سے نقصان پہنچا ۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ مذکورہ گور نمنٹ ہائر سکینڈری سکول میں 550طلباء زیر تعلیم ہیں جو سیلابی صورتحال کی وجہ سے کافی متاثر ہوئے ۔مہتاب نامی ایک مقامی شخص نے بتایا کہ بارش کے دوران مذکورہ سکول میں پانی کی سیلابی صورتحال اختیار کر گیا تھا لیکن ملازمین نے سکول کی دیواروں سے پانی کو باہر نکالنے کا بندو بست کر دیا جس کی وجہ سے عمارت کو نقصان

سنگیوٹ میں پینے کے صاف پانی کی شدیدقلت ،ملازمین پر 3ٹرکوں کے ذریعہ پاپئیں غائب کرنے کا الزام

مینڈھر//بلاک بالا کوٹ کی سنگیوٹ پنچایت میں عوام کو پینے کے صاف پانی کی قلت کا سامنا ہے لیکن متعلقہ محکمہ کی طرف سے عوام کو پانی فراہم کرنے کیلئے کوئی موثر اقدامات نہیں کئے گئے ہیں ۔مقامی لوگوں نے متعلقہ محکمہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ انتظامیہ کی جانب سے سنگیوٹ کی عوام کو پانی فراہم کرنے کیلئے ایک اسکیم تیارکی گئی تھی جس پر ایک کروڑ سے زائد رقم بھی خرچ کی گئی ہے لیکن محکمہ کی طرف سے لوگوں کو مذکورہ اسکیم کا فائدہ نہیں پہنچایا جارہاہے ۔انہوں نے کہا کہ مذکورہ اسکیم کو پوری طرح سے مکمل کئے ہوئے ایک سال کا عرصہ گزر چکا ہے لیکن متعلقہ محکمہ کی جانب سے نا معلوم وجوہات کی بنیاد پر ابھی تک پانی جمع کرنے اور سپلائی کرنے کا عمل شروع نہیں کیا گیا ۔مقامی سرپنچ مختیار خان نے  محکمہ صحت عامہ اور ضلع انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ سنگیوٹ علاقہ کی عوام کو نظر انداز کیا جارہ

بدھل کی پنچایت کیول کا ٹرانسفار مر خراب

کوٹرنکہ//بلاک بدھل کی پنچایت کیول کا ٹرانسفارمر خراب ہو نے کی وجہ سے لوگوں کو کئی طرح کے مسائل کا سامنا کرنا پڑرہا ہے ۔مقامی لوگوں نے محکمہ پی ڈی ڈی کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ مذکورہ پنچایت میں ٹرانسفار مر خراب ہو نے کی وجہ سے گزشتہ کئی دنوں سے وارڈ نمبر5،6اور وارڈ نمبر 7میں لوگوں کو کئی طرح کے مسائل کا سامنا کرنا پڑرہا ہے لیکن متعلقہ محکمہ کی طرف سے اس جانب کوئی توجہ نہیں دی گئی۔مقامی لوگوں نے محکمہ کے ملازمین پر الزام عائد کرتے ہوئے کہاکہ ماہانہ کرایہ ادا کرنے کے باوجود بھی عوام کو بجلی کی بہتر سپلائی فراہم نہیں کی جاتی ۔صارفین نے ضلع انتظامیہ کو انتباہ دیتے ہوئے کہاکہ اگر جلداز جلد ٹرانسفارمر کی مرمت نہیں کی گئی تو محکمہ کیخلاف احتجاج شروع کیا جائے گا ۔

طوطا گلی ۔نکہ سڑک محکمہ پی ایم جی ایس وائی کے حوالے

مینڈھر //سب ڈویژن مینڈھر کے طوطا گلی تا نکہ سڑک کی تعمیر کو محکمہ پی ایم جی ایس وائی کے تحت لانے کیلئے مقامی لوگوں نے محکمہ پی ایم جی ایس وائی اور ریاستی گورنر انتظامیہ کا شکریہ ادا کیا ہے ۔یہاں جاری ایک بیان میں مقامی لوگوں نے امید ظاہر کرتے ہوئے کہاکہ مذکورہ سڑک کے مکمل ہو نے کی وجہ سے ناڑ مرگاں،کیری گلہوتہ،نکہ منجہاڑی،کے علاوہ کئی علاقوں کے لوگوں کو سہولیات دستیاب ہو نگی ۔انہوں نے کہاکہ  آفیسران کی کوشش سے طوطا گلی تانکہ کی طرف جارہی سڑک کو پی ایم جی ایس وائی کے تحت لایا گیا ہے جبکہ مقامی لوگوں کی جانب سے ایک لمبے عرصہ سے مانگ کی جارہی تھی کہ مذکورہ سڑک کو محکمہ پی ایم جی ایس وائی کے تحت لایا جائے ۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ طوطا گلی تا نکہ سڑک کی تعمیر کا کام 1984میں شروع کیا گیا تھا لیکن متعلقہ محکمہ کی نااہلی کی وجہ سے ابھی تک سڑک کی تعمیر کومکمل نہیں کیا گیا تھا ۔جس کی وجہ

منکوٹ بلاک کے سرپنچوں اور پنچوں کا اجلاس

مینڈھر//مینڈھر کے منکوٹ بلاک کے سرپنچوں اور پنچوں کا ایک اجلاس منعقد ہو ا جس میں بلاک کے متعدد پنچایتی اراکین نے شرکت کی ۔سرپنچ چھجلہ چوہدری امان اللہ کی قیادت میں منعقدہ اجلاس کے دوران اراکین نے مینڈھر بلاک کے این سی لیڈران کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ انہوں نے منکوٹ بلاک میں آکر کچھ ملازمین کو ہراساں کیا ۔اراکین نے واقعہ کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہاکہ منکوٹ بلاک میں ملازمین اپنی خدمات بخوبی انجام دے رہے ہیں لیکن مینڈھر بلا ک سے نیشنل کا نفرنس کے کچھ لیڈران آکر ملازمین کو غیر ضروری طورپر تنگ کر رہے ہیں جس کو برداشت نہیں کیا جائے گا ۔انہوں نے انتظامیہ سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ مینڈھر بلاک سے آئے نیشنل کا نفرنس لیڈران کی جانب سے غیر قانونی طور پر محکمہ کے کام کاج میں مبینہ طورپر کی گئی مداخلت کے سلسلہ میں مقدمہ درج کر کے کارروائی عمل میں لائی جائے ۔ اس سلسلہ میں امان اللہ

منڈی میں ٹریفک حکام کی کارروائی

منڈی// ٹریفک حکام کی طرف سے منڈی میں شروع کر دہ مہم کے دوران ٹریفک قوانین کیخلاف ورزی کرنے پر 10گاڑیوں کو ضبط کرتے ہوئے 2500روپے جرمانہ بھی وصول کیا ۔گزشتہ دنوں منڈی سے گلیناگ کی طرف جا رہی مسافروں سے بھری ایک ٹاٹاسومو کی تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد مقدمہ درج کر کے مزید کارروائی عمل میں لائی گئی تھی ۔اسی سلسلہ میں ضلع ٹریفک آفیسر پونچھ کی قیادت میں منڈی کی مختلف سڑکوں پر لگائے گئے ناکوں کے دوران قوانین کیخلاف ورزی کرنے پر 10گاڑیوں کو ضبط کرلیا گیا جبکہ اسی طرح 30سے زائد گاڑیوں کے چلان بھی کئے گئے ۔ٹریفک آفیسر پونچھ نے بتایا کہ قوانین کیخلاف ورزی کرنے والوں کو کسی بھی قیمت پر بخشا نہیں جائے گا ۔انہوں نے عوام سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ ٹریفک حکام کی جانب سے شرو ع کردہ مہم کو کامیاب بنانے کیلئے تعاون دیا جائے ۔انہوں نے ڈرائیور وں کو ہدایت جاری کرتے ہوئے کہاکہ گاڑی چلاتے ہوئے قوا

بائلہ منڈی میں پولیس کا منشیات مخالف بیداری پروگرام

منڈی//پونچھ پولیس کی جانب سے تحصیل منڈی کے بایلہ علاقہ میں منشیات مخالف بیداری پروگرام کا اہتمام کیا گیا ۔گور نمنٹ ہا ئی سکول میں منعقدہ پروگرام میں ایس ایچ ائو منڈی نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی ۔اس بیداری پروگرام میں سکولی طلباء کیساتھ ساتھ علاقہ کے معززین کی ایک بڑی تعداد نے بھی شرکت کی ۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ پونچھ پولیس کی جانب سے منشیات مخالف بیداری پروگراموں کا اہتمام کیا جارہا ہے تاکہ نوجوانوں کو اس لت سے باہر نکالنے اور زیادہ سے زیادہ لوگوں کو بیدار کیا جاسکے ۔منڈی میں منعقدہ مذکورہ پروگرام کے دوران طلباء کو منشیات کے مضر اثرات کے بارے میں جانکاری فراہم کی گئی ۔ایس ایچ ائو منڈی کے ساتھ ساتھ منشیات مخالف سنٹر پونچھ کے ڈاکٹر نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے نشہ اور سماج پر پڑنے والے اثرات کے بارے میں بچوں کو آگاہ کیا ۔انہوں نے کہاکہ والدین کو چاہیے کہ وہ اپنے بچوں کو پڑھائی اور کھی

۔3کلو میٹر سڑک 5برسوں میں تعمیر نہ ہوسکی

کوٹرنکہ //سب ڈویژن ہیڈ کوارٹر کوٹرنکہ سے 15کلو میٹر دوری پر واقعہ سموٹ زیر یں تابالا سموٹ تین کلومیٹر سڑک گزشتہ پانچ برسوں سے زیر تعمیر ہے جس کی وجہ سے مقامی لوگوں کو دوران آمد ورفت کئی طرح کے مسائل کا سامنا کرنا پڑرہاہے ۔مقامی لوگوں نے پی ڈی پی اور بھاجپا کی سابقہ مخلوط حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ 2014کے اسمبلی انتخابات کے دوران پارٹی لیڈر نے عوام کیساتھ وعدہ کیا تھا کہ سموٹ زیر یں تابالا سموٹ سڑک دی جائے گی جبکہ اقتدار میں آنے کے بعد سڑک کی تعمیر کیلئے محکمہ پی ڈبلیو ڈی کے آفیسران کو بھی ہدایت جاری کیں گئی جس کی بعد کچھ علا قہ کی کٹائی عمل میں لانے کے بعد سڑک کو جوں کا توں چھوڑ دیا گیا ۔سڑک کی تعمیر سے نکاسی آب کا نظام بھی متاثر ہو ا اور اب ایک چھوٹی سی بارش کی وجہ سے بھی لوگوںکی زمینوں کا نقصان ہوتا ہے ۔مقامی معززین کے مطابق سڑک کو مکمل نہ کرنے اور زمین مالکان نے اپ

مزید خبرں

۔110محنت کشوں میں لیبر کارڈ تقسیم  پونچھ//لیبر محکمہ کی جانب سے پونچھ میں لگائے گئے ایک کیمپ کے دوران 110محنت کشوں کو لیبر کارڈ تقسیم کئے گئے ۔اسسٹنٹ لیبرکمشنر کی جانب سے منعقدہ کیمپ کے دوران محنت کشوں کو مرکزی حکومت کی جانب سے شروع کرہ فلاحی اسکیموں کی جانکاری فراہم کی گئی ۔اسسٹنٹ لیبر کمشنر نے مزدور طبقہ سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ وہ مرکزی حکومت کی جانب سے شروع کردہ اسکیموںکا زیادہ سے زیادہ فائد ہ اٹھائیں جبکہ انہوں نے محنت کشوں کو استفادہ حاصل کرنے کے پورے عمل کے بارے میں تفصیلی جانکاری فراہم کی ۔کیمپ میں شرکت کرنے والے محنت کشوں کو لیبر کارڈ بھی تقسیم کئے گئے ۔     سائیں میراں بخشؒ عرس کے انتظامات کا جائزہ لیا گیا پونچھ //ضلع ترقیاتی کمشنر پونچھ راہل یادو نے آفیسران کا اجلاس طلب کر کے سائیں میراں بخش ؒکے سالانہ عرس کے سلسلہ میں کئے گئے انتظامات کا ج

تازہ ترین