تازہ ترین

قرض اتارنے کے لیے ٹرافیاں فروخت کریں گے: بورس بیکر

25 جون 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

یو این آئی
لندن/ لیجنڈ جرمن ٹینس کھلاڑی بورس بیکر کو اپنا قرض اتارنے کے لیے کیریئر میں محنت سے حاصل کی گئیں قیمتی ٹرافیوں کو نیلام کرنا پڑ رہا ہے جس کی شروعات پیر سے ہوگی۔برطانوی نیلامی فرم والس ہارڈی پیر سے آن لائن نیلامی کے ذریعہ ان ٹرافیوں کے فروخت کے عمل کو شروع کرے گی۔ گرینڈ سلیم ومبلڈن کی تاریخ میں خطاب جیتنے والے سب سے نوجوان ٹینس اسٹار بیکر اپنے وقت کے عظیم ٹینس کھلاڑیوں میں گنے جاتے ہیں جنہوں نے صرف 17 سال کی عمر میں ہی تین گرینڈ سلیم جیت لئے تھے ۔بیکر پیسہ جمع کرنے کے لئے اپنے میڈل، کپ، گھڑیاں اور تصویر سمیت کل 82 اشیاء کی نیلامی کریں گے ۔ یہ نیلامی 11 جولائی تک جاری رہے گی جس کی معلومات نیلامی کمپنی نے اپنی ویب سائٹ پر جاری کی ہیں ۔جرمن اسٹار کی ٹرافیوں میں چیلنج کپ، تین رینش کپ کی کاپیاں شامل ہیں۔ سال 1990 میں ومبلڈن کے فائنلسٹ رہنے پر موصول ہوئے ان کے تمغے اور سال 1989 میں آئیون لینڈل پر ملی جیت کے بعد پیش کیا گیا امریکی اوپن کا چاندی سے بنا کپ بھی نیلام کیا جائے گا جسے زیورات بنانے کی ماہر کمپنی ٹفني نے بنایا تھا۔51 سالہ عظیم کھلاڑی کو سال 2017 میں دیوالیہ قرار دیا گیا تھا۔ جون 2018 میں اگرچہ خاص ڈپلومیٹک درجہ حاصل ہونے کا حوالہ دے کر انہوں نے اپنی ذاتی جائیداد کی نیلامی رکوا دی تھی۔سابق نمبر ایک ٹینس کھلاڑی اور چھ بار کے گرینڈ سلیم چمپئن پر لاکھوں پونڈ کا قرض ہے اور مانا جا رہا ہے کہ اس نیلامی سے بھی وہ اسے چکا نہیں سکیں گے ۔ بیکر مارلوکا میں اپنے عالیشان مکان پر ہوئے تعمیر کے لیے پیسے نہیں ادا کر سکے اور اپنی سابق بیوی کے ساتھ قانونی جنگ اور جرمنی میں 17 لاکھ یورو کی ٹیکس چوری کی طرح بہت سے معاملات میں پھنسے ہوئے ہیں۔یو این آئی