تازہ ترین

عرصہ درازسے غیر حاضر9ڈاکٹر ملازمت سے برطرف

11 جولائی 2019 (42 : 10 PM)   
(      )

نیو ڈسک
سرینگر//ریاستی سرکار نے ڈیوٹی سے غیر قانونی طور ہر غیر حاضر رہنے والے 9ڈاکٹروں کو نوکری سے برطرف کردیا ہے۔ ریاستی سرکار نے  اپنے ایک حکم نامہ زیر نمبر 654/HME/2019بتاریخ 10جولائی 2019میں کہا ہے کہ مذکورہ ڈاکٹر صاحبان نے بار بار محکمہ ہیلتھ اور میڈیکل ایجوکیشن کہ نوٹسوں کو نظر انداز کیا اور ڈیوٹی پر حاضر نہیں ہوئی ہے۔ ریاستی سرکار نے  اپنے حکم نامہ میں لکھا ہے کہ مذکورہ ڈاکٹروں نے کو اس سے قبل 10دستمبر 2018کو زیر آرڈر نمبر HME/HRM/179/2017سے کو ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز جموں اور کشمیر سے غیر حاضر رہنے والے ڈاکٹروں کی فہرست تیار کرنے کا حکم  دیا تھا  جبکہ ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز جموں و کشمیر نے اپنے حکم ناموں زیر نمبرات ES-3/Notice/480-17 بتاریخ 25مارچ 2019 اور EST/3/1-113/8396بتاریخ 12مارچ 2019کو ڈاکٹروں نے فہرست جمع کی تھی۔ محکمہ صحت و طبی تعلیم کی جانب سے نوکری سے برطرف کئے گئے ڈاکٹروں میں ڈاکٹر شبیر احمد میر ولد محمد رمضان میر ساکنہ منگام، واگورہ بارہمولہ، ڈاکٹر میر بشارت احمد کنٹھ ولد محمد صادق کنٹھ ساکنہ ایچ آئی جی کالونی بمینہ سرینگر، ڈاکٹر شہنواز کلو ولد بشیر احمد کلو ساکنہ آرم پورہ سوپور، ڈاکٹر زیبہ الطاف ولد الطاف احمد بٹ ساکنہ نسیم باغ حضرت بل، ڈاکٹر سہیل مقبول وکیل ولد محمد مقبول وکیل ساکنہ بڑشاہ نگر نٹی پورہ، ڈاکٹر حامد علی ڈار ولد غلام محدی ڈار ساکنہ پاندھریٹھن سرینگر ، ڈاکٹر شیخ محمد طاہر ولد شیخ ثنا اللہ ساکنہ غوثیہ کالونی بمنہ سرینگر،ڈاکٹر برہان وانی ولد عبدالرحمان وانی ساکنہ ستھوپائین بربرشاہ اور ڈاکٹر حکیم عرفان شوکت ولد حکیم شوکت حسین ساکنہ مہاوارہ بڑگام کے نام شامل ہے۔