تازہ ترین

گورنر کے مشیر،کئی سیاست دانوں کی مزار شہداء پر حاضری اور گلباری

سرینگر/ریاستی گورنر کے مشیر خورشید گنائی کے ساتھ ساتھ کئی سیاست دانوں اور ریاستی انتظامیہ کے افسران نے سنیچر کو سرینگر کے نقشبند صاحب  میں واقع 1931کے شہدا کو خراج عقیدت پیش کرنے کیلئے وہاں فاتحہ پڑھی اور گلباری کی۔ اطلاعات کے مطابق گنائی کے ہمراہ کشمیر کے صوبائی کمشنربصیر احمد خان بھی تھے جنہوں نے آج صبح مزارشہداء پر فاتحہ پڑی۔ جن اور شخصیات نے مزار شہداء پر حاضری دی اُن میں نیشنل کانفرنس کے صدر فاروق عبد اللہ،کانگریس کے ریاستی صدر جی اے میر،سی پی آئی (ایم) کے ریاستی سیکریٹری ایم وائی تاریگامی،عوامی اتحاد پارٹی کے صدر انجینئر رشید،غلام حسن میر اورحکیم محمد یاسین شامل تھے۔ جموں کشمیر میں ہر سال13جولائی کو یوم شہداکے طور منایا جاتا ہے۔1931میں آج ہی کے دن ڈوگرہ مہاراجہ کی فورسز نے سرینگر سینٹرل جیل کے باہر شخصی راج کیخلاف مظاہرے کرنے والوں پر گولیاں چلاکرمتعدد افراد کو م

یوم شہدائے کشمیر: امن و ترقی کیلئے اتحاد لازمی

 ڈاکٹر فاروق، عمر عبداللہ، محبوبہ مفتی، سجاد لون اور شاہ فیصل کا خراج عقیدت   سرینگر // 13جولائی یوم شہداء کے موقعہ پر ریاستی گورنر نے اپنے پیغام میں سماج کے سبھی طبقوں کی جانب سے اجتماعی کوششوں پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ ایسا کرنے سے ہی ریاست کے ہر محاذ پر تیز تر ترقی کو ممکن بنایا جاسکتا ہے۔انہوں نے کہا’’ جموں و کشمیر ہمیشہ آپسی بھائی چارہ اور باہمی یگانگت کے لئے جانا جاتا رہا ہے، لہٰذا ریاست کو امن اور خوشحالی کی جانب لیجانے کیلئے بھائی چارہ کی مشعل فروزاں رکھنے کی اشد ضرورت ہے‘‘۔بی جے پی کے بغیر ریاست کی سبھی سیاسی جماعتیں یوم شہداء مناتی ہیں۔یاد رہے 1931میں ڈوگرہ مہاراجہ ہری سنگھ کی فوج نے 22کشمیریوں کو سرینگر سینٹرل جیل کے باہرشہید کیا تھا، اسی واقعہ کی مناسبت سے یہ دن منایا جاتا ہے۔یہ سبھی جاں بحق کشمیری بعد میں خانقاہ نقشبند صاحب نوہٹہ

افیون کی ترسیل روکنے میں پولیس ناکام کیوں؟: علماء کی برہمی

سرینگر //افیون(ہیروئن) اور براون شوگر کا استعمال اس قدر مہنگا ہے کہ امیر گھرانوں سے تعلق رکھنے والے نوجوان بھی اس کی قیمت برداشت نہیں سکتے اور نتیجہ نقب زنی اور دیگر جرائم پر منتج ہوتا ہے۔محالجین کا کہنا ہے کہ اس کا نشہ جلد لگتا ہے اور پھر ایڈس اور دیگر مہلک بیماریوں کا سبب بھی بنتا ہے۔ پولیس کنٹرول روم سرینگر میں چل رہے انسداد منشیات مرکز (پی سی آر) کے ڈائریکٹر وزہنی امراض کے ماہر ڈاکٹر مظفر درابو نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا ،افیون کی دستیابی زیادہ بڑھ رہی ہے اور بچے زیادہ تر اسی کا شکار ہو رہے ہیں ۔ڈاکٹر مظفر نے کہا’’ جب کوئی نوجوان افیون کو استعمال کرتا ہے تو اُس کو چاہ کر بھی نہیں چھوڑ سکتا ‘‘۔انہوں نے کہا کہ اس سے ایسے نوجوان میں بے چینی زیادہ بڑھ جاتی ہے، جسم میں درد ہونا شروع ہو جاتا ہے اور نوجوان کو ایسا لگتا ہے کہ وہ اُس کے بغیر نہیں رہ سکے گا ۔ڈاکٹر مظفر

سابق آئی جی پی فاروق خان

سرینگر//لکش دیپ کے منتظم اور ریاست کے سابق انسپکٹر جنرل آف پولیس فاروق احمد خان کو ممکنہ طور پر ریاستی گورنر کا چیف سیکورٹی ایڈوائزر مقرر کیا جارہا ہے ۔ وہ اگلے ہفتے اپنے عہدے کا چارج سنبھالیں گے۔ 1994 کاڈر کے آئی پی ایس آفیسر فاروق احمد خان فی الوقت لکش دیپ میں ایڈمنسٹریٹر کے فرائض انجام دے رہے ہیں۔ فاروق احمد خان 2013میں نوکری سے سبکدوش ہوئے جس کے بعد انہوں نے بی جے پی میں شمولیت اختیار کی ۔ وہ جموں سے تعلق رکھتے ہیں اور انہوں نے ملی ٹنسی مخالف آپریشوں میں کلیدی رول ادا کیا ہے۔

جماعت اسلامی پر پابندی کا معاملہ

جموں //جماعت اسلامی پر پابندی عائد کئے جانے کے فیصلے کا جائزہ لینے کیلئے مرکز کی طرف سے تشکیل دیاگیا ٹریبونل (ان لا فل ایکٹیویٹیز پریونشن ٹریبونل ) جموں میں آج جبکہ لیہہ میں 20 اور 22 جولائی کو سماعت کرے گا ۔اس ٹریبونل کی سربراہی دہلی ہائی کورٹ کے جج جسٹس چندر شیکھر کررہے ہیں ۔سرکاری ذرائع کے مطابق جسٹس چندر شیکھر کی قیادت میں 16رکنی ٹیم وزارت داخلہ اور سرکاری کونسل ارکان کے ہمراہ جموں پہنچ گئی ہے جو جموں ہائی کورٹ کے احاطے میں اس تعلق سے سنوائی کرے گی کہ کیا جماعت اسلامی کو غیر قانونی تنظیم قرار دینے کیلئے شواہدکافی ہیں یا نہیں ۔ٹریبونل کی طرف سے ایسی ہی سنوائی بیس اور بائیس جولائی کو لیہہ میں بھی ہوگی۔علیحدہ علیحدہ مراسلوں کے ذریعہ وزارت داخلہ کی طرف سے ریاستی چیف سیکریٹری اور صوبائی کمشنر جموں سے کہاگیاہے کہ ٹریبونل کیلئے کورٹ روم میں بیٹھنے کا انتظام رکھاجائے ۔ریاستی انتظامیہ کو ی

پنڈتوں کی محفوظ باز آبادکاری منصوبے پرپھرغور ہوگا

سرینگر// بی جے پی نے کہا ہے کہ وہ  ہزاروں بے گھرکشمیری پنڈتوں کی محفوظ کیمپوں میں باز آبادکاری کے منصوبے پر از سر نو غور کرے گی۔ بی جے پی جنرل سیکریٹری اور کشمیر امور انچارج رام مادھونے کہا ہے کہ انکی پارٹی 1990کی دہائی میں ہجرت کرچکے 2سے 3لاکھ پنڈتوں میں سے کچھ کی کشمیر واپسی کیلئے وعدہ بند ہے۔رام مادھو نے ایک بین الاقوامی نیوز ایجنسی کو ایک انٹرویو دیتے ہوئے کہا ’’ پنڈتوں کی وادی واپسی بنیادی حق ہے جس کی قدر کرنی چاہیے،اسکے ساتھ ہی ہمیں انہیں معقول سیکورتٰ بھی فراہم کرنا ہوگی‘‘۔مادھو نے کہا’’ جموں و کشمیر کی سابق مخلوط سرکارنے اس بات پر غور کیا تھا کہ پنڈتوں کیلئے الگ یا مشترکہ باز آبادکاری کالونیاں بنائی جائیں، لیکن اس پر بعد میں کوئی پیش رفت نہیں ہوئی، کیونکہ کسی بھی بات پر باہمی اتفاق رائے پیدا نہیں ہوسکا‘‘۔رام مادھو نے کہا کہ

ماحولیات کے منفی اثرات سے متعلق جائزہ اتھارٹی قائم

سر ینگر//مرکزی سرکا نے ریاستی سطح کی ماحولیات کے منفی اثرات سے متعلق جائزہ اتھارٹی(انوائرنمنٹ امپیکٹ اسیسمنٹ اتھارٹی )جے اینڈ کے کا قیام عمل میں لایاہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ ریاستی حکومت کی مشاورت سے ریاستی سطح کی ماہرین پر مشتمل اپرائزل کمیٹی جموں وکشمیر بھی تشکیل دی ہے جو اتھارٹی کی معاونت کرے گی۔مکانات و شہری ترقی کی مرکزی وزارت کی نوٹیفکیشن کے مطابق اتھارٹی کی سربراہی کھیریاں گول گجرال جموں کے لال چند کریں گے۔اتھارٹی میںجیلان آباد بٹہ پورہ سرینگر کے نذیر احمد بھی ہوں گے اور ڈائریکٹر ماحولیات و ریموٹ سینسنگ اتھارٹی کے ممبر سیکرٹری ہوں گے۔ نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ اتھارٹی کے چیئرمین اور ارکان کی مدت تین سال کی ہوگی۔اتھارٹی کی معاونت کے لئے مرکزی سرکار نے ایک اپرائزل کمیٹی جموں وکشمیر بھی تشکیل دی ہے جس کی سربراہی شاستری نگر جموں کے سبھاش چندر شرما کریں گے۔کمیٹی کے ارکان میں مومن آبا

عازمین کا ایک اورقافلہ فریضہ حج کے لئے روانہ

بڈگام//سٹیٹ حج کمیٹی کے مطابق جمعہ کو304عازمین پر مشتمل ایک اور قافلہ سرینگر بین الاقوامی ہوائی اڈے سے دو سپائس جٹ اُڑانوںمیںسفر محمود پر روانہ ہوا۔ان میں195مرد اور109خواتین عازمین حج شامل ہیں۔ضلع انتظامیہ بڈگام کے علاوہ حج کمیٹی کے آفیسران اور دیگر سینئر آفیسران نے ہوائی اڈے پر عازمین کرام کو رخصت کیا۔

امرناتھ یاترا کا 12واں دن

 اننت ناگ//یکم جولائی سے جاری سالانہ امرناتھ یاترا کے تحت گپھا کے درشن کرنے والے یاتریوں کی تعداد ڈیڑھ لاکھ سے زائد ہوگئی ہے ۔ یکم جولائی سے لیکرجمعہ کی شام تک بارہ دنوں کے دوران 1لاکھ 57ہزار62یاتریوں نے پہلگام اور بالتل کے راستے گپھا کے درشن کئے ۔ یاترا کے بارہویں روز 13004یاتریوں نے درشن کئے ۔یاترا کے دوران ابتک 5یاتری فوت ہوچکے ہیں جبکہ جمعہ کو ایک فورسز اہلکار یاترا کرنے کے دوران فوت ہوا۔ اسسٹنٹ سب انسپکٹر بی ایس ایف ہوا سنگھ، جو عیشمقام میں عارضی طور پر یاترا ڈیوٹی کیلئے تعینات ہے، اپنے چار ساتھیوں کے ہمراہ یاترا پر چلا گیا لیکن زوجی بل کے نزدیک پہنچ کر وہ غش کھا کر گر پڑا، اور حرکت قلب بند ہونے سے فوت ہوا۔

زاسو ٹہاب میں پر اسرار دھماکہ،نوجوان زخمی

پلوامہ//جنوبی ضلع پلوامہ کے زاسو ٹہاب گائوں میں ایک پراسرار دھماکہ میں ایک 28سالہ نوجوان شدید زخمی ہوا۔پولیس نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ محمد عبداللہ ڈار ساکن زاسو کے مکان میں ایک پر اسرار دھماکہ ہوا، جس کے دوران انکا بیٹاجاوید احمد ڈاربری طرح زخمی ہوا۔جسے پہلے پلوامہ ضلع اسپتال اور بعد میں سرینگر منتقل کردیا گیا۔پولیس کا کہنا ہے کہ دھماکہ کی جگہ برآمد کئے گئے قابلِ اعتراض مواد سے پتہ چلا ہے کہ زخمی شخص غالباً جنگجوئوں کے ساتھ مل کر دھماکہ خیز مواد تیار کر رہا تھا کہ اسی دوراندھماکہ ہوا جس کے نتیجے میں  مذکورہ شخص  زخمی ہوا۔ اس سلسلے میں مزید تحقیقات ہو رہی ہے۔