تازہ ترین

راجوری ضلع میں کراس ایل او سی فائرنگ کے دوران شہری زخمی

سرینگر/ضلع راجوری میں جمعرات کو کنٹرول لائن پر بھارت اور پاکستانی افواج کی ایک دوسرے پر فائرنگ کے دوران ایک شہری زخمی ہوگیا۔ اطلاعات کے مطابق دونوں ملکوں کی افواج نے راجوری میں  کنٹرول لائن پر نوشیرہ، لام علاقے میں ایک دوسرے کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا۔ سرکاری ذرائع نے کہا کہ کراس ایل او سی فائرنگ کے اس واقعہ میں پوکھارنی کا رہنے والا ایک شہری زخمی ہوگیا۔  مذکورہ شہری کراس فائرنگ کے وقت اپنے مویشی چروارہا تھا۔  

جنوبی کشمیر کے کولگام ضلع میں لشکر طیبہ جنگجو گرفتار:پولیس

سرینگر/پولیس سے وابستہ ایس او جی اہلکاروں نے جمعرات کو دعویٰ کہا کہ اُنہوں نے جنوبی کشمیر کے کولگام ضلع میں لشکر طیبہ سے وابستہ ایک جنگجو کو گرفتار کرلیا۔ خبر رساں ایجنسی جی این ایس نے پولیس ذرائع کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ مبارک احمد ڈار ولد عبد الرحیم ڈار نامی اس جنگجو کوژہلن نامی گائوں میں دھر لیا گیا۔ مبارک ریڈونی بالا کا رہنے والا ہے اور وہ گذشتہ سال ماہ اکتوبر سے لاپتہ تھا۔ پولیس ذرائس کے مطابق ژہلن گائوں میں ایک چھاپے کے دوران مبارک کو گرفتار کیا گیا۔ پولیس کے مطابق مبارک ''سی'' ذمرے کا ایک جنگجو تھا اور اس کا تعلق لشکر طیبہ تھا۔  

راجباغ سرینگر گرینیڈ دھماکے میں تین پولیس اہلکار زخمی

سرینگر/مشتبہ جنگجوئوں نے جمعرات کو سرینگر کے راجباغ علاقے میں پولیس کی ایک پارٹی پر گرینیڈ پھینکا جس سے تین اہلکار زخمی ہوگئے۔ اطلاعات کے مطابق یہ گرینیڈ حملہ زیرو برج علاقے میں ہوا جو زور دار دھماکے کے ساتھ پھٹ گیا اور اس سے آس پاس کا علاقہ ہل کر رہ گیا جس سے لوگوں میں خوف و ہراس پھیل گیا۔ پولیس ذرائع نے خبر رساں ایجنسی جی این ایس کو بتایا کہ اس دھماکے کی زد میں آکر تین پولیس اہلکار، جن میں دو ٹریفک پولیس اہلکار شامل ہیں، زخمی ہوگئے۔  زخمی اہلکاروں کی شناخت اے ایس آئی اقبال سنگھ، ٹریفک پولیس اہلکار ثنا اللہ اورحارث منظور کے طور ہوئی ہے۔ دھماکے کے فوراً بعد فورسز نے علاقے کو محاصرے میں لے لیا۔    

راجباغ سرینگر میں پولیس پارٹی پر گرینیڈ حملہ

سرینگر/مشتبہ جنگجوئوں نے جمعرات کو سرینگر کے راجباغ علاقے میں پولیس کی ایک پارٹی پر گرینیڈ پھینکا۔ اطلاعات کے مطابق یہ گرینیڈ حملہ زیرو برج علاقے میں ہوا جو زور دار دھماکے کے ساتھ پھٹ گیا اور اس سے آس پاس کا علاقہ ہل کر رہ گیا جس سے لوگوں میں خوف و ہراس پھیل گیا۔ مزید تفصیلات کا انتظار ہے۔  

راجوری کدل سرینگر میں خواتین کا احتجاج، گرفتار بچوں کی رہائی کا مطالبہ

سرینگر/شہر سرینگر کے راجوری کدل میں جمعرات کو خواتین نے اپنے گرفتار بچوں کی رہائی کے حق میں  احتجاج کیا ۔ احتجاجی خواتین کا کہنا تھا کہ اُن کے گرفتار بچوں کو این اے آئی کے حوالے کیا جارہا ہے۔ عینی شاہدین نے کہا کہ بیسیوں خواتین راجوری کدل چوک میں جمع ہوئیں اور سڑک پر دھرنا دے کر بیٹھ گئیں۔ احتجاجی خواتین میں اکثریت اُن9 گرفتار شدہ افراد کی قریبی رشتہ داروں  کی تھی جنہیں گذشتہ برس حراست میں لیا گیا تھا۔انہوں نے گرفتار شدگان کی رہائی کے حق میں نعرے بلند کئے۔ واضح رہے کہ پولیس نے مذکورہ گرفتار شدگان کو این اے آئی کے حوالے کئے جانے کی پہلے ہی نفی کی ہے۔ مذکورہ گرفتار شدگان کیخلاف پولیس سٹیشن کوٹھی باغ میں کیس درج ہے جس کی تحقیقات این اے آئی کر رہی ہے۔ مذکورہ ملزمان فی الوقت جوڈیشل حراست میں ہیں۔  

پونچھ ضلع میں کراس ایل او سی فائرنگ

سرینگر/بھارت اور پاکستان کی افواج نے جمعرات کو پونچھ ضلع میں کنٹرول لائن پر ایک دوسرے کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا۔ ذرائع کے مطابق دونوں ممالک کی افواج نے کھاری اور کمارا علاقوں میں ایک دوسرے کیخلاف خود کار ہتھیاروں کا استعمال کیا۔ دفاعی ذرائع نے کہا کہ فائرنگ کا آغاز پاکستانی فورسز نے کیا اور اس کا بھر جواب بھارتی افواج نے دیدیا۔ کراس ایل او سی فائرنگ کے اس واقعہ میں تاہم کسی جانی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ملی۔ گذشتہ کچھ عرصہ سے پونچھ اور راجوری اضلاع میں کراس ایل او سی فائرنگ کے واقعات میں اضافہ ہوا ہے۔

تین فروری کووزیراعظم مودی کا دورۂ جموں کشمیر

سرینگر/ وزیراعظم نریندر مودی متعدد پروجیکٹوں کی سنگ بنیاد ڈالنے کی غرض سے تین فروری کو جموں کشمیر کا دورہ کریں گے۔ذرائع کے مطابق و ہ جموں صوبے میں ایک عوامی جلسے سے بھی خطاب کریں گے۔  معلوم ہوا ہے کہ اپنے دورے کے دوران نریندرمودی پارٹی کے لیڈران سے ملاقات کریں گے اور وہ ممکنہ طور ریاست کی موجود سیا سی وسلامتی صورتحا ل کے حوالے ریاست کے گورنر سے بھی ملاقات کریں گے تاہم ابھی یہ طے نہیں ہواہے کہ وزیر اعظم ریاست کے تینوں خطوں کا دورہ کریں گے یا نہیں۔  

سرینگر میں سرکاری راشن بلیک میں فروخت کرنے والا شخص گرفتار:پولیس

سرینگر/ پولیس نے بدھ کو کہا کہ صارفین کیلئے مخصوص سرکاری چاول کو بلیک میں فروخت کرنے کی پادائش میں ایک شخص کی گرفتاری عمل میں لا کر اس کے قبضے سے 74راشن سے بھرے بیگ برآمد کرکے ضبط کئے گئے۔  ایک بیان کے مطابق پولیس پوسٹ بمنہ کو شکایت موصول ہوئی تھی کہ بلال کالونی بمنہ میں ایک شخص سرکاری راشن کو اپل برانڈ بوریوں میں بھرکر صارفین کو منہ مانگے داموں فروخت کرتا ہے ۔ پولیس نے کہا کہ اطلاع ملتے ہی بروقت کارروائی کرتے ہوئے بلال احمد ناتھ ساکنہ بلال کالونی بمنہ کو رنگے ہاتھوں دبوچ کر اس کے قبضے سے 74راشن سے بھری بوریاں اور آٹے کے دو بیگ برآمد کئے گئے۔  پولیس نے اس سلسلے میں ایف آئی آر زیر نمبر 13/2019کے تحت پولیس اسٹیشن پارمپورہ میں کیس درج کرکے مزید تحقیقات شروع کی ہے ۔  

برفباری کے بیچ بانڈی پورہ میں فورسز کا محاصرہ اور تلاشی آپریشن

سرینگر/فورسز نے بدھ کو شدید برفباری کے بیچ شمالی کشمیر میں ضلع بانڈی پورہ کے ایک گائوں کو محاصرے میں لیکر تلاشی آپریشن شروع کیا۔ اطلاعات کے مطابق فوج، سی آر پی ایف اور ایس او جی اہلکاروں نے حاجن علاقے کو محاصرے میں لیکر تلاشی آپریشن ہاتھ میں لیا۔ مقامی ذرائع کے مطابق فورسز نے جنگجوئوں کی موجودگی کے بارے میں مصدقہ اطلاع کے بعدڈانگر محلہ میں گھر گھر تلاشی لی۔  

برفباری کے نتیجے میں سرینگر ایئر پورٹ پر سبھی اڑانیں منسوخ

سرینگر/وادی بھر میں تازہ برفباری کے نتیجے میں بدھ کو سرینگر انٹر نیشنل ایئر پورٹ پر سبھی اڑانیں منسوخ کی گئیں تاہم محکمہ موسمیات نے پیشگوئی کی ہے کہ دیر تک موسم ٹھیک ہونے کے امکانات ہیں۔ سرینگر ایئر پورٹ اتھارٹیز کے مطابق موسم کی خرابی اور بھاری برفباری کی وجہ سے سبھی اڑانوں کو منسوخ کیا گیا ہے۔  وادی کشمیر میں آج تازہ برفباری سے روز مرہ کے معمولات میں کافی اثر پڑا۔ وادی میں تازہ برفباری کا سلسلہ آج صبح شدید سردی کے بیچ شروع ہوگئی ۔ واضح رہے کہ محکمہ موسمیات نے پیشگوئی کی ہے کہ19جنوری سے کشمیر میں''شدید ''برفباری متوقع ہے جس سے وادی کے ساتھ زمینی و فضائی رابطے منقطع ہوسکتے ہیں۔  ماہ جنوری میں اب تک وادی کشمیر کے اندر تین بار برفباری ہوئی ہے جہاں سردیوں کے شدید ترین ایام ''چلہ کلان'' جاری ہیں۔ کشمیری کلینڈر کے مطابق چلہ کلان

برفباری کے نتیجے میں سرینگر ایئر پورٹ پر سبھی اڑانیں منسوخ

سرینگر/وادی بھر میں تازہ برفباری کے نتیجے میں بدھ کو سرینگر انٹر نیشنل ایئر پورٹ پر سبھی اڑانیں منسوخ کی گئیں تاہم محکمہ موسمیات نے پیشگوئی کی ہے کہ دیر تک موسم ٹھیک ہونے کے امکانات ہیں۔ سرینگر ایئر پورٹ اتھارٹیز کے مطابق موسم کی خرابی اور بھاری برفباری کی وجہ سے سبھی اڑانوں کو منسوخ کیا گیا ہے۔  وادی کشمیر میں آج تازہ برفباری سے روز مرہ کے معمولات میں کافی اثر پڑا۔ وادی میں تازہ برفباری کا سلسلہ آج صبح شدید سردی کے بیچ شروع ہوگئی ۔ واضح رہے کہ محکمہ موسمیات نے پیشگوئی کی ہے کہ19جنوری سے کشمیر میں''شدید ''برفباری متوقع ہے جس سے وادی کے ساتھ زمینی و فضائی رابطے منقطع ہوسکتے ہیں۔  ماہ جنوری میں اب تک وادی کشمیر کے اندر تین بار برفباری ہوئی ہے جہاں سردیوں کے شدید ترین ایام ''چلہ کلان'' جاری ہیں۔ کشمیری کلینڈر کے مطابق چلہ کلان

سی پی جے کا گورنر کو مکتوب، صحافی آصف سلطان کی رہائی پر زور

سرینگر/کمیٹی برائے تحفظ صحافی (سی پی جے) نے بدھ کو جموں کشمیر کے گورنر ستیہ پال ملک کو ایک مکتوب لکھا جس میں کشمیری صحافی آصف سلطان کو رہا کرنے پر  زور  دیا کیا گیا ہے جو گذشتہ برس 27اگست سے پابند سلاسل ہیں۔  تنظیم کے ایشین پروگرام کارڈی نیٹر، سٹیون بٹلر کی طرف سے لکھے گئے خط میں گورنر ملک سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وہ آصف کیخلاف سبھی قانون معاملات واپس لیں۔  خط میں لکھا ہے''سلطان،' کشمیر نریٹر 'کیساتھ وابستہ ایک صحافی ہیں۔ اس کو جھوٹ کی بنیاد پر ملزم بنایا گیا ہے۔اس کے خلاف ایف آئی آر12اگست کو درج کی گئی جب بتہ مالو میں ایک مسلح معرکہ آرائی ہوئی۔اس پر الزام ہے کہ عسکریت پسندوں کے ساتھ رابطے میں تھا ۔ اُس کے ایڈیٹر اور گھروالوں نے سختی کے ساتھ پولیس الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ محض اپنے پیشے کے ساتھ وابستہ تھے۔اُن کیخلاف ابھی تک کوئی

وادی کشمیر میں تازہ برفباری سے معمولات میں رکاؤٹ

سرینگر/وادی کشمیر میں بدھ کو تازہ برفباری سے روز مرہ کے معمولات میں کافی اثر پڑا جبکہ محکمہ موسمیات نے پیشگوئی کی ہے کہ آج دیر تک موسم ٹھیک ہونے کا امکان ہے۔ وادی میں تازہ برفباری کا سلسلہ آج صبح شدید سردی کے بیچ شروع ہوگئی ۔ شہر سرینگر میں کم و بیش دو اڑھائی انچ تازہ برف جمع ہوگئی ہے۔وادی کے دیگر علاقوں سے بھی ہلکی برفباری کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ واضح رہے کہ محکمہ موسمیات نے پیشگوئی کی ہے کہ19جنوری سے کشمیر میں''شدید ''برفباری متوقع ہے جس سے وادی کے ساتھ زمینی و فضائی رابطے منقطع ہوسکتے ہیں۔  ماہ جنوری میں اب تک وادی کشمیر کے اندر تین بار برفباری ہوئی ہے جہاں سردیوں کے شدید ترین ایام ''چلہ کلان'' جاری ہیں۔ کشمیری کلینڈر کے مطابق چلہ کلان کا سلسلہ 22دسمبرسے31جنوری، یعنی 40 روز تک جاری رہتا ہے۔  

وسطی کشمیر گائوں میں پانی کی عدم دستیابی کیخلاف مظاہرہ

سرینگر/وسطی کشمیر کے گاندربل ضلع میں ریپورہ اور اس کے ملحقہ لار نامی علاقے کے باشندو ں نے بدھ کو پینے کے پانی کی عدم دستیابی کیخلاف احتجاجی مظاہرہ کیا۔ مذکورہ علاقے کے بیسیوں باشندوں نے سرینگر۔لیہہ شاہراہ پر دھرنا دیکر حکام کی توجہ اپنی طرف مبذول کرانے کی کوشش کی۔. مظاہرین کا کہنا تھا کہ اُن کے علاقے میں کئی روز سے پینے کا پانی میسر نہیں ہے۔ انہوں نے کئی بار متعلقہ حکام کو اس بارے میں مطلع کرکے اپنی مشکلات سے اُنہیں آگاہی دلانے کی کوشش کی تاہم س کا کوئی نتیجہ بر آمد نہیں ہوا۔ بعد ازاں سیول انتظامیہ کا ایک آفیسر اور پولیس نے مظاہرین کو یقین دلایا کہ اُن کی شکایت کا جلد از جلد ازالہ کیا جائے گا۔  

سرینگر میں کم سے کم درجہ حرارت منفی2.1ڈگری سیلشیس ریکارڈ، محکمہ موسمیات کی برفباری کی پیشگوئی

سرینگر/محکمہ موسمیات نے پیشگوئی کی ہے کہ19جنوری سے کشمیر میں''شدید ''برفباری متوقع ہے جس سے وادی کے ساتھ زمینی و فضائی رابطے منقطع ہوسکتے ہیں۔اس دوران بدھ کو شہر سرینگر اور دوسرے مقامات میں ہلکی برفباری ہونے کی اطلاعات موصول ہوئی ہیں۔ محکمہ کے مطابق یہ برفباری23جنوری تک جاری رہے گی جبکہ22جنوری کو یہ پورے عروج کو پہنچے گی۔  ماہ جنوری میں اب تک وادی کشمیر کے اندر دو بار برفباری ہوئی ہے جہاں سردیوں کے شدید ترین ایام ''چلہ کلان'' جاری ہیں۔ کشمیری کلینڈر کے مطابق چلہ کلان کا سلسلہ 22دسمبرسے31جنوری، یعنی 40 روز تک جاری رہتا ہے۔ دریں اثناء سرینگر میں کم سے کم درجہ حرارت منفی2.1ڈگری سیلشیس ریکارڈ کیا گیا ہے۔ محکمہ موسمیات کے مطابق پہلگام اور گلمرگ میں رات کا درجہ حرارت باالترتیب منفی4.2اورمنفی6ڈگری سیلشیس ریکارڈ کیا گیا ہے۔  

سنیچر سے محکمہ موسمیات کی 'شدیدبرفباری' کی پیشگوئی

سرینگر/محکمہ موسمیات نے منگل کو پیشگوئی کی کہ19جنوری سے کشمیر میں''شدید ''برفباری متوقع ہے۔ محکمہ کے مطابق یہ برفباری23جنوری تک جاری رہے گی جبکہ22جنوری کو یہ پورے عروج کو پہنچے گی۔  ماہ جنوری میں اب تک وادی کشمیر کے اندر دو بار برفباری ہوئی ہے جہاں سردیوں کے شدید ترین ایام ''چلہ کلان'' جاری ہیں۔ کشمیری کلینڈر کے مطابق چلہ کلان کا سلسلہ 22دسمبرسے31جنوری، یعنی 40 روز تک جاری رہتا ہے۔  

نیشنل کانفرنس نے1996 کا الیکشن نہ لڑا ہوتا تو کوکہ پرے وزیر اعلیٰ بن گیا ہوتا: عمر عبد اللہ

سرینگر/سابق وزیر اعلیٰ عمر عبد اللہ نے منگل کو کہا کہ گورنر ستیہ پال ملک کا کام سیاست میں مداخلت کرنا نہیں بلکہ الیکشن کیلئے مناسب ماحول تیار کرنا ہے۔ جنوبی کشمیر کے کولگام ضلع میں ایک ریلی سے خطاب کرتے ہوئے عمر نے کہا''گورنر صاحب کا کام یہاں کی سیاست میں مداخلت نہیں ہے۔سیاست ہمارا کام ہے۔گورنر اور اُن کی انتظامیہ کا واحدکام صورتحال کو اس حد تک موزون بنانا ہے جس میں عوام آزادی کے ساتھ انتخابات میں حصہ لے سکیں۔'' بعد میں عمر عبد اللہ نے نامہ نگاروں کے ساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ اگر نیشنل کانفرنس نے 1996کے انتخابات میں حصہ نہ لیا ہوتا تو بد نام زمانہ سرکاری بندوق بردار، کوکہ پرے ریاست کا وزیر اعلیٰ بن گیا ہوتا۔  انہوں نے کہا'' کوئی مانے یا نہیں، اگر فاروق صاحب اور نیشنل کانفرنس نے 1996کے انتخابات میں حصہ نہ لیا ہوتا تو کوکہ پرے جموں کشمیر کا وزیر ا

سامبہ میں کراس بارڈر فائرنگ میں زخمی بی ایس ایف اہلکار چل بسا

سرینگر/سامبہ سیکٹر میں  کراس بارڈر فائرنگ میں زخمی ہونے والا بی ایس ایف اہلکار منگل کو زخموں کی تاب نہ لاکر دم توڑ بیٹھا۔ ونے پرساد نامی بی ایس ایف اہلکار پاکستانی فورسز کے ساتھ گولیوں کے تبادلے میں گذشتہ روز زخمی ہوا تھا۔ حکام کے مطابق اہلکار کو ستواری کے اسپتال لیجایا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاسکا۔    

شمالی کشمیر میں سڑک حادثہ، دو خواتین سمیت تین زخمی

سرینگر/شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ میں منگل کو ایک سڑک حادثے کے نتیجے میں دو خواتین سمیت تین افراد زخمی ہوگئے۔ حکام نے کہا کہ رفیع آباد کے پازوالپورہ،ڈنگی وچھہ علاقے میں ایک کار سڑک سے لڑھک کر حادثے کا شکار ہوئی ۔ انہوں نے کہا کہ اس حادثے میں غلام رسول ساکنہ پکھوارا،صادیق بیگم ساکنہ پازوالپورہ اور سکینہ بانو ساکنہ حمام نامی مسافر زخمی ہوگئے جنہیں علاج و معالجہ کیلئے اسپتال لیجایا گیا۔  

راجوری میں کنٹرول لائن پر ہند۔پاک افواج کے مابین گولی باری

سرینگر /بھارت اور پاکستانی کی افواج نے منگل کو راجوری ضلع کے نوشیرہ اور سندربنی علاقوں میں کنٹرول لائن پر ایک دوسرے کے ٹھکانوں کو نشانہ بنایا۔ اطلاعات کے مطابق سندربنی علاقے میں دونوں طرف کی افواج میں ہلکے ہتھیاروں کی فائرنگ کا سلسلہ کم و بیش ایک گھنٹے تک چلتا رہا۔ حکام کے مطابق بعد ازاں دونوں ہمسایہ ممالک کی افواج نے نوشیرہ میں ایک دوسرے کے ٹھکانوں پر گولیاں چلانے کا آغاز کیا جو آخری اطلاعات ملنے تک جاری تھا۔ کسی جانی نقصان کی فوری طور پر کوئی اطلاع نہیں ملی۔