تازہ ترین

مینڈھر شیئرمارکیٹ معاملہ

کرائم برانچ نے این سی یوتھ لیڈر اور خاتون سرپنچ کو حراست میں لیا

13 جون 2019 (00 : 01 AM)   
(      )

جاوید اقبال
مینڈھر //کرائم برانچ نے مینڈھرشیئر مارکیٹ معاملہ میں نیشنل کانفرنس کے ضلع یوتھ صدر پونچھ اور پنچایت چھونگاں چوہدریاں کی خاتوں سرپنچ کو حراست میں لے کر مزید تحقیقات شروع کر دی ہیں ۔ذرائع کے مطابق این سی یوتھ لیڈر ایڈوکیٹ ظفر چوہدری اور مینڈھر بلاک کی پنچائت چھونگاں چوہدریاں کی خاتون سرپنچ شازیہ چوہدری جوکہ فرضی شیئرمارکیٹ کے مالک طارق چوہدری کی بیوی ہیں،کوکرائم برانچ نے حراست میں لیکر مزید پوچھ تاچھ شروع کردی ہے ۔مینڈھر کے نثار چوہدری ،محمد اقبال اور محمد شکور کا کہناہے کہ فرضی شیئرمارکیٹ چلانے والوں کے کئی رشتہ دار غائب ہیں جنہیں فور ی طور حراست میں لیکر تحقیقات شروع کی جائے۔انہوں نے کہاکہ فرضی شیئر مارکیٹ کے ابھی بھی کچھ ایسے عناصر غائب ہیں جو پلان بناتے تھے اور طارق چوہدری کو نیا فارمولا بتایا جاتا تھاجس کے تحت نئی اسکیم لاگو کرکے لوگو ں سے پیسہ بٹوراجاتا تھا۔انہوں نے کہاکہ مذکورہ ملزم کے کئی ایک ایسے رشتہ دار موجود ہیں جن کے پاس مبینہ طورپر کروڑوں روپے موجود ہیں ۔انہوں نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ رشتہ داروں کے اثاثوں کو ضبط کرکے متاثرین کو انصاف فراہم کیا جائے ۔واضح رہے کہ کچھ رو ز قبل مینڈھر پولیس سٹیشن میں فرضی شیئر مارکیٹ چلانے والے عناصر کے خلاف ایک مقدمہ درج ہواتھا جس کے بعد پونچھ پولیس نے یہ کیس کرائم برانچ کو سونپا تھا اور جس کی تحقیقات کرائم برانچ باریک بینی سے کررہی ہے اور مینڈھر کے لوگ یہ امید لے کر بیٹھے ہیںکہ مذکورہ معاملہ میں ملوث افراد کو گرفتار کر کے متاثرین کو انصاف فراہم کیا جائے گا ۔