تازہ ترین

بالا کوٹ اسٹرائیک سے کشمیر کی صورتحال میں نمایاں بہتری، دراندازی میں بھی کمی : حکومت

سرینگر/مرکزی وزیر مملکت برائے داخلہ امور، نتیا نند رائے نے منگل کو پارلیمنٹ میں کہا کہ پاکستان پر بالا کوٹ سرجیکل اسٹرئیک کے بعد جموں کشمیر کی مجموعی سیکورٹی صورتحال میں نمایاں بہتری آئی ہے یہاں تک کہ دراندازی کے واقعات میں بھی43فیصد تک کمی واقع ہوئی ہے۔ رائے کا یہ بیان ایک تحریری سوال کے جواب میں سامنے آیا جس میں پوچھا گیا تھا کہ کیا بالا کوٹ میں انڈین ایئر فورس کی سرجیکل اسٹرئیک کے بعد دراندازی کے واقعات میں کمی آئی ہے؟ وزیر موصوف نے یہ بھی کہا کہ مرکزی سرکار نے در اندازی کے بارے میں زیرو ٹالرنس کی پالیسی اختیار کر رکھی ہے اور اس کیلئے ریاستی سرکار کو ساتھ لیکر اقدامات اُٹھائے گئے ہیں۔  

ایک روزہ معطلی کے بعد یاترا بحال،تازہ جتھا وادی کی طرف روانہ

سرینگر/ایک روزہ معطلی کے بعد منگل کو امرناتھ یاترا بحال ہوگئی اور5964پر مشتمل یاتریوں کا تازہ جتھا جموں سے وادی کی طرف روانہ ہوگیا ۔ حکام کے مطابق ابھی تک کم و بیش ایک لاکھ یاتریوں نے گپھا میں پوجا پارٹ کی ہے۔ حکام نے کہا کہ یاتریوں کا تازہ جتھا اب تک کا سب سے بڑا ہے جو جموں سے روانہ ہوکر وادی کی طرف رواں دواں ہے اور یہ254گاڑیوں پر مشتمل ہے۔ امرناتھ یاترا گذشتہ روزہ وادی میں ہڑتال کی وجہ سے معطل رکھی گئی تھی۔ اس سال کی یاترا یکم جولائی کو شروع ہوگئی اور یہ 15اگست تک جاری رہے گی۔  

کشمیر شاہراہ پرامرناتھ یاتریوں کی گاڑی پرپتھر گر آیا ، یاتری زخمی

 سرینگر/امرناتھ جانے والا ایک یاتری منگل کو سرینگر۔جموں شاہراہ پر اُس وقت زخمی ہوگیا جب ایک پہاڑی سے پتھر کھسک کر اُس گاڑی پر جاگرا  جس  میں  وہ  سوار  تھا۔ یہ حادثہ حکام کے مطابق ضلع رامبن میں پیش آیا۔ حکام نے تفصیلات فراہم کرتے ہوئے کہا کہ مذکورہ یاتری ایک تویرا قسم کی گاڑی میں سوار تھا جو یاتریوں کے ایک قافلے میں شامل تھی۔اس گاڑی پر رامبن ضلع میں ایک پتھر گر آیا جس کی وجہ سے وہ زخمی ہوگیا۔ انہوں نے کہا  کہ زخمی یاتری کو اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔  

کپوارہ۔ کرنا ہ شاہراہ پر مجوزہ ٹنل کی تعمیر میں تاخیر کیخلاف کرنا ہ میں احتجاجی بھوک ہڑتال شروع

سرینگر/کپوارہ۔ کرنا ہ شاہراہ پر واقع ،نستہ چھن گلی (سادھنا  ٹاپ) پر ٹنل کی تعمیر نہ ہونے کے خلاف کرناہ میں 'ٹنل کوآرڈی نیشن کمیٹی' نامی غیر سیاسی تنظیم  نے منگل سے اپنی تین روزہ بھوک ہڑتال شروع کر دی ہے ۔  کمیٹی کے صدر ولی محمد قریشی کی قیادت میں گذشتہ روز منعقدہ میٹنگ کے دوران بھوک ہڑتال کا فیصلہ لیا گیا تھااور آج صبح سے مذکورہ فیصلے پر عملدر آمد شروع کیا گیا اور کمیٹی سے وابستہ لوگ صبح سے ہی تحصیل ہیڈکوارٹر کے سامنے جمع ہوئے جہاں انہوں نے دھرنا دیا ۔ ولی محمد قریشی نے اس سلسلے میں کشمیر عظمیٰ کے ساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ کمیٹی نے اس حوالے سے کئی بار اعلیٰ حکام سے رجوع کیا جبکہ بیکن حکام نے 7کلو میٹر ٹنل کی تعمیر کیلئے ایک سروے بھی کی اور بعد میں اُس کا ڈی پی آر بھی بنایا گیا لیکن پھر نامعلوم وجوہات کی بنا پر اس پر کام آگے نہیں بڑھ سکا ۔ انہوں نے مزی