تازہ ترین

مزید خبریں

4 اگست 2019 (02 : 10 PM)   
(      )

نیو ڈسک

 گرفتاریوں کا تازہ سلسلہ تشویشناک:صحرائی

سرینگر// تحریک حریت چیئرمین محمد اشرف صحرائی نے جموں کشمیر میں بالعموم اور ضلع اسلام آباد وپلوامہ میں بالخصوص بڑے پیمانے پر آزادی پسندوں کو گرفتار کرنے کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ پورے جموں کشمیر میں جنگی ماحول قائم کیا گیا ہے۔ایک بیان میں صحرائی نے کہا کہ ہر طرف خوف ودہشت پھیلایا جارہا ہے، کشمیر کے چپے چپے اور گلی کوچوں میں فورسز کی ازسرِ نو تعیناتی سے پورے عوام میں تشویش کی لہر دوڑ گئی ہے۔ بیان کے مطابق فورسز نے اسلام آباد میں شبانہ چھاپوں کے دوران فیاض احمد داس، محمد شفیع خان، ریاض احمد، مشتاق احمد، عاشق حسین نارچور کے علاوہ متعددنوجوانوں کو گرفتار کیا گیا۔ اسی طرح پلوامہ اور شوپیان میں بھی پکڑ دھکڑ کا سلسلہ جاری ہے۔ بانڈی پورہ میں حاجی علی محمد کے علاوہ نوجوانوں کو تھانوں پر طلب کیا جارہا ہے۔ اسی طرح کی کارروائیوں سے عوام میں شکوک وشبہات پیدا ہوگئے ہیں۔ صحرائی نے کہا کہ جموں کشمیر کے لوگ پہلے ہی مشکلات کا شکار ہیں، لیکن چند دنوں سے فورسز کی سرگرمیوں سے ایک ہیجانی کیفیت پیدا ہوگئی ہے۔ 
 
 
 
 

راجوری اور پونچھ میں فورسز کا مارچ 

آئی جی پولیس نے سیکورٹی کاجائزہ لیا

سمت بھارگو+حسین محتشم 

راجوری +پونچھ //اتوار کو سیکورٹی فورسز نے راجوری اور پونچھ میں روٹ مارچ کیا جس سے پہلے سے ہی پائی جارہی غیر یقینی صورتحال مزید خوفناک ہوگئی ۔ذرائع نے بتایاکہ جموں وکشمیر پولیس ، سی آر پی ایف ، انڈو تبتن پولیس ، ریپڈ ایکشن فورس اور بی ایس ایف کی طرف سے پولیس لائنز سے مارچ شروع کیاجو گوجر منڈی ، کھیورہ ، بیلہ کالونی ، پرانے بس اڈہ ،پرانے شہر ، طارق پل ، سلانی پل ، جواہر نگر سے ہوتاہوا پنجہ چوک تک گیا۔اس دوران سینئر پولیس اور پیرا ملٹری فورسز افسران نے اس روٹ مارچ کی قیادت کی ۔ ایک مقامی شہری راہل شرما نے بتایاکہ انہوں نے کبھی اس قدر فورسز کی تعیناتی نہیں دیکھی اوراس سے ایسا لگتاہے کہ حکومت کوئی بڑا اقدام کرنے جارہی ہے ۔اسی طرح کا مارچ پونچھ میں بھی کیاگیا جس سے مقامی لوگوں میں زبردست خوف پایاجارہاہے اور طرح طرح کی چہ میگوئیاں کی جارہی ہیں ۔دریں اثناء انسپکٹر جنرل آف پولیس جموں زون مکیش سنگھ نے اتوارکو راجوری پونچھ اضلاع میں سیکورٹی صورتحال کا جائزہ لیا ۔پونچھ میں مکیش سنگھ نے مقامی افسران کے ساتھ اندرون کمرہ میٹنگ منعقد کی جس دوران معاملات پر تبادلہ خیال کیاگیا۔انہوں نے بعد میں سیول سوسائٹی کے ارکان سے بھی ملاقات کی۔ اس موقعہ پر ڈی آئی جی راجوری پونچھ ویویک گپتا اور دیگر افسران بھی موجو دتھے ۔
 
 
 
 
 
 

ای ایم ایم آر سی کے پروڈیوسرفاروق لون کاانتقال

سرینگر//کشمیریونیورسٹی کے ایجوکیشنل ملٹی میڈیاریسرچ سینٹر میں پروڈیوسر اور معروف سماجی کارکن فاروق لون کا کچھ عرصہ علالت کے بعد اتوارکو انتقال ہوگیا۔اُن کے انتقال پر صحافتی، سماجی اورتعلیمی حلقوںنے زبردست دکھ کااظہار کیا۔موصوف کشمیر یونیورسٹی کے شعبہ صحافت وماس کمیونیکیشن کے اولین بیچ کے پا س آوٹ تھے۔اُن کے نمازجنازہ میں زندگی کی سبھی شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی۔مرحوم کو مولوی مقبرہ ملہ کھاہ میںسپردخاک کیاگیا۔ ان کی اجتماعی فاتحہ خوانی بدھوار 7اگست کوصبح10بجے انجام دی جائے گی اور اس کے بعد بہوری کدل کمیوونٹی ہال میں ایک تعزیتی مجلس منعقد ہوگی۔
 
 

ریاست کا ہر باشندہ خوف ودہشت میںمبتلا:کاروانِ اسلامی

سرینگر//کاروان اسلامی کے امیر مولانا غلام رسول حامی نے ریاست کی موجودہ صورتحال پر اپنے خدشات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ریاست کا ہر باشندہ اس وقت انتہائی تشویشناک حالت میں مبتلا ہے ۔ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ جہاں پہلے سے ہی ریاست کے لوگ گذشتہ چند دہائیوں سے حالات کے اتار چڑھائو سے ذہنی کوفت کا شکار ہیں وہیں موجودہ صورتحال سے تشویش میںمزید اضافہ ہوا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ دنیا کی تاریخ پر نظر دوڑائی جائے تو یہی نتیجہ اخذ کیا جاتا ہے کہ دھونس دبائو، جبر و تشدد سے کسی بھی مسئلے کا حل کبھی بھی نہیں نکلاہے بلکہ صرف اور صرف ماحول کو سازگار بنا کر بات چیت سے مسائل کا حل نکالا جاسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریاست کی سیاسی جماعتوںکے لئے اس وقت یہ نہایت ضروری ہے کہ وہ اتحاد و اتفاق کا مظاہرہ کرکے ریاست کے تشخص کو قائم رکھنے کے لئے اپنا کردار ادا کریں۔
 
 
 

 انجمن شرعی شیعیان کے اہتمام سے سوناواری میں مجلس حسینیؑ

سرینگر//انجمن شرعی شیعیان کے اہتمام سے کھنہ پیٹھ سوناواری میں سالانہ مجلس حسینیؑ کا انعقاد کیا گیا جس میں ہزاروں عقیدتمندوں نے شرکت کی۔ عقیدتمندوں سے خطاب کرتے ہوئے انجمن کے صدر آغا سید حسن نے معرکہ کربلا کے مختلف گوشوں کی وضاحت کی اور  حضرت امام حسینؑ کی سیرت بیان کی۔ انہوں نے کہا کہ امام عالی مقام ؑ کے قیام کا سب سے بڑا مقصد دین اسلام کو اپنی حقیقی شکل و صورت  میں آنے والی نسلوں کیلئے محفوظ رکھنا تھا جس میں وہ مکمل طور کامیاب ہوئے۔
 
 
 
 
 

طلعت پرویز نے کشتواڑ ضلع میں ترقیاتی منظر نامے کا جائزہ لیا

کشتواڑ //محکمہ اعلیٰ تعلیم کے سیکریٹری طلعت پرویز روہیلا جو کشتواڑ ضلع کے ترقیاتی عمل کے نگران سیکرٹری بھی ہے ، نے ضلع و سیکٹورل افسران کی ایک میٹنگ کے دوران ضلع کے ترقیاتی منظرنامے کا تفصیلی جائزہ لیا ۔ضلع ترقیاتی کمشنر انگریز سنگھ رانا ، اے ڈی ڈی سی محمد حنیف ملک ، اے ڈی سی پون کمار پریہار ، اے سی ڈی انیل کمار چنڈیل ، جوائنٹ ڈائریکٹر پلاننگ محمد اقبال ، اے سی آر عامر حسین کے علاوہ منسلک محکموں کے انجینئر ، ضلع و سیکٹورل اَفسران نے میٹنگ میں شرکت کی۔میٹنگ کے آغاز پر ضلع ترقیاتی کمشنر نے ضلع میں جاری ترقیاتی پروجیکٹوں ، مرکزی و ریاستی معاونت والی سکیموں کی عمل آوری ، صحت ، تعلیم ، بجلی ، پینے کے پانی ، دیہی ترقی ، تعمیراتی عامہ ، جنگلات ، پشو و بھیڑ پالن ، زراعت ، باغبانی و دیگر سیکٹروں میں درج کی گئی پیش رفت کی تفاصیل پیش کیں۔طبی سیکٹر کے جائزے کے دوران سیکرٹری موصوف نے مڑ ھوا میں 50 بستروں والے ہسپتال کی تعمیر پر اطمینا ن کا اِظہار کیا۔متعلقہ سی ایم او کو ہدایت دی گئی کہ وہ ہسپتال کے لئے طبی سازو سامان ، بنیادی ڈھانچہ اور عملہ تعینات کرنے کے بارے میں تفصیلی تجویز پیش کریں۔میٹنگ میں زرعی سیکٹر کے جائزے کے دوران اِنٹنسو ویجی ٹیبل کلسٹر ائیریا ، انٹنسو سپیز ڈیولپمنٹ پروجیکٹ ، کے سی سی اور سوئیل ہیلتھ کارڈ وں کی تقسیم کاری ، پی ایم کسان کے تحت باقی ماندہ مستحقین کا اندراج ، پی ایم فصل بیمہ یوجنا کے تحت پیش رفت کے بارے میں تبادلہ خیال کیا گیا۔دیگر سیکٹروں جن میں تعلیم ، خوراک ، تعمیراتِ عامہ،سماجی بہبود شامل ہیں کی موجودہ صورتحال کے بارے میں میٹنگ میں تفصیلات پیش کی گئیں۔سیکرٹری موصوف نے متعلقہ افسران پر زور دیا کہ وہ ضلع میں جاری ترقیاتی عمل میں سرعت لائیںاور ضلع کے لوگوں کو مختلف سکیموں کا استفادہ کا موقعہ دیں۔اُنہوں نے اَفسروں کو تن دہی ، لگن اور محنت سے کام کرنے کی ہدایت دی تاکہ اِن سکیموں کے لئے واگزار کئے گئے رقومات کا صحیح مصرف یقینی بنایا جاسکے۔
 
 
 

انجینئر ایسوسی ایشن کا ہڑتالی اعلان مؤخر 

سرینگر // وادی کی موجودہ صورتحال کے پیش نظر گریجویٹ انجینئر ایسوسی ایشن نے6اور7اگست کو دی گئی کام چھوڑ ہڑتال کی کال کو مؤخر کردیا ہے ۔اپنے ایک بیان میں سٹیٹ جوائنٹ ایکشن کمیٹی آف گریجویٹ انجینئر ایسوسی ایشن کی ایک میٹنگ جموں اور سرینگر میں منعقد ہوئی جس میں فیصلہ لیا گیا کہ مسائل کے حل کیلئے جو ہڑتال کی کال انہوں نے 6اور7جون کو رکھی تھی اُس کو موخر کر دیا گیا ہے ۔چیئرمین ایس جے اے سی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ ہڑتال کیلئے اگلی تاریخ کا اعلان بعد میں کیا جائے گا ۔
 
 
 
 

 ہائی کورٹ ڈرائیور اسامیوں کیلئے اِنٹرویو ملتوی 

 سرینگر //جموں کشمیر ہائی کورٹ نے 7 اگست ( بدھ وار) منعقد ہونے والے سرینگر ، بارہمولہ اور ڈوڈہ اضلاع میں ڈرائیور اسامیوں کے لئے اِنٹرویو ملتو ی کیا ہے۔ چیف جسٹس ہائی کورٹ کے پرنسپل سیکریٹری کی طرف سے جاری ایک نوٹیفکیشن کے مطابق اِنٹرویو کی نئی تاریخ الگ سے مشتہر کیا جائے گا۔سبھی متعلقہ افراد کی معلومات کے لئے مطلع کیا گیا ہے کہ سرینگر ، بارہمولہ اور ڈوڈہ ضلع میں ڈرائیوروں کے ضلعی کیڈر اَسامیوںکے لئے انٹرویو کے مطابق 10.01.2019 کی نوٹیفکیشن نمبر 01 کی پیروی کی جائے گی۔ نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ 7 اگست ، 2019 ء(بدھ) کو ملتوی کیا گیا ہے۔ انٹرویو کی نئی تاریخ کو الگ سے مشتہرکیا جائے گا۔
 
 
 
 
 
 
 

جے کے پولیس کو ڈریس ،کِٹ میٹننس الائونس نقد دیا جائے گا

      سرینگر//گورنر ستیہ پال ملک کی صدارت میں منعقدہ ریاستی اِنتظامی کونسل میٹنگ میں فیصلہ لیا گیا کہ ریاست کے سارے پولیس عملے کو اضافی شرحوں پر براہِ راست ڈریس اور کِٹ میٹننس الائونس نقد دیا جائے گا۔یہ الائونس مشاہرے کی صورت میں ایس پی اوز کو بھی دیا جائے گا۔پولیس کے نان گزیٹیڈ عملے کو یہ سالانہ الائونس ماہانہ 40روپے جبکہ گزیٹیڈ افسروں کو 150روپے ماہانہ دیا جائے گا۔ریاستی اِنتظامی کونسل کے فیصلے کے تحت جموں اینڈ کشمیر پولیس کے ایس ایس پیز ، ایس پیز اور ڈی ایس پیز کو ڈریس اور کٹ میٹننس الائونس سالانہ 10,000روپے نقد دیا جائے گاجبکہ پولیس عملے میں انسپکٹر سے اے ایس آئی تک یہ الائونس سالانہ 7000 روپے فراہم کیا جائے گا۔
 
 
 
 
 

مکان منہدم کرنے کے دوران نوجوان لقمہ اجل

بڈگام میں کہرام

بڈگام//وسطی ضلع بڈگام میں ایک رہائشی مکان کو منہدم کرنے کے دوران ایک نوجوان جان بحق جبکہ دیگر 2شدید زخمی ہوئے جن کو فوری طور ااسپتال منتقل کیا گیا ہے ۔ اس دوران واقعے کے ساتھ ہی علاقے میں کہرام مچ گیا۔ بڈگام کے وڈون علاقے میں اتوار کے روز اس وقت کہرام مچ گیا جب علاقے میں کچھ نوجوان ایک مکان کو منہدم کر رہے تھے جس دوران مکان کا ایک حصہ ان پر گر آیا جس کے نتیجے میں وہ اسی کے نیچے دب گئے ۔اس دوران افراد خانہ اور مقامی لوگوں کی ایک بڑی تعدادجائے واردات پر پہنچی جنہوں نے ملبے کے نیچے دبے تینوں افراد کو باہر نکال کر اسپتال پہنچایا جہاںبعد میں ایک زخمی جاوید احمد ڈار ولدعبدالحمید ڈار ساکن چرپورہ بڈگام زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ بیٹھا جبکہ حادثے میں دیگر دو زخمی افراد کو فوری طور سرینگر کے جے وی سی اسپتال منتقل کیا گیا ہے ۔ اس دوران جب نوجوان کی لاش ان کے گھر پہنچائی گئی تو یہاں کہرام مچ گیا ہے ۔ 
 
 
 
 

ماضی جیسی غلطیوں کو دہرانالا حاصل مشق

مرکز کشمیریوں کے احساسات کی قدر کرے:حکیم  

سرینگر //پی ڈی ایف کے چیئرمین حکیم یاسین نے مرکز پر زور دیا ہے کہ وہ اپنی پالیسی کو دھونس اور دباؤ کے بجائے کشمیری لوگوں کے دلوں کو جیتنے کی طرف مرکوز کریں۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کی موجودہ تشویشناک صورتحال ماضی میںمرکزی حکومتوں اورریا ستی حکومتوں کی عوام دشمن رویے کا نتیجہ ہے۔ایک بیان میں حکیم یاسین نے کہا کہ 1947 سے لیکر آج تک مسلسل متعلقہ مرکزی و ریاستی حکومتوں نے کشمیری لوگوں کے جذبات اور احساسات سے کھلواڑ کیاہے جس کی وجہ سے آپسی رشتوں میں دوریاں بڑھ گئی اورکشمیریوں کے ذہنوں میں بدظنی نے جنم لیا۔حکیم یاسین نے کہا کہ اس طرح مقامی سرکاروں کی غلط کاریوں اور عوامی سرمایہ کے لوٹ کھسوٹ کی پشت پناہی کرنے سے مرکزی حکومت کشمیر میں موجودہ تشویشناک حالات کی خود زمہ دار ہے۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت کو ہوش کے ناخن لینا چاہیے کہ کشمیر مسلے کو فوجی طاقت کے بل پر نہیں بلکہ باہمی گفت و شنید اور افہام وتفہیم کے ذریعے ہی حل کیا جاسکتا ہے۔حکیم یاسین نے مرکزی حکومت سے پر زور اپیل کی کہ وہ وادی کشمیر میں پچھلے کیی دنوں سے جان بوجھ کر حالات کو ھنگامہ خیز اور تشویشناک بنانے کے محرکات سے عوام کو اعتماد میں لیں۔
 
 
 
 

مودی کشمیری عوام کو اعتماد میں لیںـ:وکیل

سرینگر//پیپلز کانفرنس کے سنیئر نائب صدر عبد الغنی وکیل نے وزیر اعظم ہند نریندر مودی سے اپیل کی ہے کہ وہ ریاست جموں کشمیر کے حوالے سے کوئی بھی فیصلہ لینے سے پہلے جموں کشمیر کی آل پارٹی میٹنگ نئی دہلی میں طلب کریں ۔ جبکہ اسی طرح سے ریاست جموں کشمیر کے عوام کو بھروسہ میں لے لیں اور اپنے اس وعدے پر کار بند رہیں کہ جموں کشمیر کے عوام کو اپنانے کیلئے انسانیت ، جمہوریت اور کشمیریت کو مضبوط بنانے پر یقین رکھتے ہیں ۔ اور ساتھ ہی ریاست جموں کشمیر میں موجودہ صورتحال پر خاموشی توڈ دیں تاکہ ریاست خاص کر وادی کشمیر کے عوام میںپائی جارہی بے چینی کا خاتمہ ہو سکے ۔ عبد الغنی وکیل نے یہ بات بھی زور دیکر کہی کہ نیشنل کانفرنس کی لیڈر شپ بھی ریاست جموں کشمیر میں پائی جا رہی غیر یقینی صورتحال کو ختم کرنے میں مدد کر سکتی ہے کہ اگر وہ عوام کو اپنی بیس منٹ تک وزیر اعظم ہند کے ساتھ بات چیت سے آگاہ کریں کہ انہوں نے دفعہ 35Aکے حوالے سے وزیر اعظم سے کیا سنا اور موجودہ صورتحال پر وزیر اعظم نریندر مودی کے کیا خیالا ت تھے بجائے اس کے این سی لیڈر شپ نے خاموشی اختیار کی ہے بلکہ ان کوششوں سے بھی دور رہے جو 35Aکے تحفظ کے حوالے سے محبوبہ جی اور سجاد لون نے شروع کی تھی ۔ عبد الغنی وکیل نے یہ بات دوہرائی کہ ریاست کی خصوصی پوزیشن کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کی اجاز ت نہیں دی جائیگی اور اس کیلئے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے۔ بلکہ اس سلسلے میں اجتماعی کوششوں کی بھر پور حمایت ہو گی ۔
 
 
 
 

ماحولیاتی اثرات کا جائزہ لینے کیلئے اتھارٹی قائم

 ریاستی سطح کی ماہرین پر مشتمل اپرائزل کمیٹی بھی تشکیل

 سری نگر //مرکزی سرکار نے ریاستی سطح کی انوائرنمنٹ امپیکٹ اسیسمنٹ اتھارٹی جے اینڈ کے کا قیام عمل میں لایاہے ۔ اس کے ساتھ ساتھ ریاستی حکومت کی مشاورت سے ریاستی سطح کی ماہرین پر مشتمل اپرائزل کمیٹی جموں وکشمیر بھی تشکیل دی ہے جو اتھارٹی کی معاونت کرے گی۔مکانات و شہری ترقی کی مرکزی وزارت کی نوٹیفکیشن کے مطابق اتھارٹی کی سربراہی کھیریاں گول گجرال جموں کے لال چند کریں گے۔اتھارٹی میںجیلان آباد بٹہ پورہ سرینگر کے نذیر احمد بھی ہوں گے اور ڈائریکٹر ماحولیات و ریموٹ سینسنگ اتھارٹی کے ممبر سیکرٹری ہوں گے۔نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ اتھارٹی کے چیئرمین اور ارکان کی مدت تین سال کی ہوگی۔اتھارٹی کی معاونت کے لئے مرکزی سرکار نے ایک اپرائزل کمیٹی جموں وکشمیر بھی تشکیل دی ہے جس کی سربراہی شاستری نگر جموں کے سبھاش چندر شرما کریں گے۔کمیٹی کے ارکان میں مومن آباد اننت ناگ کے ایم اے ٹاک، چھنی ہمت سیکٹر2 جموں کے برج بھوشن شرما، گلشن نگر نوگام بائی پاس کے عبدالرشید ماکرو،سینک کالونی جموں کے پروفیسر اروند جسروٹیہ اور جے کے امپا کے ایسوسی ایٹ پروفیسر غلام محمد ڈار ہوں گے۔علاوہ ازیں باغ حیدر پورہ بائی پاس کے عرفان یٰسین، جنرل پوسٹ آفس سرینگر کے پروفیسر ایم اے خان، شعبۂ اکنامکس جموں یونیورسٹی کے پروفیسر فلیندر کمار سودن، ماحولیاتی سائنس شعبۂ جموں یونیورسٹی کے پروفیسر انل کے رینہ، کشمیر یونیورسٹی کے ارتھ سائنسز شعبۂ کے پروفیسر شکیل احمد رومشو بھی اس کے ارکان ہوں گے جبکہ انچارج ریموٹ سینسنگ اینڈ جی آئی ایس لیبارٹری کمیٹی کے سیکرٹری ہوں گے۔ ریاستی سطح کی ماہرین پر مشتمل اپرائزل کمیٹی کے چیئرمین اور ممبران تین برس کی مدت تک اپنے عہدے پر قائم رہیں گے۔نوٹیفکیشن میں مزید کہا گیا ہے  ریاستی سطح کی ماہرین پر مشتمل اپرائزل کمیٹی مشترکہ ذمہ داریوں کے اصول پر کام کرے گی اور ہر معاملے میں چیئرمین اتفاق رائے کے مطابق فیصلہ لیں گے اور اگرکسی معاملے میں اتفاق رائے نہ پایا گیا اس صورت میں کمیٹی کے سارے ممبران کی رائے حتمی تصور کی جائے گی۔حکومت جموں وکشمیر نے اتھارٹی کے لئے محکمہ جنگلات میں قائم ڈائریکٹوریٹ آف انوارنمنٹ اینڈ ایکولوجی کو بطور سیکرٹریٹ نامزد کیا ہے ۔ڈائریکٹوریٹ اتھارٹی کو تمام ضروری سہولیات فراہم کرے گا۔ کوئی بھی شخص جسے انوارنمنٹ کلیرنس کے لئے درخواست دینے کا خواہشمند ہو کو چاہئے کہ وہ ریاستی حکومت کے ڈائریکٹر انوانمنٹ اینڈ ایکولوجی فارسٹ ڈیپارٹمنٹ سے رابطہ قائم کریں۔
 
 
 
 
 

بھدرواہ میں سنسنی خیزواقعہ 

اہلیہ کو گولی مارنے کے بعد شوہرکی خودکشی 

طاہر ندیم خان 

بھدرواہ //بھدرواہ کے گاٹھاعلاقے میں ایک نوجوان دکاندار نے مبینہ طور پر اہلیہ کو گولی مارنے کے بعد اپنی لائسنس یافتہ بندوق سے خود کو بھی گولی مار کر زندگی کا خاتمہ کردیا۔23سالہ خاتون کو شدید زخمی حالت میں ہسپتال میں زیر علاج رکھاگیاہے ۔ایس ڈی پی او بھدرواہ عادل ریشو کے مطابق موقعہ سے خودکشی کا ایک نوٹ بھی ملاہے اور ابتدائی تحقیقات سے ایسا لگتاہے کہ شہری نے پہلے اپنی اہلیہ کو قتل کیاہوگا جس کے بعد خود کو بھی گولی مار کر خودکشی کی کوشش کی ہوگی ۔انہوں نے واقعہ کی تفصیل دیتے ہوئے بتایاکہ اتوارکو1بج کر 15منٹ پر یہ سننے میں آیا کہ 29سالہ انکش کمار ولد کرشن کانت شرما ساکن گاٹھابھدرواہ نے اپنے ہی گھر پراپنی 23سالہ اہلیہ اشوانی شرما پر12بور رائفل سے گولی چلائی ہے جو شدید زخمی ہوئی جس کے بعد انکش نے خود کو بھی گولی مار ی جس سے وہ موقعہ پر ہی ہلاک ہوگیا۔انہوں نے بتایاکہ ایس ایچ او بھدرواہ نے موقعہ پر پہنچ کر اشوانی شرما کو کمیونٹی ہیلتھ سنٹر بھدرواہ منتقل کیاجہاں اس کا علاج چل رہاہے ۔انہوں نے بتایاکہ اس حوالے سے تحقیقات کی جارہی ہے ۔