تازہ ترین

کشمیر مسئلہ عنقریب حل کیا جائے گا: راجناتھ سنگھ

سرینگر/مرکزی وزیر دفاع راجناتھ سنگھ نے سنیچر کو کہا کہ کشمیر مسئلہ عنقریب حل کیا جائے گا اور اس مسئلے کے حتمی حل کو دنیا کی کوئی طاقت نہیں روک سکتی ہے۔ کٹھوعہ ضلع میں ایک پل کی افتتاح کرنے کے بعد راجناتھ سنگھ نے کہا''میں یہ ذمہ داری کے ساتھ کہہ رہا ہوں کہ کشمیر مسئلہ عنقریب حل ہوگا۔ مجھے آپکے (لوگوں کے) سپورٹ کا یقین ہے''۔ وزیر دفاع نے کہا کہ اُنہوں نے کئی بار اُن لوگوں کو بات چیت کی دعوت دی جن کا دعویٰ ہے کہ وہ حل کیلئے محو جد و جہد ہیں۔ راجناتھ نے کہا''لیکن وہ سامنے نہیں آئے ۔ اُنہوں نے اپنے بچوں کو تعلیم حاصل کرنے کیلئے باہری ملکوں میں بھیجا اور وہ دوسروں کے 12اور14سالہ بچوں کو سنگباری پر اکسارہے ہیں۔'' انہوں نے مزید کہا'' اُن کے ذہن میں کیسی آزادی ہے؟کیا وہ ایسی آزادی چاہتے ہیں جیسی پاکستان میں ہے۔میں آپ کو (علیحدگی پسندوں کو)

رامبن میں گاڑی گہری کھائی میں جاگری،میاں بیوی جاں بحق، چار دیگر زخمی

سرینگر/ضلع رامبن میں سنیچر کو سڑک کے حادثے میں میاں بیوی جاں بحق جبکہ چار دیگر افراد زخمی ہوگئے۔ یہ حادثہ اُکھرال تحصیل میں اُس وقت پیش آیا جب ایک گاڑی ڈرائیور کے قابو سے باہر ہوکر ایک گہری کھائی میں جاگری۔ اطلاعات کے مطابق ایک گاڑی شراوادھار یاترا سے لوٹ رہی تھی اور جونہی یہ بنجونی کے مقام پر پہنچی تو یہ لڑھک کر گہری کھائی میں جاگری۔ ذرائع کے مطابق گاڑی میں سوار 50سالہ سرجیت سنگھ اور اس کی بیوی کوشلیا دیوی، ساکنان کوٹ پوگل کو زخمی حالت میں پبلک ہیلتھ سینٹر اُکھرال پہنچایا گیا  جہاں اُنہیں مردہ قرار دیا گیا۔ اس حادثے میں ڈرائیور سمیت مزید چار افراد زخمی بھی ہوگئے جنہیں رامبن کے ضلع اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔  

چار دن میں مزیدچھ یاتریوں کی موت ، مرنے والوں کی مجموعی تعداد22پہنچ گئی

سرینگر/حکام نے سنیچر کو بتایا کہ گذشتہ چار روز میں جاری امر ناتھ یاترا کے دوران مزید چھ افراد کی موت واقع ہونے سے اس سال یاترا کے دوران مرنے والوں کی مجموعی تعداد22ہوگئی ہے۔ حکام کے مطابق گذشتہ چار روز میں چھ یاتری امرناتھ یاترا کے دوران کئی وجوہات کی بنا پر جاں بحق ہوگئے۔ حکام نے کہا کہ اس سال امر ناتھ یاترا کے دوران اب تک مرنے والوں میں 18یاتری،2رضاکار اور2فورسز اہلکار شامل ہیں۔ اس کے علاوہ کم و بیش30افراد کو یاترا کے دوران مختلف وجوہات کی بنا پر چوٹیں آئی ہیں۔ اس سال امر ناتھ یاترا یکم جولائی کو شروع ہوئی جو 15اگست تک جاری رہے گی۔ چونکہ امرناتھ شرائن اُونچائی پر واقع ہے اس لئے لوگ اکثر وہاں آکسیجن کی کمی کی شکایت کرتے ہیں۔  

محبوبہ نے پی ڈی پی کی پولٹیکل افیئرس کمیٹی تحلیل کی

 سرینگر/پیپلز ڈیمو کریٹک پارٹی (پی ڈی پی) صدر اور سابق وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی نے سنیچر کو اپنی پارٹی کی پولٹیکل افیئرس کمیٹی(پی اے سی) کو تحلیل کردیا۔ پارٹی کے ایک ترجمان کی طرف سے جاری ایک بیان میں بتایا گیا ہے کہ پی اے سی کا از سر نو قیام ماضی قریب میں عمل میں لایا جائے گا۔ بیان میں تاہم پارٹی صدر کی اس کارروائی کی کوئی وجہ نہیں بتائی گئی۔  

امرناتھ یاترا2019:گپھا میں19دن کے دوران2.38لاکھ کے درشن

سرینگر/ حکام نے سنیچر کو کہا کہ اس سال جاری امر ناتھ یاترا کے دوران اب تک گذشتہ19دنوں کے دوران2.38لاکھ یاتریوں نے گپھا میں شیو لنگم کے درشن کئے ہیں۔  اس سال کی امرناتھ یاترا یکم جولائی سے شروع ہوگئی اور یہ15اگست تک جاری رہے گی۔ حکام کے مطابق آج مزید4,094یاتری جموں سے کشمیر کی طرف روانہ ہوگئے۔ واضح رہے کہ یاترا روایتی پہلگام روٹ اور بالہ تل سے کی جاتی ہے اور دونوں طرف سے جانے والے یاتریوں کے لئے حفاظت کے فقیدالمثال انتظامات کئے گئے ہیں۔  

ککر ناگ علاقے میں45سالہ شہری کی لاش بر آمد

 سرینگر/جنوبی ضلع اننت ناگ کے ککر ناگ علاقے میں سنیچر کو ایک45سالہ شہری کی لاش بر آمد کی گئی۔ پولیس ذرائع کے مطابق نظام الدین خان ولد تاج محمد خان ساکنہ چونٹ واڑ ،پنز گام کی لاش آج صبح شیو ناڑ علاقے میں بر آمد کی گئی۔ مہلوک شہری پیشے سے ایک کسان تھا اور اُس کی لاش کو قانونی لوازمات پوری کرنے کے بعد ورثاء کے حوالے کیا گیا ہے۔    

ضلع اننت ناگ کے ڈورو علاقے میں فورسز کا محاصرہ اور تلاشی آپریشن

سرینگر/سیکورٹی فورسز نے سنیچر کو جنوبی کشمیر کے اننت ناگ ضلع میں ایک گائوں کو محاصرے میں لیکر تلاشی آپریشن کا آغاز کیا۔ فورسز کی یہ کارروائی ڈورو علاقے کے ایک گائوں میں عمل میں لائی گئی جہاں فورسز کو جنگجوئوں کی موجودگی کی اطلاع ملی تھی۔ ذرائع کے مطابق فوج اور ایس او جی اہلکاروں نے مشترکہ طور ڈورو علاقے میں واقع محمود آباد گائوں کو محاصرے میں لیکر تلاشی آپریشن شروع کیاہے۔ گائوں کی طرف جانے والے سبھی راستوں کو سیل کیا گیا ہے جہاں گھر گھر تلاشیوں کا سلسلہ آخری اطلاعات ملنے تک جاری تھا۔  

راجوری اور پونچھ میں کنٹرول لائن پر ہند۔پاک افواج کے مابین بھاری فائرنگ کا تبادلہ

سرینگر/بھارت اور پاکستان کی افواج نے سنیچر کو راجوری اور پونچھ اضلاع میں کنٹرول لائن پر ایک دوسرے کے ٹھکانوں کو بھاری فائرنگ کا نشانہ بنایا۔ کراس کنٹرول لائن فائرنگ کے یہ واقعات نوشیرا اور مینڈھر سیکٹروں میں پیش آئے۔ اطلاعات کے مطابق نوشیرا سیکٹرکے بابا کھوری اور کرشنا گھاٹی سیکٹرکے منکوٹ علاقوں میں آج صبح طرفین کے مابین بھاری گولی باری کا تبادلہ ہوا۔ سرکاری ذرائع کے مطابق دونوں طرف کی افواج نے ایک دوسرے کیخلاف ہلکے اور بھاری ہتھیاروں کا استعمال کیا۔ تاہم ابھی تک کسی بھی طرف سے کسی جانی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ملی ہے۔