تازہ ترین

مزید خبریں

22 جون 2019 (00 : 04 AM)   
(      )

نیو ڈسک

۔1984کے سکھ فسادات کے کیس دوبارہ کھولنے کے فیصلہ کا خیر مقدم 

جموں // آل جموں و کشمیر  پی او جے کے1947 شرنارتھی انٹیلیکچول فورم نے 1984کے سکھ دنگوں کے کیس دوبارہ کھولنے کے فیصلہ کا خیر مقدم کیا ہے ۔ ایک پریس بیان میں فورم کے جنرل سیکرٹری سردار سرجیت سنگھ نے وزیر داخلہ امت شاہ سے دہلی میں 1984 میں ہوئے سکھ نسل کشی و قتل عام کے بند کئے گئے تمام معاملات کو دوبارہ کھولنے اوراس میں شامل قاتلوں اور دنگہ بھڑکانے  میں اُس وقت کے کانگریسی لیڈران ،جن میں مدھیہ پردیش کے موجودہ وزیر اعلیٰ کمل ناتھ بھی شامل ہیں ،کے خلاف بھی انکوائری کرنے کے فیصلہ کا خیر مقدم کیا ہے۔پریس بیان میں انہوں نے کہا کہ کانگریس نے اس نسل کشی کو ہمیشہ سے ہی ہندو، سکھ دنگہ کی شکل دینے کی کوشش کی ہے ،جو کہ اصل میں گاندھی  خاندان اور کانگریس کی سکھ دشمنی کی وجہ تھی۔انہوں نے کہا کہ ان معاملات کی تحقیقات کرکے اصل مجرموںکو سزا دلوا کر ہی اس سازش سے پردہ اُٹھایا جا سکتا ہے۔بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیر داخلہ کی جانب سے یہ قدم اٹھانا ایک خوش آئیند بات ہے۔انہوں نے کہا کہ سکھوں نے اس فیصلہ کی ستائش کی ہے۔انہوں نے کہا کہ فورم وزیر عظم نریندر مودیکی شاندار قیادت کی زبر دست حمایت اور سراہنا کرتی ہے۔
 
 
 
 

صدر جمہوریہ کے خطاب سے جموں و کشمیر کے عوام مایوس 

جموں // جموںویسٹ اسمبلی مومنٹ کے صدر سنیل ڈمپل نے یہاں منعقدہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے صدر جمہوریہ کے پارلیمنٹ کے خطاب کو ریاست جموں و کشمیر کے لئے مایوس کن قرار دیا ۔انہوں نے کہا کہ صدر جمہوریہ کے خطاب میں ریاست جموں و کشمیر کیلئے کُچھ نہیں ہے۔انہوں نے صدر جمہوریہ کے خطاب کو بی جے پی کا الیکشن منشور قرار دیا ۔انہوں نے کہا کہ خطاب میں پاکستان کے ساتھ نمٹنے اور ریاست میں دہشت پسندی سے نمٹنے کیلئے کُچھ نہیں بولا ہے۔انہوں نے کہا کہ صدر جمہوریہ نے آئین ہند سے دفعہ370 اور  35-A کے بارے میں کُچھ نہیں بولا ہے۔انہوں نے کہا کہ صدر جمہوریہ کے خطاب میںخاموشی سے یہی لگ رہا ہے کہ ریاست کے لوگوں کو گمراہ کیا جا رہا ہے۔انہوں نے اسمبلی نشستوں کی حد بندی پر اختیار کی گئی خاموشی کی بھی سخت مذمت کی گئی۔ڈمپل نے ریاست جموں و کشمیر کی اسمبلی کیلئے فوری انتخابات منعقد کرنے کا مطالبہ کیا۔انہوں نے ریاست جموں و کشمیر کے ہندوں کیلئے اقلیتی درجہ کا بھی مطالبہ کیا ۔
 
 
 
 
 

چھنی ہمت میں سالڈ ویسٹ منیجمنٹ پروگرام کا اہتمام 

جموں //جموں میونسپل کارپوریشن کی جانب سے جمعرات  کے روز یہاں گورنمنٹ ہائیر سیکنڈری سکول چھنی ہمت ورڈ نمبر51 میں سالڈ ویسٹ منیجمنٹ پروگرام کا اہتمام کیا گیا۔ سکول کی پرنسپل مسز شاہنواز چودھری نے پروگرام کی صدارت کی اور مہمانوں کا خیر مقدم کیا۔ اس موقعہ پر ماسٹررومت کمارنے سکول کے عملہ ا ور طلاب کو غیر حیاتیاتی مواد کو ضائع کرنے میں کمی لانے اور آرگنک ضائع سے کمپوزٹ تیار کرنے کی ہدایت دی اور انہیں کمپوزٹ بنانے کی جانکاری دی۔انہوں نے بتایا کہ یہ عمل بہت ہی آسان ہے۔ اس موقعہ پر چیر مین نے کہا کہ ہمیں وزیر اعظم نریندر مودی کی جانب سے لانچ کی گئی سوچھ ابھیان مہم پر عمل کرنے چاہیے۔ اس موقعہ پر سکول کی ہیڈ مسٹرس نے سکول میں ویسٹ کے متعلق متعدد مسائل کی جانکاری دی۔ طلاب کو کوڈا کرکٹ نہ جلانے کا پیغام پھیلانے کی تلقین کی گئی۔سکول میں کوڈا کرکٹ جمع کرنے کے لئے ایک ڈبہ رکھنے کیلئے کہا گیا۔ طلاب نے پروگرام میں جوش و خروش سے شرکت کی اور ٹیم سے سولات پوچھے ۔جے ایم سی ٹیم نے تمام سوالات کا اطمینان بخش جوابات دئے۔ انہیں سالڈ ویسٹ کو ٹھکانے لگانے کے لئے متعدد طریقوں کی جانکاری دی گئی۔ پروگرام کارڈی نیٹر  زفیکل ٹریننگ ماسٹر چمیل سنگھ نے طلاب و دیگران کی نشست منعقد کی۔  
 
 
 
 

آپریشن سد بھاونہ کے تحت ہائی سکول چھوانی میں سہولیات فراہم  

سانبہ // انڈین آرمی کے سانبہ بریگیڈ نے آپریشن سد بھاونہ کے تحت گورنمنٹ ہائی سکول چھوانی، رام گڑھ ،ضلع سانبہ میں انفراسٹریکچر اور آئی ٹی ایکسیسرئیز فراہم کئے۔فوج نے نیک کام سکول کے طلاب کی سہولیت اور سکول کی موجودہ اہلیت اور انفراسٹریکچر میں اضافہ کرنے کیلئے فراہم کئے۔مقامی لوگوں اور سکول کے عملہ و طلاب نے فوج کی اس کام کی سراہنا کی  اور کہا کہ فوج کی اس پہل سے طلاب کو کافی فائدہ ہوگا۔فوج کی اس پہل سے فوج اور عوام کے درمیان رشتے مستحکم ہونگے اور سرحدی علاقہ کے طلاب کو ایک پلیٹ فرام مہیا کرے گا، تاکہ وہ اپنی کارکردگی میں اضافہ کر سکیں۔
 
 
 

بی جے پی کسان مورچہ کا اجلاس 

جموں // بی جے پی کسان مورچہ کا ایک اجلاس یہاں پارٹی کے صدر دفتر میںمنعقد ہوا ۔اجلاس کا ایجنڈا ممبر شپ مہم ،ممبر شپ مہم کے لئے انچارجوں اور پربھاریوں کی نامزدگیوں اور کسان مورچہ کے لئے ریاستی اضلاع کے لئے تاریخ اور مقام مقرر کرنا تھا ۔ اجلاس کے آغاز میںمورچہ کے ریاستی صدر راجندر سنگھ چب نے ریاستی ٹیم کو اطلاع دی کہ پارٹی کی ریاستی ورکنگ کمیٹی کے اجلاس میںرنگ روڈ کے تحت آنے والی اراضی اور زمین کے ریونیو ریکارڈ کی ڈیجٹلائزیشن کے اہم مدعوںکو قرار داد میں پاس کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ممبر شپ مہم 6جولائی سے شروع کی جائے گی اور ایک لاکھ ممبر شپ کا ہدف مقرر کیا گیا ہے۔ممبر شپ مہم کا ہدف حاصل کرنے کیلئے کسان مورچہ کے نائب صدر ستیش بھارتی کو انچارج کسا ن مورچہ مقرر کیا گیا ہے۔اجلاس میں ریاستی انچارج ممبر شپ مہم جگل کشو ڈوگرہ بھی موجود تھے،جنھوں نے کسان مورچہ ٹیم کو موضوع پر مکمل جانکاری دی۔اجلاس کے آخر میں صدر راجندر سنگھ چب نے کسان مورچہ کے تمام ممبروں کو یوگ دوس  میں حصہ لینے کو کہا ۔اس موقعہ پر مورچہ کے جنرل سیکرٹریوں کیپٹن کے ایل شرما ، کیپٹن رگھو نبیر سنگھ منہاس کے ہمراہ ریاستی ٹٰم اور ضلع صدر بھی موجود تھے۔ 
 
 
 

وزیر اعظم کا بیان، 'ایک قوم، ایک انتخابات'

کیا وہ جانتے ہیں کہ یہاں دو آئین اور دو جھنڈے ہیں

جموں//نیشنل پنتھرس پارٹی کے سرپرست اعلی پروفیسر بھیم سنگھ نے وزیر اعظم کی صدارت میں 542 لوک سبھا ممبران پارلیمنٹ کی خاموشی پر حیرت کا اظہار کیا، جس میں وزیر اعظم نے کہا کہ 'ایک قوم، ایک انتخابات' ہندستان میں جمہوریت کو برقرار رکھنے کا حل ہے۔کیا یہ ممکن ہے، جب کہ ملک کے اندر دو آئین اور دو جھنڈے ہیں۔ ایک بھارت کا آئین ہے اور دوسرا جموں و کشمیر کا الگ آئین ہے جسے ہندستانی حکومت اور پارلیمنٹ نے منظوری دی ہے۔ پروفیسر بھیم سنگھ نے وزیر اعظم سے یہ بھی سوال کیا کہ کیا وہ جانتے ہیں کہ جموں و کشمیر میں اسمبلی کی مدت کارچھ برس ہے اورملک کی باقی تمام اسمبلیوں کی مدت کار پانچ برس ہے۔جموں و کشمیر میں انتخابی قوانین اور ملک کی باقی ریاستوں
 کے انتخابی قوانین سے مختلف ہیں۔ کیا وزیر اعظم قوم کو یہ سمجھا سکیں گے کہ کس طرح ایک قوم (بھارت) میں تمام اسمبلی کی مدت کار یکساں ہو
 سکتی ہے اور ملک میں ایک بار الیکشن کیسے ہو سکتے ہیں۔انہوں نے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے پنتھرس پارٹی کا ایجنڈا جاری کیا، جسے پارٹی نے گزشتہ ہفتے سدھمہادیو قومی یکجہتی کیمپ میں ہزاروں کارکنان کے سامنے جاری کیا گیا۔ پینتھرس پارٹی نے زور دے کر کہا کہ جب تک ملک میں ایک قومی پرچم اور ایک آئین نہیں ہوگا اور جموں و کشمیر اسمبلی کی بھی باقی ریاستوں کی مانند اسمبلی کی مدت کار پانچ برس نہیں ہو گی، تب تک وزیر اعظم جی اراکین پارلیمنٹ کے سامنے کی گئی تقریر بیکار ہی جائے گی۔پروفیسربھیم سنگھ نے صحافیوں کو سیاسی ، بین الاقوامی اور معاشی قراردادوں کی انگریزی، ہندی اور اردو میں کاپیاں بھی سونپیں جو سدھ مہادیو اجلاس میں منظور کی گئیں تھیں۔ انہوں نے کہا کہ مودی کے 'ایک قوم، ایک انتخابات' کے خیال سے پہلے ان قراردادوں کو نافذ کریں جو قومی اتحاد کو مضبوط کرنے کا واحدراستہ ہے۔
 
 

جموں میں بین الاقوامی یوگا دن کے سلسلہ میں متعدد مقامات پر تقریبات کا اہتمام

 اودہمپور

جموں//دنیا بھر میں 21جون کو یوگا منعقد کرنے کے ساتھ ساتھ ملک کے ریاست جموں و کشمیر میں بھی یوگا کیا گیا ۔ اس سلسلہ میں  ڈائریکٹر جنرل قید خانہ جات  وی کے سنگھ ،آئی پی ایس کی ہدایت پرڈسٹرکٹ جیل اودہم پور میں بھی زیر نگرانی سپرانٹنڈنٹ ضلع جیل اودہم پور ہریش کوتوال ایک تقریب کا اہتمام کیا گیا ،جس میں این جی او آرٹ آف لونگ کے اشتراک سے بین الاقوامی یوگا دن منایا گیا ۔آرٹ آف لونگ کے رضا کاروں نے زیر رہنمائی انکش ابروال نے جیل کے عملہ ،سی آر پی ایف افسروں اور اہلکاروں  اور جیل کے قیدیوںنے یوگاکیا ۔کل ملا کر تقریباً120لوگوں نے یوگا میں شرکت کی۔پروگرام کے اختتام پر جیل کے سپرانٹنڈنٹ نے یوگا کے فوائد شمار کئے اور جیل کے قیدیوں اور عملہ کو صحت مند رہنے کیلئے یوگا کو اپنی معمول کی زندگی میں ایک جُز بنانے کی اپیل کی۔انہوں نے بتایا کہ یوگا سے ایک شخص کی نفسیاتی اور جسمانی تندرستی ہو تی ہے۔ جیل سپرانٹنڈنٹ نے پروگرام کے اختتام پر آرٹ آف لونگ کے ممبران کا جیل کے قیدیوں اور عملہ کیلئے یوگا منعقد کرنے کیلئے انکا شکریہ ادا کیا اور انہیں مستقبل میں بھی ایسا پروگرام منعقد کرنے کی اپیل کی۔جیل کے قیدیوں نے بھی ایسا پروگرام منعقد کرنے کیلئے جیل سپرانٹنڈنٹ کی ستائش کرتے ہوئے مستقبل میں بھی ایسا پروگرام منعقد کرنے کی خواہش کا اظہار کیا۔

ٹائیگر ڈویژن 

ٹائیگر ڈویژن نے21کو عالمی یوم یوگا کے منایا ،جس میں خاص پروگرام  ’’ٹائیگر ڈویژن‘‘ کے تمام اسٹیشنوں میںمنعقد کئے گئے۔تمام رینکوں نے اس پروگرام میں جوش و جذبہ سے شرکت کی ۔  پروگرام کا مقصد نوجوانوں میں یوگا کاجذبہ پیدا کرنا تھا  کیونکہ یہ روز مرہ کے انتشار کا جواب ہے۔ٹائیگر ڈویژن کے تمام اسٹیشنوں میں یوگا منایا گیا ،جس کے لئے انہوں نے ایک لائحہ عمل مرتب کیا تھا۔اس دن کو منانے کے سلسلہ میںیوگا سیشن متعلقہ یونٹوں میں شروع کیا گیا جہاںپر تقریباً 13,000 شرکا نے شرکت کی ،جن میں  سپاہی ،خواتین اور بچے بھی شامل تھے۔40 منٹ کے یوگا سیشن میں متعدد یوگا کی جانکاری دی گئی،جس کے بعد صحت مند طرز زندگی پر بیداری پیدا کی گئی۔یوگا سیشن کا اختتام شرکا میں صحت مند اور ذہنی طور سے فٹ رہنے کی حلف دلائی گئی۔

سی آر پی ایف 

سی آر پی ایف گروپ سنٹر بن تالاب کی جانب سے 5واں عالمی یوم یوگا منانے کے سلسلہ میں پریڈ گرائونڈ گروپ سنٹر بن تالاب میں نہایت ہ جوش و جذبہ سے یوگا کیا گیا ۔1500سے زائد نیم فوجی اہلکاروں ( سیا ٓر پی ایف، بی ایس ایف، ایس ایس بی اور آئی ٹی بی پی ،جو کہ جموں میں تعینات ہیں ،نے یوگا کیا ۔یوگا انسٹریکٹروں ، افسروں ار سی آر پی ایف اہلکارون نے علل صبح یوگا کی متعدد مشقیں کی۔ پروگرام کے اختتام پر اہلکاروں سے خطاب کرتے ہوئے آئی جی، سی آر پی ایف، جے اینڈ کے زون وجے کمار نے اپنی روز مرہ کی زندگی میں یوگا کو شامل کرنے پر زور دیا۔انہوں نے کہا یوگا کرنے سے کئی بیماریاں دور ہو جاتی ہیں اور انکے اثر کو کم کرتاہے۔آئی جی سی آر پی ایف جموں سیکٹر اے وی چوہان نے اپنے خطاب میںکہا کہ یوگا ایک کار آمد ذریعہ ہے جس سے جسمانی، ذہنی اور روحانی صحت میں فائدہ ملتا ہے۔انہوں نے تما اہلکاروں کو یوگا اپنی معمول کی زندگی کا حصہ بنانے کو کہاکیونکہ یوگا سے نفسیاتی اور جسمانی تندرستی ہو تی ہے۔اس موقعہ پر دیگران میں آئی جی (میڈیکل)وی کے سنگھ ، ڈی آئی جی ،سی آر پی ایف جے اینڈ کے زون ہیڈ کوارٹر جموںبھوپیندر سنگھ ، ڈی آئی جی ،سی آر پی ایف جے اینڈ کے زون ہیڈ کوارٹر جموںپون کمار شرما ، ڈی آئی جی ،سی آر پی ایف جموں شریمتی نیتو، کمانڈنٹ 166ویں بٹالین سی آر پی ایف آشیش کمار بھی شامل تھے۔پروگرام  ڈی آئی جی ،سی آر پی ایف ۔فگروپ سنٹر بن تالاب ایس پی سنگھ کی رہنمائی اور نگرانی میں منعقد کیا گیا۔ کمانڈنٹائیرڈن ایکا ،ڈپٹی کمانڈنٹ سنجیو کمارسنگھ ، ڈپٹی کمانڈنٹ دنیش کمار ،اسسٹنٹ کمانڈنٹ منیش تھاتھیار، اسسٹنٹ کمانڈنٹ اجے شرما نے بھی پروگرام منعقد کرنے میں ایک اہم رول نبھایا ۔

یوگ نندا کالج آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی 

یوگ نندا کالج آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی کی جانب سے21جون کو 5ویں بین الاقوامی یوگا دن منانے کے سلسلہ میں ایک پروگرام کا اہتمام کیا گیا ،جس میں کالج کے منیجمنٹ،عملہ اور طلاب نے جوش و خروش سے شرکت کی۔کالج کی جانب سے ’’یوگا فار آل ،آل فار یوگا ‘‘ کے عقیدہ ،جیسا کہ بھارت کے وزیر اعظم نے بولا ہے ،کے مد نظر یوگا منایا جا تا ہے۔پروگرام کا اہتمام تمام مراحل میں یوگا کے متعلق بیداری پیدا کرنے کے مقصد سے منایا گیا ۔اوم شانتی میڈئیشن سنٹر ،جموں کی برہم کاری مدعو کی گئی تھی جنھوں نے یوگا سکھایا ۔یوگا دن منانے کے لئے ادارے کی جانب سے تین نشستیں یعنی کہ یوگا، راج یوگا اور آجکل کی طرز زندگی پر بات  منعقد کی گئی۔پروگرام کا آغاز بی کے کسم لتا نے کیا ،جنھوں نے اپنے خطبہ استقبالیہ میں یوگا کی وضاحت کی۔برہم کارئیز رویندر بالی ،موہنی اور روی نے متعدد آسن دکھائے جن کی وضاحت بی کے موہنی نے کی۔انہوں نے مزید وضاحت کی کہ یوگا بھارت کی ایک قدیم رواعیت کا بیش قیمتی تحفہ ہے۔یوگا کی نشست تقریباً تین گھنٹے تک جاری رہی ،انجینئر کے آر شرما نے شرکا کا شکریہ کرتے ہوئے کہا کہ یوگا  صحت مند رہنے کی ایک کنجی ہے۔

ایشیا ہوٹل 

سیجنیٹ پارک ایشیا ،جموں میں بھی عالمی یوگا دن منایا گیا ۔  اس سلسلہ میں ہوٹل کے صحن میں ایک گھنٹے کاپروگرام منعقد کیا گیا ،جس میں ہوٹل کے مہمانوں ، جموں کے سر پرستوں او رعملہ نے بھی شرکت کی۔یوگاصُبح کے 8.30  بجے شروع ہوا اور ایک گھنٹہ کے دوران یوگا کے 20آسن کئے گئے۔یوگا انسٹریکٹر نے کہا کہ باقاعدہ یوگا کرنے سے ذہنی اور جسمانی فوائد حاصل ہوتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یوگا کرنے کے عمل سے یک شخض کی جسمانی، ذہنی اور روحانی تنائو کو قابو کرنے میں مدد ملتی ہے۔انہوں نے کہا کہ یوگا کرنے سے ایک شخض کو ایک پر سکون زندگی میں مدد ملتی ہے۔اس سے تنائو پر قابو کرنے میں مددملتی ہے۔یجنیٹ پارک ایشیا ،جموں کے جنرل منیجر امت سود نے اس موقعہ پر کہا کہ اس سال کا موضو ع  قلب کیلئے یوگا  ہے۔
 

چناب کالج آف ایجوکیشن

چناب کالج آف ایجوکیشن نے انڈین سائنٹسٹ کانگریس ایسو سی ایشن کے اشتراک سے کالج کے احاطہ میں ایک پروگرام کا اہتمام کیا ،جس میں بی ایڈ طلاب ، کالج کے سٹاف  ممبروں اور مقامی لوگوں کے لوگوں نے یوگا کیا۔کنوینئر ISCAجموں پروفسر جے ایس تارا نے اس موقعہ پر یوگا کی اہمیت بیان کی۔ٹھنڈو رام شرما بطور ریسورس پرسن اس موقعہ پر موجود تھے۔پروگرام کا آغاز کالج کے پرنسپل ڈاکٹر اندر جیت کور کی جانب سے خطبہ استقبالیہ سے کیا گیا ،جنھوں نے اپنے خطاب میں روز مرہ کی زندگی میں یوگا کی ا ہمیت پر ر زور دیا ۔اس موقعہ پر موجود لوگوں نے  ماہر یوگا انسٹریکٹر ٹھنڈو رام شرما کی قیادت میںمتعدد آسن انجام دئے۔پروگرام کے اختتام پر پروفیسر جے ایس تارا نے پروگرام کوکامیاب بنانے کیلئے تمام شرکا کاشکریہ ادا کیا

ڈوگرہ گروپ آف کالجز 

جموں // عالمی یوگا دن کے موقعہ پر ڈوگرہ کالج آف ایجوکیشن ، ڈوگرہ لاء کالج ، ڈوگرہ ڈگری کالج نے عالمی یوگا دن منانے کے لئے ایک یوگا کیمپ کا اہتمام کیا۔سیکرٹری ڈوگرہ ایجوکیشنل ٹرسٹ سمر دیو چاڑک نے اس موقعہ پر یوگا کی اہمیت کو اجا گر کیا۔انہوں نے صحت مند زندگی اور صحت مند طرز زندگی کو برقرار رکھنے کے لئے متعدد لازمی ہیلتھ ٹپس دئے۔کیمپ میں پورے عملہ نے بھی شرکت کی اور یوگا کے کئی آسن اور سانس لینے کے طریقے سیکھ لئے۔اس موقعہ پر اپنے خطاب میںڈائریکٹر ایڈ منسٹریشن اینڈ سی ڈی ڈوگرہ ایجوکیشنل ٹرسٹ کرنل کے این پادھا نے یوگا کی اہمیت اجا گر کی اور کہا کہ یہ کس طرح سے آج کل کی تنائو بھری زندگی میں مفید ہے۔تمام سٹاف ممبروں نے یوگا کیمپ کا فائدہ اُٹھا کر اپنے اہل خانہ کیلئے پیغام لے گئے۔