11 جولائی 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

 
ضلع کانگریس کمیٹی جموں کاگورنر ہائوس کے باہر احتجاجی دھرنا 
گورنر انتظامیہ پر عوام کو بنیادی سہولیات فراہم کرنے میں ناکام رہنے کا الزام 
جموں //ضلع کانگریس کمیٹی(شہری) جموں نے بی جے پی کی جانب سے جموں کے عوام کے ساتھ مبینہ جعلی وعدے کرنے اور کھوکھلے نعرے لگانے کے خلاف بدھ کے روز گورنر ہائوس کے باہر احتجاجی دھرنا دیا ۔ مظاہرین  نے گورنر انتظامیہ پر عوام کے بنیادی سہولیات فراہم کرنے میں ناکام رہنے کا الزام لگایا ،مظاہرین کا یہ بھی مبینہ الزام ہے کہ بی جے پی نے جموں کے عوام کے ساتھ جعلی وعدے کئے اور انہیں کبھی بھی پورا نہیں کیا۔احتجاجی دھرنا کا اہتمام ضلع کانگریس کمیٹی جموں شہری کی جانب سے کیا گیا تھا ،جس میں کانتا بھان ، ایس منجیت سنگھ ،ڈاکٹر رما کانت کھجوریہ، بی بی گپتا، مدن لعل مالاگر، نذیر احمد، چنچل پوپلی، گورو چوپڑہ، ریتو چودھری،چھودھری دوارکا ، بھانو مہاجن، راجندر سنگھ ،جے ایل کول اور دیپک مہرہ نے بھی شرکت کی۔اس موقعہ پر مظاہرین سے خطاب کرتے ہوئے پردیش کانگریس کمیٹی کے نائب صدر رمن بھلہ نے کہا کہ مرکز ی اور ریاستی سرکار اپنی غلط پالسیوں کی وجہ سے عوام کے ساتھ کئے گئے وعدوں کو پورا کرنے میں ناکام رہی ہے۔انہوں نے کہا کہ ریاست میں ہر طرف سے بنیادی سہولیات کے لئے چیخ و پکار ہے لیکن کوئی بھی انکے مشکلات کا ازالہ نہیں کرتا ہے۔انہوں نے کہا کہ سرکار کی عوام م خالف پالسیوں کی لوگوں کوجانکاری دینے کی ضرورت ہے  اور یقین دلایا کہ کانگریس پارٹی حالیہ لوک سبھا انتخابات کے دوران بی جے پی کی جانب سے کئے گئے اہم وعدوں کیلئے اسے عوام کے سامنے جواب دہ بنائے گی۔انہوں نے کہا کہ بی جے پی نے مرکز اور ریاست میں پانچ سال تک حکومت کی لیکن اہم یقین دہانیوں کو عملانے میں ناکام رہی ۔ اس موقعہ پر ضلع صدر وکرم ملہوترہ نے کہا کہ لوک سبھا انتخابات کے دوران دفعہ 35-A,  اور دفعہ 370 کو ہٹانا ، حد بندی کمیشن قائم کرنا ، مغربی پاکستان کے رفیوجیوں کو شہریت کے حقوق اور متعدد مدعے اُٹھائے گئے ،جو کہ بی جے پی کے چنائو منشور میں بھی تھے لیکن اقتدار حاصل کرنے کے بعد یہ تمام مدعے پس و پشت رکھے گئے۔انہوں نے کہا کہ وقت آیا ہے کہ بی جے پی کو معیاد بند وقت میں عوام کے ساتھ کئے گئے وعدوں کو پورا کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ ریاست کے گورنر ستیہ پال ملک عوام کو بنیادی سہولیات جیسے کہ پانی اور بجلی سپلائی یقینی بنانے میں ناکام ثابت ہوئے ہیں۔مظاہرین میں وجے شرما ، ایس پروین سنگھ ، نریش مینی، اشونی ہانڈا، بلویر سنگھ ، چندر شیکھر، سوشانت گپتا، کیمرس ڈیوڈ، ٹائٹس گل، رانی دیوی، اجے مہرہ، اگہر داس، ویبھو مٹو، پرویز فاضلی، اجے کھنہ، شرگوش، یش پال سنگرال، مدھو، امت ،وشال ،مینا دیوی، پرس رام و دیگران بھی شامل تھے۔
 

تازہ ترین