تازہ ترین

اقوام متحدہ کا 2 ارب ڈالر کے امدادی منصوبے کا آغاز

27 مارچ 2020 (00 : 01 AM)   
(      )

نیویارک//آج پوری انسانیت کو کورونا وائرس شدید خطرہ لاحق ہے جس کے تناظر میں اقوام متحدہ نے دنیا کے غریب ترین اور انتہائی کمزور لوگوں کی مدد کے لیے 2 ارب ڈالر کے عطیہ کی اپیل کردی۔ اقوام متحدہ کے سکریٹری جنرل انٹونیو گوٹریس نے کہا کہ عالمی سطح پر اقدامات اور یکجہتی انتہائی اہم ہے ، ملک کے انفرادی ردعمل کافی نہیں ہوں گے ۔سکریٹری جنرل نے کہا کہ اقوام متحدہ کا منصوبہ دنیا کے غریب ترین ممالک میں کورونا وائرس سے لڑنے کی صلاحیت پیدا اور انتہائی کمزور لوگوں خاص طور پر خواتین اور بچوں، بوڑھے افراد اور معذور یا دائمی بیماری میں مبتلا افراد کی ضروریات کو حل کرنا ہے ۔انہوں نے مزید کہا کہ اگر مکمل مالی اعانت فراہم کی جاتی ہے تو اس سے بہت ساری جانیں بچ جائیں گی۔سکریٹری جنرل نے کہا کہ متعلقہ این جی اوز کے ذریعہ طبی ساز وسامان اور صحت کی دیکھ بھال کرنے والے کارکنوں کی فراہمی ممکن ہوگی۔اقوام متحدہ کا منصوبہ 9 ماہ یعنی اپریل سے دسمبر پر مشتمل ہے ۔اس ضمن میں کہا گیا کہ عطیہ سے مجموعی رقم 2 ارب سے زائد رقم جمع کی جائے گی اور عالمی ادارہ برائے صحت (ڈبلیو ایچ او) اور ورلڈ فوڈ پروگرام بھی اپیلیں کرچکے ہیں۔80 صفحات پر مشتمل کتابچہ میں بتایا گیا کہ اقوام متحدہ کا یہ منصوبہ اقوام متحدہ کی ایجنسیوں کے ذریعہ عمل میں لایا جائے گا۔اقوام متحدہ کا کہنا تھا کہ اس رقم کا استعمال مختلف مقاصد کے لیے کیا جائے گا اور کچھ ممالک کی صحیح ضروریات کی شناخت ابھی بھی کی جا رہی ہے ۔یواین آئی