تازہ ترین

آج سے موسم پھر تبدیل ہوگا، شاہراہ 3گھنٹے تک بند رہی،کئی پروازیں بھی منسوخ

 سرینگر+بانہال //پیر پنچال کے آر پار بالائی اور میدانی علاقوں میں بارشوں اور ہلکی برف باری کی وجہ سے سنیچر کو جموں سرینگر شاہراہ گاڑیوں کی آمدورفت جبکہ سرینگر کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر فضائی ٹریفک بری طرح متاثر رہا۔ آج شاہراہ پر صرف درماندہ گاڑیوں کو چلنے کی اجازت دی جائے گی۔محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ آج دوپہر سے موسم میں تبدیلی آئے گی ۔ائرپورٹ حکام کے مطابق سنیچرکو 3 پروازیں منسوخ کی گئیں جبکہ کئی میں تاخیر ہوئی۔  سرینگر و وسطی کشمیر  شہر سرینگر اور بڈگام میں دن بھر موسم ابرآلودرہا اور وقفے وقفے سے بارشیں بھی ہوتی رہیں ۔اگر چہ درجہ حرارت میں بہتری آئی تاہم سردی میں بہت اضافہ ہوا۔گاندربل سے ارشاد احمد کے مطابق ضلع میں 6 انچ سے زیادہ برفباری ہوئی جبکہ کنگن میں 8 انچ تازہ برف ریکارڈ کی گئی ،گنڈ میں ایک فٹ گگن گیر میں ڈیڑھ فٹ تازہ برفباری ہوئی اس دوران سونہ مرگ

ریاست میں مکمل طور پر امن بحال: گورنر

جموں//ریاستی گورنر ستیہ پال ملک نے کہا ہے کہ پاکستان کشمیر میںامن کی فضا کو مکدر کرنے کی خاطر جنگجوﺅں کو دھکیلنے کی ہر ممکن کوشش کررہا ہے جس کے لیے وہ آئے روز جنگ بندی معاہدہ کی خلاف ورزی کررہا ہے تاہم فوج و فورسز پاکستانی گولہ بھاری کا بھرپور اور مناسب جواب دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ گورنر نے بتایا کہ پاکستان فی الوقت شکست خوردگی کا شکار ہے ،کیوں کہ وہ اس پار جنگجوﺅں کو دھکیلنے میں بری طرح سے ناکام ہوا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ فوج پاکستانی جارحیت کا بھر پور مقابلہ کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔ پاکستان اپنی طرف سے جنگجوﺅں کو اس پار دھکیلنے میں ایڑی چوٹی کا زور لگارہا ہے تاہم ہماری فوج ان کا مقابلہ کرنے کے لیے بالکل تیار ہے۔گورنر کا کہنا تھا کہ ریاست جموں وکشمیر میں گزشتہ برس پنچایتی و بلدیاتی انتخابات پرامن اور خوشگوار ماحول میں منعقد ہوئے لیکن پاکستان اس کو پرامن طورپر منعقد کرانے کا روادار نہ

اچھا ہوتاشاہ فیصل سرکاری خدمات جاری رکھتے:گورنر

جموں//سابق آئی اے ایس آفیسر ڈاکٹر شاہ فیصل کے حالیہ استعفیٰ پر گورنر ستیہ پال ملک نے کہا ہے کہ شاہ فیصل ایک قابل اور بااعتماد آفیسر تھے جنہوںنے ریاست کے لوگوں کی بہبودی کے لئے اپنی خدمات انتہائی لگن اور تن دہی سے انجام دی۔ گورنر نے مزید کہاکہ شاہ فیصل نے سماج کے کمزور طبقوں سے تعلق رکھنے والے لوگوں کی بہبودی کے لئے بھی انتھک کوششیں کیں۔اُنہوں نے مزید کہا کہ اگر ڈاکٹر شاہ فیصل اپنی سرکاری خدمات جاری رکھتے وہ سماج کی بہتری کے لئے اور زیادہ اہم اقدامات انجام دیتے۔جہاں تک سابق آئی اے ایس آفیسر کے کشمیری قوم کے ساتھ اُن کے جذبات و احساسات کا تعلق ہے ، اُس سلسلے میں انہیں خطے میں تعینات کر کے نادار اور غریب لوگوں کی اقتصادی و معاشی حالت کو بہتر بنانے اور وادی کے نوجوانوں کے لئے روزگار کے مواقع معرض وجود میں لانے کے بھی اقدامات ممکن بنا ئے جاسکتے تھے تاکہ ریاست کے لوگ خوشحال اور بہتر زندگی گز

طلاق ثلاثہ آرڈیننس کو صدر کی منظوری

نئی دہلی // طلاق ثلاثہ سے متعلق بل اور دو دیگر بلوں کے پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس میں منظور نہ ہونے کی وجہ سے ان کی جگہ دوبارہ لائے جانیوالے متعلقہ آرڈیننس کو صدر رام ناتھ کووند نے منظوری دے دی۔طلاق ثلاثہ کی روایت کو فوجداری کے تحت جرم قرار دینے سے متعلق مسلم خواتین (شادی کے حقوق کا تحفظ) بل 2018، میڈیکل کونسل آف انڈیا (ترمیمی) بل 2018 اور کمپنی (ترمیمی) بل، 2019 لوک سبھا میںتو منظور ہو گئے تھے لیکن انہیں راجیہ سبھا میں منظور نہیں مل سکی تھی۔ لہٰذا کابینہ نے 10 جنوری کو دوبارہ آرڈیننس لانے کا فیصلہ کیا تھا۔تین طلاق اور میڈیکل کونسل پر آرڈیننس گزشتہ سال ستمبر میں اور کمپنی قانون میں ترمیم کے لئے آرڈیننس گزشتہ سال نومبر میں لایا گیا تھا۔ پارلیمنٹ کے سرمائی اجلاس میں تینوں سے متعلق بل لوک سبھا میں منظور ہو گئے، لیکن ہنگامے کی وجہ سے راجیہ سبھا میں زیادہ تر وقت کارروائی نہ ہونے کی وجہ سے یہ

ٹوٹے پھوٹے نہیں، بھر پور منڈیٹ کی ضرورت

آپریشن آل اﺅٹ نا قابل ِقبول، انسانی حقوق پامالی کی حمایت نہیں کرسکتے: ڈاکٹر فاروق    اننت ناگ//نیشنل کانفرنس صدر ڈاکٹر فاروق عبداللہ نے کہا ہے کہ آئندہ اسمبلی انتخابات میں نیشنل کانفرنس کو اکثریت کے ساتھ اگر کامیابی ملی تو ہلاکتوں کے حقائق جاننے کےلئے ’حقائق ومفاہمتی کمیشن ‘ کا قیام عمل میں لایا جائیگا۔اننت ناگ میں ایک پارٹی تقریب کے حاشئے پر نامہ نگاروں کے ساتھ بات کرتے ہوئے ڈاکٹر فاروق نے کہا کہ اللہ کرے ہماری پارٹی کو اکثریت حاصل ہو اورہمیں کسی سہارے کی ضرورت نہ پڑے، ہم حکومت سنبھالنے کے پہلے ہی دن ہلاکتوں کی تحقیقات کیلئے کمیشن کا اعلان کرکے حقائق کو صرف جموں کشمیر کے لوگوں کے لئے نہیں، بلکہ ساری دنیا کے سامنے لائیں گے‘۔فوج کے’آپریشن آل آﺅٹ‘ کے بارے میں ڈاکٹر فاروق نے کہا’ہم نہیں چاہتے کہ ہمارے لوگوں کو ا±ن کے گھروں کے ا

بڈگام میں غیر حاضر 26 ملازمین معطل

 بڈگام //ضلع انتظامیہ بڈگام نے ضلع میں ملازمین کے خلاف شکنجہ کستے ہوئے ڈیوٹی سے غیر حاضر رہنے کی پاداش میں26سرکاری ملازم معطل کئے ۔یہ کارروائی ایڈیشنل ڈسٹرکٹ ڈیولپمنٹ کمشنر، بڈگام خورشید احمد ثنائی نے کئی سرکاری محکموں کا اچانک معائینہ کرنے کے دوران عمل میں لائی ۔ پاﺅرڈیولپمنٹ ڈیپارٹمنٹ (پی ڈی ڈی) کے اچانک معائینے کے دوران21جبکہ آر اینڈ بی محکمہ کے5ملازمین کو بلا اجازت غیر حاضر پایا گیا۔ایڈیشنل ڈسٹرکٹ ڈیولپمنٹ کمشنر، بڈگام نے موقع پر ہی مذکورہ ملازمین کی معطلی کے احکامات صادر کئے۔  

کٹہ پورہ یاری پورہ کولگام میں مسلح تصادم ، 2جنگجو جاں بحق،2فرار

کولگام //یاری پورہ کولگام کے کٹپورہ گائوں میں ایک خونریز مسلح تصادم آرائی میں 2جنگجو جاں بحق جبکہ ایک فوجی اہلکارزخمی ہوا۔بتایا جاتا ہے کہ مہلوک جنگجوئوںمیں البدر کا چیف کمانڈر معروف جنگجو زینت الاسلام بھی ہے،تاہم پولیس نے اسکی تصدیق نہیں کی ۔مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ محاصرے کے دوران 2 جنگجو محاصرہ توڑ کر فرار ہوئے۔تصادم کی جگہ کے نزدیک مظاہرین اور فورسز میں شدید جھڑپیں بھی ہوئیں جس کے دوران کئی افراد مضروب ہوئے۔مسلح تصادم آرائی کے ساتھ ہی کولگام میں انٹر نیٹ سروس معطل کی گئی۔ مسلح تصادم کیسے ہوا؟ پولیس کے مطابق فوج کی34 آرآر، ایس او جی اور سی آرپی ایف نے ایک مصدقہ اطلاع ملنے پر کٹپورہ یاری پورہ کولگام نامی گاؤں کا محاصرہ کیا اور تلاشی کارروائی شروع کی۔پولیس نے بتایا کہ فورسز کو یہ اطلاع ملی تھی کہ علاقے میں کم سے کم 3جنگجو موجود ہیں ،یہ البدر کا گروپ ہے، جس کی قیادت زینت

شوپیان میں فوجی اہلکار کی خود کشی

شوپیان // شوپیان کے مضافاتی علاقے میں فوج کے ایک دیرینہ کیمپ میں تعینات اہلکار نے خود پر گولی چلا کر اپنی زندگی کا خاتمہ کیا۔ یہ 2019 میں فورسز اہلکار کا خود کشی کا پہلا واقعہ ہے ۔پولیس نے بتایا کہ ایک فوجی اہلکار  ابھیشیک رائے کمارنے گذشتہ رات بہی باغ میں 34آر آر کے کیمپ میںاپنی ہی سروس رائفل سے خود پر گولی ماردی جس کے باعث وہ شدید زخمی ہوا۔ اسے اسپتال لیجانے کی کوشش کی گئی لکن وہ تب تک دم توڑ چکا تھا۔ فوجی اہلکار کے انتہائی اقدام کی وجوہات کے بارے میں معلوم نہیں ہوا۔