تازہ ترین

شہر کی سڑکوں پربے ہنگم ٹریفک اور قوانین کی خلاف ورزی

مسافروں،راہگیروںاورطلبہ و بیماروں کیلئے سُوہان روح

13 جون 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

نیو ڈسک
سرینگر//   سڑکوں پربے ہنگم ٹریفک اور شاہراہوں پرفوجی کانوائے کادبدبہ عام مسافروں، راہگیروں، ملازمین ومزدوروں اورطلبہ و بیماروں کیلئے سُوہان روح بنا ہوا ہے ۔ ٹریفک نظام میں موجود خامیوں ،قوانین کی مسلسل خلاف ورزیوں اورمسافرومال برداراورنجی گاڑیوں کے ڈرائیوروں کی من مانیوں پرقابوپانے کیلئے متعلقہ حکام کی طرف سے کوئی کارگراقدامات روبہ عمل نہیں لائے جارہے ہیں جبکہ سڑکوں کی تنگدستی اورزبوں حالی دورکرنے کیلئے بھی عمل اقدامات کافقدان پایاجاتاہے ۔ٹریفک نظام کی بدحالی کے نتیجے میں اوسطاً ہرروز کوئی نہ کوئی سڑک حادثہ رونما ہوجاتاہے اورکوئی نہ کوئی مسافریاراہگیراپنی جان گنوابیٹھتا ہے ۔ان تمام ترنقائص کے باوجود ٹریفک نظام میں سدھارلانے کیلئے کوئی فوری نوعیت کے یادُوررس اقدامات نہیں اُٹھائے جارہے ہیں ۔ مختلف گاڑیوں میں سفرکرنے والے مسافروں کوآواجاہی میں سخت مشکلات کاسامناکرناپڑرہا ہے کیونکہ کچھ میٹرچلنے کے بعد ہی گاڑیاں ٹریفک جام میں پھنس جاتی ہیں ۔سڑکوں پر بے ہنگم ٹریفک کی وجہ سے مسافروں اورراہگیروں کے ساتھ ساتھ دکانداروں اور تاجران کوبھی مشکلات درپیش ہیں ۔مختلف حلقوں اورطبقوں سے تعلق رکھنے والے افرادنے بتایاکہ ٹریفک کی بدحالی نے اُنکی زندگیوں اورروزمرہ کی سرگرمیوں کوباعث عذاب بناکے رکھدیا ہے ۔سیول لائنزاورشہرکے دیگر علاقوں اوربازاروں میں سمیت تاریخی لالچوک،کورٹ روڑ،گھنٹہ گھر،ریگل چوک ،جہانگیرچوک،ہری سنگھ ہائی اسٹریٹ ،راجباغ ،مگرمل باغ ،گونی کھن ،مہاراج بازار،بٹہ مالواوردیگرمصروف ترین بازاروں میں ٹریفک جام کی وجہ سے لوگوں کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے جبکہ ان اہم بازاروں میں سڑک کنارے اورفٹ پاتھ کوڑے کرکٹ سے بھرے پڑے رہنے کی وجہ سے گاڑیوں کی آواجاہی میں بارباررکائوٹ پیداہورہی ہے۔ سرینگرشہرمیں ٹریفک جام کے نتیجے میں معمول کی عوامی اور تجارتی سرگرمیاں بری طرح سے متاثر ہو رہی ہیں ۔(سی این ایس)